بھٹکل میں اردو زبان کے فروغ ، ترقی اور اہمیت کے موضوع پر سیمنار کا انعقاد

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 3rd October 2019, 8:42 PM | ساحلی خبریں |

بھٹکل:03؍اکتوبر(ایس اؤ نیوز)کرناٹکا اردو اکیڈمی بنگلورو اور برمِ محبان اردو بھٹکل کےا شتراک سے 3اکتوبر 2019بروز جمعرات کو الافراح شادی ہال میں اردو زبان کی ابتداء، ارتقاء ، اہمیت ، اردو تعلیم وتدریس ، صحافت وغیرہ کے موضوع پر سیمنار کا انعقاد ہوا۔

سمینار کا افتتاح کرتے ہوئے کرناٹکا اردواکیڈمی کے سابق چیرمن مبین منور نے کہاکہ ملک اور ریاست میں اس وقت جو اردو کی جو ابتر حالت ہے  اس سے باہر نکلنے اور اردو کی ترقی و بقا کے لئے اردو سے وابستہ افراد ایک سپاہی کے طورپر جنگی پیمانے پر کام کرنے  کی ضرورت ہے۔  ہم اسی کو اپنا مقصد بنائیں۔انہوں نے اردو کی سرزمین بھٹکل میں منعقدہ سمینار میں عوام کی شرکت بہت ہی کم ہونے پر افسوس جتایا۔  نائب صدر آل انڈیا امام کونسل مولانا محمود معظم قاسمی گنگولی نے مشاہیر جنگ آزادی اور موجودہ ملکی حالات پر خیالات کااظہار کرتے ہوئے کہاکہ جن اردو دانوں نے ، مدارس کے علماء نے جنگ آزادی میں حصہ لیاتھا انہی پر الزام تراشیاں اور شکوک و شبہات کے تیر چلائے جارہے ہیں اور جن کا آزادی کی جنگ میں کوئی حصہ نہیں تھا وہ آج برسر اقتدار ہیں۔ اس کا واحد سبب  یہی ہے کہ پچھلے 65برسوں میں مسلمانوں نے لگاتار کانگریس کو ووٹ دیتے رہے ، مگر دیکھئے 2014سے لےکر آج تک جتنے بھی حادثات ہوئے  ہیں کوئی ایک کانگریسی لیڈر بھی پارلیمنٹ میں مسلمانوں کے متعلق آواز نہیں اٹھائی۔ مسلمان بیساکھیوں کے سہارے چلتے رہے ، بیساکھی ٹوٹی تو یہ بھی ٹوٹ کر رہ گئے۔

انجمن حامئی مسلمین بھٹکل کے صدر عبدالرحیم جوکاکو نے مہمان خصوصی کی حیثیت سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ اردو کی بقا، ترقی کے لئے جس طرح کی کوششیں ہونی چاہئے ویسی نہیں ہورہی ہے۔ انجمن ادارے کی طرف سے اردو میڈیم طلبا کے لئے ہرطرح کی  مکمل مفت سہولیات دی جاتی ہیں، اس کے باوجود کوئی طلبا داخلہ لینا پسند نہیں کرتے، غالباً مستقبل کو دھیان میں رکھتے ہوئے انگریزی کوترجیح دیتےہیں،  جب کہ ایسا نہیں ہے،عوام کا یہ خیال غلط ہے کہ اردو میڈیم میں تعلیم حاصل کرنے سے مستقبل نہیں بنتا ، بلکہ ایسے کئی لوگ ہیں جو اردو میڈیم سے پڑھ کر ترقی پائے ، ان کی انگریزی ، کنڑا سب اچھی ہے۔ دراصل اردو والے صرف ادب، شاعری پر ہی توجہ دیتے ہیں ،جب کہ سائنس، ریاضی  ودیگر مضامین کی کتب کی بہت کمی ہے اگر اردو والے اس طرف توجہ دیں تو کافی کچھ فرق ہونےکی بات کہی۔ سمینار میں قاضیانِ شہر  مولانا  خواجہ معین الدین اکرمی ندوی مدنی ، مولانا عبدالعظیم  قاضیا ندوی ،امام و خطیب مکہ مسجد  بنگلورومولانا آیت اللہ قاسمی اور نقش نوائط کے مدیر اعلیٰ مولانا عبدالعلیم قاسمی نے اردو کے فروغ، اردوصحافت، مسلمانوں کی تعلیمی شرح  جیسے عنوانات پر اظہار خیال کیا۔ بھٹکل سی پی آئی رام چندر نائک نے بھی اپنی چندکنڑا نظموں کو پیش کیا۔ مجلس اصلاح وتنظیم کے جنرل سکریٹری عبدالرقیب ایم جے نے سیمنار کی صدارت کی۔ اس موقع  جامعہ اسلامیہ بھٹکل کے ناظم محمد شافی شاہ بندری پٹیل،کینرا خلیج کونسل کے صدر عبدالقادر باشاہ رکن الدین  اور بزم محبان اردو بھٹکل کے صدر عبدالمجیب خیال موجود تھے۔

سیمنار کا آغاز حافظ اقبال بنگالی کی تلاوت قرآن سےہوا۔ مستنیر چمپا نے نعت پیش کی۔ مولانا محمد جعفر فقی بھاؤ ندوی نے استقبال کرتے ہوئے مہمانوں کا تعارف پیش کیا۔مولوی عبدالمغنی اکرمی ندوی نے نظامت کے فرائض انجام دئیے۔ حسن قاضیا نے شکریہ اداکیا۔ منتظمین کی جانب سے ظہرانہ کا انتظام کیاگیا تھا۔ سمینار میں شرکاء کی تعداد بہت ہی کم ہونے پر عوام نے مایوسی کا اظہار کیا۔

ایک نظر اس پر بھی

اُترکنڑا میں بھٹکل کے 9لوگوں سمیت 23 لوگوں کی رپورٹ آئی پوزیٹیو؛ مینگلور اسپتال میں بھی بھٹکلی خاتون کی رپورٹ پوزیٹیو آنے کی خبر

ضلع اُترکنڑا میں کورونا کے مزید معاملات آج اتوار کو بھی سامنے آئے ہیں جس میں بھٹکل کے بھی 9 معاملات شامل ہیں۔ ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق  کمٹہ سے 5، منڈگوڈ  اور ہلیال سے 3، 3، انکولہ، کاروار، سرسی سے ایک ایک کی رپورٹ کورونا پوزیٹو آئی ہے۔

بھٹکل:کورونا سے متاثرہ لوگ سونارکیری اسکول سے ویمن سینٹر منتقل؛ جےڈی نائیک سمیت کئی لیڈران کی رپورٹ آنی باقی

بھٹکل میں  کورونا کے تیسرے حملے میں جہاں ایک طرف دو لوگ جاں بحق ہوگئے وہیں   اب تک  بھٹکل میں 63 لوگ کورونا سے متاثر پائے گئے ہیں، بھٹکل کی ایک معروف  شخصیت مینگلور اسپتال میں ایڈمٹ ہیں تو دیگر لوگ بھٹکل سونارکیری اسکول اور بھٹکل تعلقہ سرکاری اسپتال میں داخل کئے گئے تھے ۔ اب ...

آج 16 پوزیٹیو آنے والوں میں تین دبئی سے اور آٹھ وجے واڑہ سے لوٹے لوگ شامل

بھٹکل کے آج جن 16 لوگوں کی رپورٹ کورونا  پوزیٹیو آئی ہے، اُن میں سے تین لوگ دبئی سے آئے ہوئے لوگ ہیں، آٹھ لوگ وجئے واڑہ ،  تین لوگ  اُترپردیش  اور مہاراشٹرا سے لوٹا ہوا ایک شخص بھی آج کی لسٹ میں شامل ہیں۔

کورونا اَپ ڈیٹ:جنوبی کینرامیں آج صبح سے اب تک ہوئی 2افراد کی موت۔ضلع میں ہلاک ہونے والوں کی تعداد ہوئی 22

جنوبی کینرا میں کورونا وباء کے اثرات بہت زیادہ سنگین صورت اختیار کرتے جارہے ہیں۔ آج صبح سے اب تک کووِڈ کے 2 مریض موت کا شکار ہوگئے ہیں جس کے بعد ضلع میں وباء کی وجہ سے ہلاک ہونے والوں کی تعداد 22ہوگئی ہے۔

بھٹکل میں نجی اسپتال کی نرس کو لگ گیا کورونا کا مرض۔ایس ایس ایل سی کی طالبہ نرس کی بیٹی کو کیا گیا ہوم کوارنٹین

ایک نجی اسپتال میں خدمات انجام دینے والی نرس کو کووِڈ کا مرض لاحق ہونے کے بعدایس ایس ایل سی کا امتحان دے رہی اس کی بیٹی کو امتحان سے باز رکھتے ہوئے ہوم کوارنٹین کیا گیا ہے۔

بھٹکل ٹاؤن، ہیبلے پنچایت اور جالی پنچایت علاقوں میں لاگو رہے گارات کا کرفیو۔سیل ڈاؤن کیے جارہے ہیں ’ہاٹ اسپاٹس‘

بھٹکل تعلقہ میں کورونا وباء کی بدلتی صورتحال پر قابو پانے کے لئے ضلع انتظامیہ نے لاک ڈاؤن قوانین میں دوبارہ کچھ سختی برتنے کافیصلہ کیا ہے۔اسی کے تحت جمعہ کے دن شام میں منعقدہ ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے اسسٹنٹ کمشنر بھرت ایس نے عوام کے لئے جو ہدایات جاری کیں اس کے مطابق ...