روس-یوکرین جنگ کے سبب عالمی غذائی بحران کا اندیشہ، لاکھوں لوگ نقص تغذیہ کے ہو سکتے ہیں شکار!

Source: S.O. News Service | Published on 19th May 2022, 9:31 PM | عالمی خبریں |

اقوام متحدہ،19؍مئی (ایس او نیوز؍ایجنسی) بی بی سی کی ایک رپورٹ کے مطابق اقوام متحدہ نے متنبہ کیا ہے کہ یوکرین پر روس کے حملہ سے جلد ہی عالمی غذائی بحران پیدا ہو سکتا ہے جو سالوں تک بنا رہ سکتا ہے۔ جنرل سکریٹری انٹونیو گٹیرس نے کہا کہ بڑھتی قیمتوں کے سبب غریب ممالک میں جنگ نے غذائی بحران کو بڑھا دیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق اگر یوکرین سے برآمدگی کو جنگ سے پہلے کی سطح پر بحال نہیں کیا گیا تو کچھ ممالک کو طویل مدت تک بحران کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ جنگ کے سبب یوکرین کے بندرگاہوں نے فراہمی میں تخفیف کی ہے، جو کبھی بڑی مقدار میں کھانا پکانے کے تیل کے ساتھ ساتھ مکئی اور گیہوں جیسے اناج کی برآمدگی کرتا تھا۔ اس سے عالمی فراہمی کم ہو گئی ہے اور متبادلوں کی قیمتیں بڑھ گئی ہیں۔ اقوام متحدہ کے مطابق عالمی غذائی قیمتیں گزشتہ سال کی یکساں مدت کے مقابلے میں تقریباً 30 فیصد زیادہ ہیں۔ گٹیرس کا کہنا ہے کہ جنگ اور وبا کے سبب لاکھوں لوگوں کو غذائی بحران اور اس کے بعد نقص تغذیہ اور دیگر مسائل کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔

بی بی سی کی رپورٹ میں گٹیرس کے حوالے سے کہا گیا ہے کہ اگر ہم ایک ساتھ مل کر کام کریں گے تو اب ہماری دنیا میں ضرورت کے مطابق غذا موجود ہے۔ لیکن جب تک ہم اس مسئلہ کا حل نہیں کرتے ہیں، ہم آنے والے مہینوں میں عالمی غذائی بحران کے خطرے کا سامنا کریں گے۔ انھوں نے متنبہ کیا کہ بحران کا واحد اثردار حل یوکرین کے فوڈ پروڈکشن، ساتھ ہی روس اور بیلاروس دونوں میں پیدا اناج کو عالمی بازار میں واپس لینا ہے۔

روس اور یوکرین دنیا کی 30 فیصد گیہوں کی پیداوار کرتے ہیں۔ جنگ سے پہلے یوکرین کو دنیا کی روٹی کی ٹوکری کی شکل میں دیکھا جاتا تھا۔ وہ اپنے بندرگاہوں کے ذریعہ سے ماہانہ 45 لاکھ ٹن زرعی مصنوعات برآمد کرتا تھا۔ جب سے روس نے فروری میں اپنا حملہ شروع کیا تو برآمدگی گر گئی ہے اور قیمتیں آسمان چھو رہی ہیں۔ ہفتہ کو ہندوستان کے ذریعہ گیہوں کی برآمدگی پر پابندی لگانے کے بعد قیمتیں مزید بڑھ گئیں۔

ایک نظر اس پر بھی

انڈونیشیا کے سمندر میں لاپتہ ہونے والے 15 ماہی گیروں کی تلاش جاری

 انڈونیشیا کے بحیرہ ارافورا میں ایک کشتی ڈوبنے سے لاپتہ ہونے والے 15 ماہی گیروں کی تلاش جاری ہے۔ انڈونیشیا کے صوبے پاپوا کے ضلع میروکے میں سرچ اور ریسکیو آفس کے ترجمان درماوان ویدی نے بتایا کہ کے ایم سیتیا مکمور 06 کشتی گزشتہ ہفتے خراب موسم کی وجہ سے سمندر کی تیز لہروں کی زد میں ...

فلپائن کے اقتدار میں مارکوس کنبہ کی واپسی، فرڈینینڈ مارکوس جونیئر بنے نئے صدر

فلپائن کے اقتدار میں مارکوس کنبہ کی واپسی ہوئی ہے اور اسی کے ساتھ دُتیرتے دور کا خاتمہ ہو گیا ہے۔ فلپائن کے آنجہانی لیڈر فرڈینینڈ مارکوس کے بیٹے فرڈینینڈ مارکوس جونیئر نے آج ملک کے 19ویں صدر کی شکل میں حلف لے لیا، وہ سابق صدر روڈریگو دُتیرتے کی جگہ لیں گے۔ مارکوس جونیئر نے ...