ضلع شمالی کینرا میں جاری ہے موسلا دھاربرسات سے نقصانات کا سلسلہ۔ آج 200سے زائد گھروں میں گھس گیا پانی

Source: S.O. News Service | Published on 10th August 2020, 10:26 PM | ساحلی خبریں |

کاروار،10؍اگست (ایس او نیوز) ضلع شمالی کینرا میں گزشتہ کئی دنوں سے جاری موسلادھاربرسات اور سیلاب کا سلسلہ ابھی تھمنے کا نام نہیں لے رہا ہے۔ آج دن بھر میں ہونے والی بارش کی وجہ سے ضلع کی مختلف ندیاں سیلاب سے ابل رہی ہیں۔اس سے کھیتی باڑی اور باغات وغیرہ کے نقصانات کے ساتھ تقریباًنشیبی علاقوں کے 200سے زائد گھروں کے اندر پانی گھسنے کی خبریں موصول ہوئی ہیں۔

موصولہ رپورٹ کے مطابق ہوناور تعلقہ کی مختلف ندیوں میں سیلاب آنے کی وجہ سے ولکی، گُنڈبال، بھاسکیری، بڈگنی، ہڈین بال، گنڈی بیل، گجنی کیری، کونار، چکن گوڈ وغیرہ میں گھروں کے اندر پانی گھس گیا ہے۔اس سے یہاں خوف و ہراس کا ماحول پیدا ہوگیا ہے۔ بارش اور سیلاب سے مالی نقصانات ہونے کے علاوہ عام زندگی مفلوج ہوگئی ہے۔

قدرتی آفت کا سامنا کرتے ہوئے عوام کو راحت دلانے کے لئے ریوینیو، پولیس اور پنچایت کے افسران اور اہلکار پوری طرح سرگرم ہوگئے ہیں۔نوڈل افسران اپنے اپنے متعینہ مقامات پر پہنچ گئے ہیں۔ جن علاقوں میں سیلاب زیاد ہ ہونے کے امکانات ہیں وہاں سے مکینوں کو ہٹاکر راحت مراکز میں لایا جارہاہے۔  چونکہ کورونا کی وجہ سے لوگوں کے درمیان فاصلہ بنائے رکھنا ضروری ہے اس لئے راحت مراکز میں کمروں کی تعداد میں اضافہ کیا گیا ہے۔ ان مراکز میں کھانے پینے اور قیام کی سہولت کے علاوہ وہاں رہنے والوں کا طبی معائنہ کرنے کے ساتھ ان کی صحت پر پوری طرح نگاہ رکھی جارہی ہے۔ 

ادھر کمٹہ او رسرسی کو جوڑنے والی شاہراہ پوری طرح زیر آب ہوجانے کے بعد وہاں عبوری طورپر گاڑیوں کی آمد ورفت بند کیے جانے کی اطلاع ملی ہے۔کمٹہ کتگال کے قریب نیشنل ہائی وے پر پانی بھرجانے سے یہاں بھی موٹر گاڑیوں کی آمد و رفت پر روک لگادی گئی ہے۔ 

آئندہ پانچ دنوں تک ضلع میں اسی طرح مسلسل بارش ہونے کی پیش گوئی کرتے ہوئے محکمہ موسمیات کی طرف سے ’آرینج الرٹ‘ جاری کیا گیا ہے۔ا س کے علاوہ احتیاطی اقدام کے طور پر سیاحوں اور عوام کو سمندری ساحل اور ندیوں کے کناروں کا رخ نہ کرنے کی تاکید کی گئی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

کمٹہ:لاکھوں روپے مالیت کی غیر قانونی ساگوانی لکڑی لےجارہے دو ملزمین ہوئے گرفتار

کمٹہ تعلقہ کے کتگال میں غیر قانونی طور پر جنگل سے کاٹی ہوئی ساگوانی لکڑی لے جانے والے دو ملزمین کو محکمہ جنگلات کے افسران نے گرفتار کیا اور ان کے قبضے سے لکڑیاں ضبط کرلیں جس کی مالیت کا اندازہ لاکھو ں روپے لگایا گیا ہے۔

چلتی ٹرین پر سے مسافر گرپڑا؛ منکی ریلوے ٹریک پر ملی نعش؛ جیب سے برآمد ہونے والی رسید سے مہلوک کی ہوئی شناخت

چلتی ٹرین پر سے مسافر باہر گرنے سے اُس کی موت واقع ہوگئی جس کی شناخت  سنتوش کمار ایم (48) کی حیثیت سے کی گئی ہے۔ حادثہ  بھٹکل سے قریب 30 کلو میٹردور منکی ریلوے ٹریک پر  پیش آیا، جہاں ایک شخص کی نعش لاوارث حالت میں پڑی ہوئی تھی۔