عراق مظاہروں میں سیکڑوں ہلاکتیں، سلامتی کونسل کا تحقیقات کا مطالبہ

Source: S.O. News Service | By INS India | Published on 14th December 2019, 8:22 PM | عالمی خبریں |

دبئی 14 دسمبر (آئی این ایس انڈیا)اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل نے عراق میں حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ مظاہرین کے خلاف پرتشدد واقعات اور کریک ڈاؤن کے حوالے سے تحقیقات کرائیں۔ اس سے قبل عراق میں انسانی حقوق کے کمیشن نے اعلان کیا تھا کہ ملک میں جاری عوامی مظاہروں اور احتجاج میں سیکڑوں افراد ہلاک ہو چکے ہیں جب کہ سماجی کارکنان کے اغوا اور قتل کی کارروائیوں میں اضافہ ہو رہا ہے۔ہفتے کے روز سلامتی کونسل کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ سلامتی کونسل کے ارکان نے (عراق میں) مظاہرین کی ہلاکتوں پر گہری تشویش کا اظہار کیا ہے، اسی طرح نہتے مظاہرین کے خلاف قتل اور جبری گرفتاریوں کا کارروائیاں بھی باعث تشویش ہیں۔سلامتی کونسل نے باور کرایا کہ اسے عراق میں مظاہرین کو قتل کرنے اور نشانہ بنانے کی کارروائیوں میں مسلح جماعتوں کے ملوث ہونے پر بھی نہایت تشویش ہے۔یاد رہے کہ یکم اکتوبر کو دارالحکومت بغداد اور جنوبی صوبوں میں بھرپور احتجاجی مظاہروں کے آغاز کے بعد سے عراق میں پرتشدد واقعات دیکھے جا رہے ہیں۔ اس دوران کئی مقامات پر مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے براہ راست فائرنگ بھی کی گئی۔ اس کے نتیجے میں سیکڑوں افراد اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے۔تازہ ترین اعداد و شمار کے حوالے سے دو خبر رساں ایجنسیوں رائٹرز اور اے ایف پی نے طبی ذرائع اور عراقی پولیس کے ذمے داران کے حوالے سے بتایا کہ مظاہروں میں ہلاک ہونے والے افراد کی تعداد 400 سے زیادہ ہو چکی ہے۔واضح رہے کہ عراقی دارالحکومت بغداد اور جنوبی شہروں میں تقریبا ڈھائی ماہ سے جاری عوامی احتجاج 2003 میں صدام حسین کی حکومت کے خاتمے کے بعد عراق میں حکمراں سیاسی طبقے کو درپیش مشکل ترین چیلنج کی صورت اختیار کر گیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

انڈونیشیا میں پل گرنے سے9 افراد دریا میں ڈوب کرہلاک؛ 17 کو بچالیا گیا

انڈونیشی جزیرے سماٹرا میں پیدل چلنے والے افراد کے لیے بنائے گئے پل کے گرنے سے نو افراد دریا میں ڈوب گئے ہیں۔ کسی حد تک کمزور پل دریا میں آنے والے زوردار سیلابی ریلے کو برداشت نہ کر سکا۔ اس سیلاب کی وجہ اتوار انیس جنوری کو ہونے والی زور دار بارش تھی۔

آسٹریلیا میں شدید ژالہ باری اور طوفان باد و باراں 

مختلف آسٹریلوی علاقوں کو آج زوردار طوفانِ باد و باراں کے ساتھ ساتھ شدید ژالہ باری کا سامنا رہا۔ انتہائی تیز ہوا، شدید بارش اور ژالہ باری نے لوگوں کو مالی نقصان پہنچایا ہے۔ کم از کم دو افراد ژالے لگنے سے زخمی ہوئے ہیں اور انہیں ہسپتال پہنچا دیا گیا ہے۔

روسی شہر پرم میں گرم پانی کی پائپ لائن پھٹنے سے پانچ افراد ہلاک

روسی شہر پَرم میں شدید گرم پانی کی پائپ لائن پھٹنے سے کم از کم پانچ افراد کے ہلاک ہونے کی تصدیق کر دی گئی ہے۔ کھولتا گرم پانی ایک ہوٹل کی بیسمنٹ کے کمروں میں داخل ہو گیا اور ان کمروں میں ٹھہرے افراد گرم پانی کی لپیٹ میں آ گئے۔ تین دوسرے افراد گرم پانی سے جھلس گئے ہیں اور انہیں ...

چینی ہیکروں نے اسرائیلی’آئرن ڈوم‘ سسٹم کا ڈیٹاچرایا: رپورٹ

امریکی جریدے ''National Interest'' کے مطابق چینی ہیکروں نے اسرائیل کے دفاعی میزائل سسٹم (آئرن ڈوم) کو ہیک کر کے اس کا ڈیٹا چرا لیا۔جریدے کا کہنا ہے کہ چینی ہیکروں نے آئرن ڈوم سے متعلق ڈیٹا اسرائیلی عسکری ٹکنالوجی کی کمپنیوں کے کمپیوٹروں سے چُرایا۔ یہ ڈیٹا ’ایرو 3‘ میزائلوں، فضائی آلات، ...

سی اے اے اور این آرسی کی ضرورت ہی کیا ہے؟ شہریت ترمیمی قانون اور قومی شہریت رجسٹرہندوستان کا اندرونی معاملہ ضرور لیکن؟ بنگلہ دیش کی وزیراعظم شیخ حسینہ نے کیا سوال؟

وزیراعظم نریندرمودی کے شہریت ترمیمی قانون (سی اے اے) کے خلاف جہاں ایک طرف پورا ملک سراپا احتجاج ہے وہیں ہندوستان کے سب سے قریبی ملکوں میں شامل بنگلہ دیش کی وزیراعظم شیخ حسینہ نے سوال کیا ہے کہ آخرسی اے اے کی ہندوستان کو ضرورت کیوں پڑگئی- انہوں نے یہ بھی کہاکہ سی اے اے اور این ...

فلسطینی مظاہرین پر اسرائیلی فوج کے حملے، 53 شہری زخمی

فلسطین میں قابض صہیونی ریاست کے جرائم کے خلاف مسلسل احتجاج کرنے والے فلسطینیوں پر صہیونی فوج کے حملے جاری ہیں۔ گذشتہ ہفتے اسرائیلی فوج کی انتقامی وحشیانہ کارروائیوں میں 53 فلسطینی زخمی ہوئے۔ زیادہ تر فلسطینی اسرائیلی فوج کی طرف سے براہ راست فائرنگ سے زخمی ہوئے ہیں۔