میکسیکو کی سرحد پر سکھوں کی پگڑی اتارنے پر ہنگامہ، جانچ کا حکم صادر

Source: S.O. News Service | Published on 4th August 2022, 8:14 PM | عالمی خبریں |

واشنگٹن،4؍اگست (ایس او نیوز؍ایجنسی) امریکہ میں میکسیکو سے ملحق امریکی سرحد پر حراست میں لیے گئے کچھ سکھ پناہ گزینوں کی پگڑی ضبط کیے جانے کی خبر سے ہنگامہ برپا ہو گیا ہے۔ تنازعہ بڑھنے پر امریکی افسران نے جانکاری دی ہے کہ معاملے کے حل کے لیے ایک داخلی جانچ شروع کر دی گئی ہے۔

بی بی سی کی رپورٹ کے مطابق امریکن سول لبرٹیز یونین (اے سی ایل یو) کے مطابق میکسیکو سرحد پر تقریباً 50 سکھ مہاجروں کی پگڑی اتار دی گئی۔ اے سی ایل یو نے کہا کہ پگڑی کی ضبطی یونین قانون کی واضح خلاف ورزی کرتی ہے اور امریکی سرحد ٹیکس اور سرحد سیکورٹی (سی بی پی) کی غیر تفریقی پالیسیوں کے منافی ہے۔

یکم اگست کو سی بی پی کمشنر کرس میگنس کو بھیجے ایک خط میں اے سی ایل یو نے اسے مذہبی آزادی کی سنگین خلاف ورزی بتایا۔ اس درمیان ایریجونا کے اے سی ایل یو کے ایک وکیل وینیسا پنیڈا نے بی بی سی کو بتایا کہ پگڑی سے سیکورٹی کا کیا تعلق ہے، اس بارے میں کوئی مناسب وضاحت نہیں دی گئی ہے۔ انھوں نے کہا کہ ’’یہ قابل قبول نہیں ہے۔ انھیں مزید ایک متبادل تلاش کرنے اور اسے روکنے کی ضرورت ہے۔ یہ غیر انسانی ہے۔‘‘

بی بی سی نے واشنگٹن پوسٹ کی رپورٹ کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ جواب میں میگنس نے کہا کہ بارڈر ایجنسی اپنے ملازمین سے ان سبھی مہاجرین کے ساتھ عزت کے ساتھ پیش آنے کی امید کرتی ہے جن کا ہم سامنا کرتے ہیں۔ سی بی پی کمشنر کے حوالے سے کہا گیا کہ ’’اس معاملے کے حل کے لیے ایک داخلی جانچ شروع کر دی گئی ہے۔‘‘

سی بی پی کے اعداد و شمار کے مطابق اکتوبر 2021 سے شروع ہوئے مالی سال میں یو ایس-میکسیکو سرحد پر گشتی افسران کے ذریعہ پنجاب سمیت تقریباً 13 ہزار ہندوستانی شہریوں کو حراست میں لیا گیا ہے۔ ان میں سے تقریباً تین چوتھائی یا تقریباً 10 ہزار کو بارڈر پٹرول کے یوما سیکٹر میں حراست میں لیا گیا ہے، جو کہ 202 کلومیٹر کے ریگستان اور چٹانی پہاڑوں کی توسیع ہے، جو کیلیفورنیا کے امپیریل سینڈ ڈیونس سے لے کر ایریجونا کے یوما اور پیما کاؤنٹیوں کے درمیان کی سرحد تک پھیلا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ہمیں لگا کہ قیامت آ گئی ہے،عینی شاہدین کے تاثرات

ترکی اور شام میں زلزلے سے ہلاکتوں کی تعداد 2300 تک پہنچ چکی ہے۔ترکی کی ڈیزاسٹر مینجمنٹ ایجنسی کے مطابق ملک میں ہلاکتوں کی تعداد 1498 ہو گئی ہے۔ اے ایف پی کے مطابق شام میں ہلاکتوں کی تعداد 810 تک پہنچ گئی ہے۔

پاکستان کے سابق صدر پرویز مشرف کا دبئی کے اسپتال میں انتقال

  پاکستان کے سابق صدر پرویز مشرف کا اتوار کے روز انتقال ہو گیا، ان کی عمر 79 برس تھی۔ پاکستانی میڈیا کے مطابق سفارتی ذرائع نے سابق صدر جنرل (ر) پرویز مشرف کے انتقال کی تصدیق کی ہے۔ پرویز مشرف طویل عرصے سے امریکن اسپتال دبئی میں زیر علاج تھے۔

ٹیک کمپنیوں میں نہیں تھم رہا چھنٹنی کا دور، جنوری ماہ میں عالمی سطح پر ایک لاکھ ملازمین ہوئے بے روزگار!

ٹیک کمپنیوں سے جڑے ملازمین کے لیے جنوری ماہ اب تک کا سب سے خراب مہینہ کہا جا سکتا ہے۔ عالمی سطح پر جنوری 2023 میں تقریباً ایک لاکھ ٹیک ملازمین نے اپنی ملازمتیں گنوا دی ہیں۔ ملازمین کی چھنٹنی کرنے والوں میں امیزن، مائیکروسافٹ، گوگل، سیلس فورس جیسی مشہور کمپنیاں شامل ہیں۔ میڈیا ...