یوپی: ایم ایل اے وجے مشراسمیت 3 افراد کے خلاف عصمت دری کا مقدمہ درج

Source: S.O. News Service | Published on 18th October 2020, 10:46 PM | ملکی خبریں |

بھدوہی،18اکتوبر(آئی این ایس انڈیا)اترپردیش کے بھدوہی ضلع کی گیان پور سیٹ سے آزاد ایم ایل اے وجے مشراکے خلاف عصمت دری کامقدمہ درج کیاگیاہے۔

بھدوہی کے گوپی گنج پولیس اسٹیشن میں وجے مشراپرجنسی زیادتی کا مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ نیز متاثرہ لڑکی نے یہ الزام لگایا ہے کہ سن 2014 سے وجے مشرا اس کا جسمانی استحصال کررہے تھے۔اترپردیش کے ایم ایل اے وجے مشراسمیت تین افرادکے خلاف عصمت دری کا مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

الزام لگانے والی لڑکی کے مطابق سال 2014 میں پہلی بار وجے مشرانے اس کاجسمانی استحصال کیا تھا۔ اس کے بعد وہ کال کرتا تھا اور استحصال کرتا تھا اور فون پرفحش بات بھی کرتا تھا۔ اس کے علاوہ وہ کچھ بتانے پر کسی کو جان سے مارنے کی دھمکیاں دیتا تھا۔وجے مشرا کے علاوہ وشنو مشرا اور وکاس مشرا کے خلاف عصمت دری کا مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

ایف آئی آرمیں متاثرہ لڑکی نے کہاہے کہ سنہ 2014 میں وجے مشرا نے گانے کا پروگرام طلب کیا تھا۔ جب میں پروگرام کے لیے پہونچی اور اندر کپڑے بدل رہی تھی، اسی وقت وجے مشراکمرے میں آگیا اور مجھے دھمکیاں دے کر جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا۔

متاثرہ نے بتایاہے کہ اس کے بعد مجھے جان سے مارنے کی دھمکی بھی دی گئی تھی۔ اس کے بعدمجھے ملازمت کے بہانے 2015 میں الہ آباد بلایا اور وہاں بھی جسمانی استحصال کیا۔ اس نے میرا ویڈیوکلپ بھی رکھاہواہے۔ اسی کے ساتھ وجے مشرا کے بڑے جرائم سے وابستہ ہونے کی وجہ سے وہ خوف کے سبب کسی کو کچھ نہیں بتا سکی۔

ایک نظر اس پر بھی

جموں وکشمیر پولس کی اپیل؛ بندوق اٹھانے والے بچے بندوق چھوڑ دیں، ان کی ہر ممکن مدد کی جائے گی

جموں و کشمیر پولیس کے سربراہ دلباغ سنگھ نے ملی ٹینسی کا راستہ اختیار کرنے والے مقامی نوجوانوں سے قومی دھارے میں واپس لوٹنے کی اپیل کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہمارے جن بچوں نے غلط راستہ اختیار کیا ہے اگر وہ واپس آئیں گے تو انہیں کسی طرح کا کوئی نقصان نہیں ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ ان بچوں کی ...

کیا بہار این ڈی اے میں سب کچھ ٹھیک نہیں؟ نتیش کی آبادی کے حساب سے ریزرویشن کی مانگ پر بی جے پی غیر متفق

بہار انتخابات میں این ڈی اے میں سب کچھ ٹھیک ٹھاک نہیں چل رہا ہے۔ اس کی مثال اس وقت نظر آئی جب وزیر اعلیٰ نتیش کمار نے ایک انتخابی ریلی سے مطالبہ کیا کہ ریزرویشن طبقہ کی آبادی کے حساب سے ہونا چاہیے،

ہندوستان میں کورونا کے نئے کیسز کی تعداد پھر 50 ہزار سے کم، فعال کیسز میں لگاتار کمی

ملک میں لگاتار چھٹے دن کورونا وائرس کے نئے کیسز 50000 سے بھی کم رپورٹ ہوئے ہیں اور اس جان لیوا وبا سے شفایاب ہونے والے مریضوں کی تعداد زیادہ رہنے سے اموات اور ایکٹیو کیسز کی شرح میں کمی آرہی ہے۔