یڈ یورپا نے اسمبلی و پارلیمنٹ کے اراکین کی 24مئی کو میٹنگ بلائی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 21st May 2019, 10:54 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو، 21مئی (ایس او نیوز/یو این آئی) مختلف ایکزٹ پول میں کرناٹک میں ہوئے لوک سبھا انتخابات میں بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کی بڑی جیت کی پیشن گوئی سے پر جوش پارٹی کے ریاستی بی جے پی کے صدر اور اسمبلی میں اپوزیشن کے لیڈر بی ایس یدی یورپا نے ووٹوں کی گنتی کے دوسرے دن 24مئی کو نومنتخب راکین پارلیمنٹ کے ساتھ پارٹی کے اراکین اسمبلی کی میٹنگ بلائی ہے۔پارٹی کے ذرائع کے مطابق مسٹر یدی یورپا نے پہلے یہ میٹنگ 21مئی کو بلانے کامنصوبہ بنایا تھا لیکن اب جمعہ تک کے لئے میٹنگ ملتوی کردی گئی ہے۔تقریباََ تمام ایگزٹ پول جائزوں میں کرناٹک کی مجموعی 28لوک سبھا سیٹوں میں سے بی جے پی کو 18سے 25سیٹیں تک ملنے کی امید ظاہر کی گئی ہے۔ یہ ریاست میں حکمراں اتحادکے معاونین کانگریس اور جنتادل (ایس) کے متحد ہونے کے بعد بھی ممکنہ نتائج کے برعکس ہے۔ پولنگ کے بعد جائزوں میں اتحادی معاونین کے کھاتہ میں صرف تین سے دس سیٹیں جیتنے جانے کا دعوی کیا گیا ہے جو پیشن گوئی کے مقابلہ بہت کم ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

بنگلورو کی خواتین اب بھی ”گلابی سارتھی“ سے واقف نہیں ہیں

بنگلورو میٹرو پالیٹن ٹرانسپورٹ کارپوریشن (بی ایم ٹی سی) نے اسی سال جون کے مہینہ میں خواتین کے تحفظ کے پیش نظر اور ان پر کی جانے والے کسی طرح کے ظلم یا ہراسانی سے متعلق شکایت درج کرانے اور فوری اس کے ازالہ کے لئے 25 خصوصی سواریاں جاری کی تھی جنہیں ”گلابی سارتھی“ کا نام دیا گیا،

بی ایم ٹی سی کے رعایتی بس پاس کے اجراء کی کارروائی اب بھی جاری مگر کارپوریشن نے اب تک 38,000 درخواستیں مسترد کی ہے

بنگلور میٹرو پالیٹن ٹرانسپورٹ کارپوریشن (بی ایم ٹی سی) نے طلباء کی طرف سے رعایتی بس پاس حاصل کرنے کے لئے داخل کردہ کل 38,224 درخواستوں کو اب تک رد کر دیا ہے اور اس کے لئے یہ وجہ بیان کی گئی ہے کہ ان کے تعلیمی اداروں کی طرف سے ان طلباء کی تفصیلات مناسب انداز میں فراہم نہیں کی گئی ہیں۔