ٹوئٹر کے دو سابق ملازمین پر سعودی عرب کیلئے جاسوسی کا الزام

Source: S.O. News Service | By INS India | Published on 7th November 2019, 6:24 PM | عالمی خبریں |

نیویارک،7نومبر(آئی این ایس انڈیا)امریکہ میں سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر کے دو سابق ملازمین پر سعودی عرب کے لیے جاسوسی کرنے کا الزام عائد کیا گیا ہے۔سان فرانسسکو میں یہ الزامات سامنے پیش کیے گئے جس میں کہا گیا کہ سعودی نژاد ملازمین نے ٹوئٹر پر سعودی حکومت کے ناقدین اور دیگر صارفین کی ذاتی معلومات جمع کیں۔

امریکی اخبار واشنگٹن پوسٹ کی خبر کے مطابق ایک امریکی شہری احمد ابو عامو اور ایک سعودی شہری علی الزباراح پر جاسوسی کرنے کے الزامات لگائے گئے ہیں۔عدالت میں جمع کرائی گئی دستاویزات کے مطابق ایک تیسرے شخص کا نام بھی اسی کیس میں ملوث جس کا نام احمد المتاعری بتایا گیا ہے اور اس کی شناخت ایک سعودی شہری کی حیثیت  سے  کی گئی ہے۔ان الزامات کے مطابق احمد المتاعری ٹوئٹر میں کام کرنے والے احمد ابو عامو اور علی الزباراح اور سعودی حکام کے مابین رابطے کا ذریعہ تھے۔

سنہ 2015 میں ٹوئٹر سے نوکری چھوڑ دینے والے احمد پر مزید یہ بھی الزام ہے کہ انھوں نے ماضی میں امریکہ کی فیڈرل بیورو آف انوسٹیگیشن سے جھوٹ بولا اور غلط معلومات والے دستاویزات فراہم کیں۔دیگر دونوں افراد، علی الزباراح اور احمد المتاعری کے بارے میں کہا گیا ہے کہ وہ سعودی عرب میں ہیں۔علی الزباراح ٹوئٹر میں بطور انجنئیر کام کر رہے تھے اور ان پر الزام ہے کہ انھوں نے سنہ 2015 میں سعودی حکام کے کہنے پر ٹوئٹر کے 6000 صارفین کی معلومات اکٹھا کی تھیں۔اس واقعے کے بعد ٹوئٹر میں ان سے پوچھ گچھ کی گئی اور انھیں دفتر سے معطل کر دیا گیا جس کے بعد وہ اپنی اہلیہ اور بیٹی کے ہمراہ سعودی عرب چلے گئے۔ٹوئٹر نے اپنے باضابطہ بیان میں کہا ہے کہ 'ہم جانتے اور سمجھتے ہیں کہ ہماری سروس کو نقصان پہنچانے کے لیے برے عناصر کس حد تک جا سکتے ہیں۔

گذشتہ سال اکتوبر میں معروف صحافی جمال خاشقجی کے استنبول میں سعودی سفارت خانے میں قتل کے باوجود امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے سعودی عرب سے اپنے قریب تعلقات برقرار رکھے ہیں۔بیان میں مزید کہا گیا کہ ہم یہ سمجھتے ہیں کہ ہماری سروس استعمال کرنے والے صارفین کس قدر خطرے مول لیتے ہیں اپنی ذاتی رائے پیش کرنے میں اور اپنی طاقت کا غلط استعمال کرنے والوں پر سوال اٹھانے میں۔ ہمارے پاس ایسے ذرائع ہیں جن کی مدد سے ہم ان کے تحفظ کو یقینی بنا سکتے ہیں تاکہ وہ اپنا ضروری کام جاری رکھ سکیں۔گذشتہ سال اکتوبر میں معروف صحافی جمال خاشقجی کے استنبول میں سعودی سفارت خانے میں قتل کے باوجود امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے سعودی عرب سے اپنے قریب تعلقات برقرار رکھے ہیں۔یاد رہے کہ امریکہ کی اپنی جاسوس ایجنسی سی آئی اے نے سعودی حکام پر جمال خاشقجی کے قتل میں ملوث ہونے کا الزام لگایا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

کلبھوشن کیس میں تمام فیصلے پاکستانی قوانین کے مطابق ہوں گے:پاکستانی دفتر خارجہ

پاکستانی دفتر خارجہ کا کہنا ہے کہ کلبھوشن کے معاملے پر کوئی ڈیل نہیں کی جارہی، عالمی عدالت انصاف کے فیصلے کا پاکستانی قوانین کی روشنی میں احترام ہوگا۔ کلبھوشن کے معاملے پر تمام فیصلے پاکستانی قوانین کے مطابق ہوں گے۔تفصیلات کے مطابق ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹر محمد فیصل نے ہفتہ ...

امریکی آلات کے بغیر ’ہواوے‘ اپنی مصنوعات کی فراہمی یقینی بنا سکتا ہے: لی آنگ ہوا

دنیا کی بڑی ٹیلی کمیونیکشن کمپنیوں میں شامل چینی’ہواوے‘ نے دعوی کیا ہے کہ وہ امریکی مصنوعات پر انحصار کے بغیر اپنی مصنوعات کی فراہمی کو یقینی بنانے کی اہلیت رکھتی ہے۔اس امر کا اظہار ’ہواوے‘ کے چیئرمین لی آنگ ہوا نے خصوصی انٹرویو میں بتایا۔

غزہ پر اسرائیلی حملے دہشت گردی ہیں: الازہر فاؤنڈیشن

مصر میں عالم اسلام کے معروف ادارے الازہر فاؤنڈیشن نے غزہ پٹی پر اسرائیلی حملوں کو’دہشت گردی‘ قرار دیا ہے۔الازہر نے اسرائیل کے حملوں اور ان میں فلسطینی عوام کو نشانہ بنا کر موت کی نیند سلا دینے کی وحشیانہ کارروائیوں کی سخت الفاظ میں مذمت کی۔میڈیا رپورٹوں کے مطابق اسرائیلی ...

دنیا بھر میں دہشت گردی کا 90فیصد شکار مسلمان ہیں: فرانسیسی رپورٹ

فرانس میں کیے جانے والے ایک تحقیقی مطالعے میں اس امر کی تصدیق کی گئی ہے کہ 1979 میں سوویت یونین کی جانب سے افغانستان پر حملے کے بعد سے اگست 2019 تک دنیا بھر میں شدت پسندوں کی ’دہشت گردانہ کارروائیوں‘ کا شکار ہونے والے افراد میں سے 90فیصد مسلمان ہیں۔

امریکا اب بھی سیرین ڈیموکریٹک فورسز کا شراکت دار ہے: مارک ایسپر

امریکی وزیر دفاع مارک ایسپر کا کہنا ہے کہ شام کے شمال مشرق میں ترکی کی سرحد کے نزدیک واقع علاقے کوبانی سے امریکی فوج کا انخلا مکمل ہونے کے لیے مزید ایک ہفتہ یا اس کے قریب عرصہ لگ سکتا ہے،،، جب کہ امریکی فوج شام میں اپنی فورسز کی از سر نو تعیناتی اور ان میں کمی کر رہی ہے۔بدھ کے روز ...

مصر: البحیرہ میں تیل پائپ لائن میں آتش زدگی کے نتیجے میں 6 افراد لقمہ اجل بن گئے

مصر میں حکام کا کہنا ہے کہ البحیرہ گورنری میں ایک تیل پائپ لائن میں لگنے والی آگ کے نتیجے میں کم سے کم 6 افراد جھلس کر ہلاک اور 15 زخمی ہوگئے۔مصری وزارت صحت و آبادی کے سرکاری ترجمان ڈاکٹر خالد مجاہد نے بتایا کہ حادثے کے فوری بعد متاثرہ مقام پر زخمیوں کو اٹھانے کے لیے 20 ایمبولینسوں ...