اڈپی : اسانی طوفان کے نتیجہ میں مچھیروں کی ہوگئی چاندی - جال میں پھنسیں کئی ٹن سارڈائن مچھلیاں

Source: S.O. News Service | Published on 14th May 2022, 11:04 AM | ساحلی خبریں |

اڈپی 14/ مئی (ایس او نیوز) اسانی طوفان کی وجہ سے سمندر میں جو ہوا کا دباو بنا ہوا تھا اس کے نتیجہ میں غیر متوقع طور پر ساحلی علاقہ کے مچھیروں کی چاندی ہوگئی کیونکہ اچانک سارڈائن (مقامی زبان میں تارلی) مچھلیوں کا ہجوم ساحل کی طرف امڈ پڑا جو سمندر میں بچھائے جال میں پھنس گیا ۔ 

ایک اندازے کے مطابق ایک ہی جھٹکے میں جو کئی ٹن سارڈائن مچھلیاں مچھیروں کے ہاتھ لگی ہیں ان کی قیمت 30 لاکھ روپے سے زیادہ ہو سکتی ہے ۔

 اپنے اندر پائے جانے والی بہت زیادہ مقوی چربی اور تیل کی وجہ سے تارلی مچھلی کی مانگ ہر وقت رہتی ہے ۔ ویسے بھی یہ کم قیمت پر بکنے والی مزیدار مچھلی ہے ۔ عام طور پر ماہی گیری کا سیزن شروع ہوتے ہی یا پھر سیزن کے اختتام پر یہ بڑی تعداد میں دستیاب ہوتی ہیں ۔اس کا شکار پرسیئن purse seine کشتیوں سے کیا جاتا ہے ۔ اور امسال ماہی گیری کا سیزن ختم ہونے کی وجہ سے اکثر کشتیاں سمندر سے واپس آچکی ہیں ۔ اتفاق سے جو بچی کچھی کشتیاں سمندر میں موجود تھیں سارڈائن کا ہجوم ان کے جال میں پھنس گیا جس سے ان کی لاٹری نکل آئی ۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل کے قریب شیرور سمندر میں بوٹ ڈوب گئی؛ کئی گھنٹوں تک پتہ نہ چلنے کے بعد دوسری بوٹ کے ذریعے ماہی گیر کنارے پہنچنے میں کامیاب

پڑوسی علاقہ شیرور (ضلع اُڈپی)  سمندر میں  ماہی گیری بوٹ ڈوب جانے سے ماہی گیر بُری طرح سمندر میں پھنس گئے تھے، مگر فوری طور پر دوسری بوٹ ان کی مدد کو پہنچ گئی اور پانچوں ماہی گیروں کو بچاکر کنارے لانے میں کامیاب ہوگئی۔ واردات اتوار شام قریب ساڑھے چار بجے کی ہے۔ 

بھٹکل تعلقہ میں بارش سے پیش آنے والے حادثات کے موقع پر فوری کارروائی کے لئے نوڈل افسران نامزد

سال 2022کےمانسون  بارش کے دوران بھٹکل تعلقہ میں پیش آنے والے سماوی حادثات کے موقع پر فوری توجہ دیتے ہوئے امداد پہنچانے اور تعلقہ کی مکمل نگرانی کی سخت ضرورت  رہتی ہے۔تعلقہ میں موسلادھار یا تیز بارش کی وجہ سے عوام کو ہونے والی مشکلات و پریشانی ، جانی ، مالی ،جانوراور فصل کے ...