نفرت کو مٹانے اور بھائی چارگی کو عام کرنے اُڈپی میں آج منعقد ہورہا ہے شاندار کنونشن ؛ ہزاروں لوگوں کی شرکت متوقع؛ بھٹکل سے اُڈپی کے لئے سواریوں کا انتظام؛ ساحل آن لائن پر ہوگا لائیو ٹیلی کاسٹ

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 14th May 2022, 1:00 AM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

بھٹکل 14/مئی (ایس او نیوز)  ریاست کرناٹک  میں مسلمانوں کے خلاف عام ہندوں کے دلوں میں نفرت  پیدا کرنے کی مسلسل کوششوں کو دیکھتے ہوئے بھٹکل کے پڑوسی علاقہ  اُڈپی میں  امن و شانتی اور بھائی چارہ کی فضا قائم کرنے کے مقصد سے  ریاست گیر سطح پر ایک عظیم الشان جلسہ منعقد کیا گیا ہے جس میں  ریاست کے تمام اضلاع سے لوگ شریک ہورہے ہیں۔ پروگرام آج  سنیچر 14 مئی کو  دوپہر دو بجے شروع ہوگا۔

بھٹکل کا قومی سماجی ادارہ مجلس اصلاح و تنظیم نے عوام الناس سے  اس اجلاس میں کثیر تعداد میں شریک ہونے  کی درخواست کی ہے، اس تعلق سے جمعہ کی نمازوں کے  بعد تمام جامع مسجدوں  میں اُڈپی میں ہونے والے اجلاس کی معلومات فراہم کرتے ہوئے پروگرام میں شریک ہونے  کے لئے اعلانات بھی ہوئے ہیں۔تنظیم   جنرل سکریٹری عبدالرقیب ایم جے ندوی نے بتایا  کہ اس اجلاس میں شریک ہونے کے لئے نوائط کالونی وائی ایم ایس اے میدان کے باہر سواریوں کا  انتظام کیا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ فی الحال پانچ ٹیمپووں کا انتظام کیا گیا ہے، اگر لوگ زیادہ تعدا د میں  جمع ہوتے ہیں تو مزید ٹمپووں کا انتظام کیا جائے گا۔ انہوں نے بتایا کہ وائی ایم ایس اے میدان سے صبح گیارہ اور ساڑھے گیارہ بجے کے درمیان ٹمپو اُڈپی کے لئے نکلے گی۔

 تنظیم کی ہدایات پر  بھٹکل مسلم یوتھ فیڈریشن کی طرف  سے بھی  کثیر تعداد میں لوگوں کو اُڈپی کے پروگرام میں شریک کرانے کی کوششیں  کی گئی ہیں  اس تعلق سے بھٹکل مسلم یوتھ فیڈریشن کے صدر عزیز الرحمن رکن الدین ندوی  نے بتایا کہ    مختلف محلوں سے بھی لوگ اپنے اپنے طور پر سواریوں کا انتظام کرکے اُڈپی کے پروگرام  میں  پہنچ رہے ہیں ۔ انہوں نے بتایا کہ  بعض شرپسند عناصر ریاست کرناٹک میں مسلسل ماحول کو بگاڑنے اور منظم سازش کے تحت نئے نئے ایشوز پیدا کرکے عام ہندوں کے دلوں میں مسلمانوں کے تئیں نفرت اور دہشت پیدا کرنے کی کوشش کررہے ہیں، ایسے میں ہمیں امن پسند لوگوں کے تعاون سے شرپسندوں کے منصوبوں کو ناکام بنانے کی کوشش کرنا ضروری ہے۔

اُدھر اُڈپی میں ساحل آن لائن سے گفتگو کرتے ہوئے پروگرام کے   اہم ذمہ دار پروفیسر فنی راج نے بتایا کہ  گذشتہ پانچ چھ ماہ سے ریاست کے اقلیتوں  کو جس طرح  نشانہ بنایا جارہا ہے، اس کے خلاف آواز اُٹھانا ضروری ہے، انہوں نے کہا کہ کبھی کپڑوں (حجاب)کو لے کر تنازعہ پیدا کیا جارہا ہے، تو کبھی دکانداروں کو دکانیں لگوانے سے روک کر نفر ت کی فضاء  پھیلائی جارہی ہے، ایسے حالات کو دیکھتے ہوئے  ہندو،مسلم ،عیسائی تمام مذاہب کے  دانشوران، سوامی، علماء ، سماجی کارکنان وغیرہ  کو  لے کر اُڈپی میں پروگرام رکھا گیا ہے، اس پروگرام کا مقصد فرقہ پرستوں کے عزائم کو ناکام بنانا ہے، اسی طرح  سماج میں امن و امان  اور بھائی چارگی کی فضا کو بحال کرنا ہے۔ پروفیسر فنی راج نے تمام مذاہب کے لوگوں سے اس پروگرام میں شریک ہونے کی درخواست کی۔

پروگرام کے کنوینر حُسین کوڈی نے ساحل آن لائن کو بتایا کہ  پروگرام سنیچر دوپہر دو بجے جلوس کے ساتھ شروع ہوگا، جس کےلئے لوگوں کو دوپہر ایک بجے سے ہی جمع کرایا جائے گا۔آگے بتایا کہ  پروگرام میں ریاست بھر سے بیس ہزار سے بھی زائد لوگ شریک ہونے کی توقع ہے۔ انہوں نے بتایا کہ جلوس  یا یونیٹی مارچ اُڈپی کے شہید چوک ، اجّرکاڈ سے شروع ہوگا اور چار بجے مشن کمپاونڈ پہنچ کر جلسہ گاہ میں تبدیل ہوگا۔ چار بجے  یکجہتی کنونشن شروع ہوگا جس کے لئے   ملک کے معروف حقوق انسانی   کے علمبردار، یوگیندر یادو ، دہلی سے تشریف لارہےہیں۔سابق آئی اے ایس آفیسر ششی کانت سینتھل کی صدارت میں منعقدہ اس کنونشن میں عیسائی رہنما ڈاکٹر رونالڈ،   دلت لیڈر  ماولّی شنکر،  آر موہن راج،  ایچ آر بسوراجپا،  چمراسا مالی پاٹل، چُکّی ننجنڈا سوامی،  خاتون سماجی کارکن  کے نیلا،  مسلم کمیونٹی لیڈر  محمد سعد بیلگامی،  صبیحہ فاطمہ، نجمہ چیکنّے رالے سمیت مختلف مذاہب  کے رہنما اور دانشوران شریک ہوں گے۔

پورا پروگرام ساحل آن لائن پر لائیو ٹیلی کاسٹ کیا جائے گا۔لائیو دیکھنے کے لئے اس لنک پر کلک کرسکتے ہیں:

https://www.youtube.com/watch?v=E1msXMUIJZI&ab_channel=SahilOnlineTVnews

(لائیو ٹیلی کاسٹ دیکھنے کےلئے قارئین سے درخواست ہے کہ  وہ پہلی فرصت میں ساحل آن لائن یو ٹیوب چینل  (http://youtube.com/sahilonlinevideo)  کو سبسکرائب کریں، جیسے ہی لائیوٹیلی کاسٹ اسٹارٹ ہوگا یا کوئی بھی وڈیو آپ لوڈ ہوگی تو  فوری آپ کو اپنے موبائل پر مسیج موصول ہوگا)

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل کے قریب شیرور سمندر میں بوٹ ڈوب گئی؛ کئی گھنٹوں تک پتہ نہ چلنے کے بعد دوسری بوٹ کے ذریعے ماہی گیر کنارے پہنچنے میں کامیاب

پڑوسی علاقہ شیرور (ضلع اُڈپی)  سمندر میں  ماہی گیری بوٹ ڈوب جانے سے ماہی گیر بُری طرح سمندر میں پھنس گئے تھے، مگر فوری طور پر دوسری بوٹ ان کی مدد کو پہنچ گئی اور پانچوں ماہی گیروں کو بچاکر کنارے لانے میں کامیاب ہوگئی۔ واردات اتوار شام قریب ساڑھے چار بجے کی ہے۔ 

بھٹکل تعلقہ میں بارش سے پیش آنے والے حادثات کے موقع پر فوری کارروائی کے لئے نوڈل افسران نامزد

سال 2022کےمانسون  بارش کے دوران بھٹکل تعلقہ میں پیش آنے والے سماوی حادثات کے موقع پر فوری توجہ دیتے ہوئے امداد پہنچانے اور تعلقہ کی مکمل نگرانی کی سخت ضرورت  رہتی ہے۔تعلقہ میں موسلادھار یا تیز بارش کی وجہ سے عوام کو ہونے والی مشکلات و پریشانی ، جانی ، مالی ،جانوراور فصل کے ...

حجاب کیس: ججوں کو دھمکیاں دینے والے شخص کی درخواست ضمانت مسترد

بنگلورو کی ایک سیشن عدالت نے تمل ناڈو کے ترونیل ویلی سے تعلق رکھنے والے رحمت اللہ کی ضمانت کی درخواست مسترد کر دی ہے، جو حال ہی میں کلاس رومز میں حجاب پہننے پر فیصلہ سنانے والے کرناٹک ہائی کورٹ کے ججوں کی جان کو مبینہ طور پر خطرے میں ڈالنے کے الزام میں عدالتی حراست میں ہے۔ سٹی ...

صد فیصد مارکس لینے والے اردو میڈیم طلبہ کا ذکر نہ ہونے پر ایس ایس ایل اسی بورڈ سے بزم اردو وجئے پور نے چاہی وضاحت

بزم اردو وجئے  پور نے ایس ایس ایل کی بورڈ بنگلورو سے وضاحت طلب کی ہے کہ امسال ایس ایس ایل سی اردو میڈیم میں 625 میں سے 625 مارکس حاصل کرنے والے اردو میڈیم طلبہ کو آیا دور رکھا گیا ہے یا پھر اردو میڈیم کے طلبہ قابل نہیں تھے۔

بنگلور: ایس ایس ایل سی نتائج کے بعد پرائیویٹ سمیت سرکاری کالجوں میں بھی رش ۔ پی یوسی میں داخلہ لینے کالج میں طلبہ اوروالدین کی لمبی قطاریں

ایس ایس ایل سی امتحانات کے نتائج کے اعلان کے بعد پی یوکالجوں میں داخلہ کارروائی زوروں سے شروع ہوگئی ہے۔والدین اورطلبہ قطاروں میں کھڑے ہوکر فارم لیتے ہوئے عرضیاں پر کررہے ہیں۔ بنگلورو شہرکے معروف کالجوں میں عرضی حاصل کرنے کے لیے کلو میٹرکی مسافت تک کھڑے ہوئے والدین عرضیاں ...

بنگلورو کے ترقیاتی کاموں کی نگرانی کیلئے8ٹاسک فورس قائم کرنے کا فیصلہ:   وزیر اعلیٰ  بسواراج بومئی

  وزیر اعلیٰ  بسواراج بومئی نے کہا کہ بنگلورو میں ترقیاتی کاموں کی نگرانی اور شدید بارش جیسی کسی بھی ہنگامی صورت حال میں درکار فیصلے لینے کے لیے شہر کے تمام آٹھ زونس میں وزیر کی قیادت میں ٹاسک فورس تشکیل دی جائے گی۔ چیف منسٹر نے ارکا ن اسمبلی اور وزراء کے ہمراہ جمعہ کو شہر کے ...

گیان واپی مسجد کےخلاف سازشیں ناکام بنائیں،عبادت گاہوں سے متعلق ایکٹ 1991ء کو نافذ کرنے کا مطالبہ ، ایس ڈی پی آئی کا ریاست گیر احتجاجی مظاہرہ

سوشیل  ڈیموکریٹک پارٹی آف انڈیا نے وارانسی میں گیان واپی مسجد کے ایک حصے کو سیل کرنے کے وارانسی عدالت کے حکم پر سخت اعتراض کرتے ہوئے ‘گیان واپی مسجد کے خلاف سازشیں ناکام بنائیں۔ عبادت گاہوں کے ایکٹ 1991کو نافذ کرو ‘کے مطالبے کے تحت بنگلور، میسور، چتر ...