بھٹکل سمندر میں گر کردو ماہی گیر ہلاک؛ ایک کی نعش برآمد دوسرے کی تلاش جاری

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 28th April 2019, 9:20 PM | ساحلی خبریں |

بھٹکل 28/اپریل (ایس او نیوز) یہاں بھٹکل بندر میں  پیش آئے دو الگ الگ واقعات میں دو ماہی گیر سمندر میں غرق ہوکر ہلاک ہوگئے جس میں ایک ماہی گیر کی نعش برآمد کی گئی ہے جبکہ دوسرے کی تلاش جاری ہے۔ ہلاک شدگان کی شناخت مرڈیشور کے رہنے والے بابو جوجے بستاو ریبیلو (38) اور جھارکھنڈ کے رہنے والے ارجن کی حیثیت سے کی گئی ہے۔دونوں الگ الگ بوٹوں پر کام کرتے تھے۔ واردات سنیچر کی رات کو پیش  آئی۔

بتایا گیا ہے کہ بابو جوجے اُس وقت سمندر میں غرق ہوکر ہلاک ہوگیا جب وہ ایک بوٹ سے دوسری بوٹ پر چھلانگ  لگارہا تھا کہ توازن بگڑ گیا اور سیدھے سمندر میں گر کر غرق ہوگیا،  کافی تلاشی کے بعد رات کو ہی اس کی نعش سمندر سے برآمد کرلی گئی۔

پرشین بوٹ پر کام کرنے والا ارجن  کھانے کے بعدبرتن دھوکر استنجاء کے لئے گیا تھا کہ اس دوران  سمندر میں گر کر لاپتہ ہوگیا۔ اس کی نعش ہنوز برآمد نہیں کی جاسکی ہے۔

شادی شدہ  بابوجوجے پانچ سال سے ماہی گیری  بوٹ پر کام کررہا تھا،  اس  کو دو لڑکیاں اور ایک لڑکا ہے۔  پوسٹ مارٹم کے بعد با بو کی نعش گھروالوں کی حوالے کی گئی ہے۔

بھٹکل مضافاتی پولس تھانہ میں معاملہ درج کیا گیا ہے اور پی ایس آئی روی  دونوں معاملوں کی چھان بین کررہے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

بنٹوال میں ایمبولینس اور ٹرک کا تصادم۔ 1خاتون ہلاک، 4زخمی    

نیرلکٹے کے پاس پیش آنے والے ٹرک اور ایمبولینس کے تصادم میں ایک خاتون موقع پر ہی ہلاک ہوگئے جبکہ ایمبولینس میں موجود مریض سمیت دیگر 4افراد زخمی ہوگئے ہیں، جنہیں علاج کے لئے پتور کے سرکاری اسپتال میں داخل کیا گیا ہے۔

کاروار:اپنی نجی خواہشات کے لئے دوسروں پر الزام عائد نہ کریں : وزیر دیش پانڈے کا ہیبار پرپلٹ وار

اغی گروپ میں شامل یلاپور کے رکن اسمبلی شیورام ہیبار نےاپنے فیس بک پیج پر ضلع نگراں کار وزیر آر وی دیش پانڈے کے خلاف لگائے گئے الزاما ت کا وزیر دیش پانڈے نے بھی فیس بک پر  ہی  کچھ اس طرح جواب دیا ہے۔ ’ہیبار اپنے نجی اور انفرادی فیصلوں اور خواہشات کے لئے خود ذمہ دار ہیں ، اس ...

اڈپی ضلع پولیس نے کروائی گائیں چرانے کے معاملات میں ملوث157 افرادکی پریڈ۔ شہر بدرکرنے اور غنڈہ ایکٹ لاگو کرنے کی دی گئی وارننگ

اڈپی ضلع میں پولیس نے گائیں چرانے کے معاملات میں شامل رہنے والے افراد کو مختلف مقامات پر طلب کرکے ان کی اجتماعی پریڈ کروائی اور انہیں تنبیہ کرتے ہوئے کہا کہ آئندہ اس طرح کی وارداتوں میں اگر وہ ملوث ہونگے تو پھر ان کے خلاف شہر بدر کرنے یا پھر غنڈہ ایکٹ لاگو کرنے جیسے اقدامات کیے ...