ٹام موڈی اور مہیلا جے وردھنے ٹیم انڈیا کے کوچ کی ریس میں شامل

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 1st August 2019, 11:58 AM | اسپورٹس |

ممبئی،یکم اگست (ایس او نیوز؍ یو این آئی)  ہندوستانی کرکٹ کپتان وراٹ کوہلی ٹیم انڈیا کے نئے کوچ کے لیے روی شاستری کو ہی برقرار رکھنے کی وکالت کر چکے ہیں لیکن اس اہم عہدے کے لیے آسٹریلیا کے ٹام موڈی اور سری لنکا کے مہیلا جے وردھنے بھی دعویداروں کی دوڑ میں شامل ہیں۔

ہندوستانی کرکٹ کنٹرول بورڈ (بی سی سی آئی) نے نئے کوچ کے لیے درخواست نامے مانگے تھے جس کی میعاد منگل کو ختم ہو گئی۔ موجودہ کوچ روی شاستری اور دیگر اسپورٹ اسٹاف کا معاہدہ عالمی کپ کے بعد ختم ہو گیا تھا لیکن بی سی سی آئی نے اسپورٹ اسٹاف کی 45 دن کی توسیع کرتے ہوئے ویسٹ انڈیز کے دورے تک اپنے عہدوں پر برقرار رہنے کے لئے کہا ہے۔

ہندوستان کو اگست کے شروع سے ستمبر کے اوائل تک ویسٹ انڈیز کا دورہ کرنا ہے اور جنوبی افریقہ کے خلاف 15 ستمبر سے ہونے والی گھریلو سیریز کے لئے ٹیم انڈیا کو نیا کوچ مل جائے گا۔ ویسٹ انڈیز روانہ ہونے سے پہلے کپتان وراٹ نے شاستری کی موجودگی میں پریس کانفرنس میں ہی کہا تھا کہ اگر روی شاستری اس عہدے پر بنے رہتے ہیں تو انہیں کافی خوشی ہوگی۔

وراٹ کا یہ بھی کہنا تھا کہ شاستری کی ٹیم انڈیا میں کافی عزت ہے اور وہ چاہیں گے کہ شاستری ہی کوچ کے عہدے پر برقرار رہیں۔کوچ منتخب کرنے کا حتمی فیصلہ تین رکنی کمیٹی کرے گی جس میں سابق کپتان کپِل دیو ، سابق سلامی بلے باز انشومن گائکواڑ اور سابق خاتون کرکٹر شانتا رنگاسوامی ہیں۔ یہ کمیٹی اگست کے وسط میں امیدواروں کا انٹرویو لے گی اور اپنی سفارش کو بی سی سی آئی کو سونپیں گی۔

نئے کوچ کی دوڑ میں بین الاقوامی کرکٹروں میں آسٹریلیا کے ٹام موڈی، سری لنکا کے سرکردہ بلے باز مہیلا جے وردھنے، نیوزی لینڈ کے سابق کوچ مائیک هیسن ،ٹیم انڈیا کے سابق آل راؤنڈر رابن سنگھ، ٹیم انڈیا کے سابق منیجر اور زمبابوے کے موجودہ کوچ لال چند راجپوت شامل ہیں۔

ایسی بھی اطلاعات ہیں کہ سابق ٹیسٹ بلے باز پروین آمرے نے بلے بازی كوچ کیلئے درخواست دی ہے جبکہ دنیا کے بہترین فیلڈر جنوبی افریقہ کے جانٹي روڈس فیلڈنگ کوچ کی دوڑ میں شامل ہیں۔

اگرچہ بی سی سی آئی کی پالیسی کے مطابق شاستری اور دیگرا سپورٹ اسٹاف بھرت ارون، سنجے بانگڑ اور آر سریدھر کو انتخاب کے عمل میں خود کار طریقے سے داخلہ مل جائے گا لیکن یہ دیکھنا دلچسپ ہوگا کہ کپِل دیو کی قیادت میں تین رکنی کمیٹی وراٹ کی پسند پر مہر لگاتی ہے یا نئے کوچ کا سلیکشن کرے گی۔

شاستری کے کوچ رہتے ہوئے ہندوستان نے پہلی بار آسٹریلیا میں دو۔ایک سے ٹیسٹ سیریز جیتی تھی۔ اس کے بعد ہندوستان نے ویسٹ انڈیز اور سری لنکا میں ٹسٹ سیریز اور جنوبی افریقہ، آسٹریلیا سری لنکا اور نیوزی لینڈ میں ون ڈے سیریز اپنے نام کی تھی۔

ہندوستان نے شاستری کے کوچ رہتے ہوئے ایشیا کپ پر بھی قبضہ کیا تھا لیکن انگلینڈ میں ہوئے عالمی کپ کے سیمی فائنل میں نیوزی لینڈ کے ہاتھوں اسے شکست کا سامنا کرنا پڑا ۔ ٹام موڈی آئی پی ایل میں کنگز الیون پنجاب اور سن رائجرس حیدرآباد کے کوچ بھی رہ چکے ہیں۔

دنیا کے بہترین بلے بازوں میں شمار مہیلا کے نام 20 ہزار سے زیادہ بین الاقوامی رن ہیں۔ وہ 2015 میں پاکستان دورے میں انگلینڈ ٹیم کے بلے بازی کے صلاح کار بھی رہے تھے۔ مہیلا نے 2017 میں ممبئی انڈینس کے کوچ کا عہدہ سنبھالا تھا۔ مہیلا کی رہنمائی کے تحت ممبئی ٹیم گزشتہ تین ایڈیشنوں میں دو بار فاتح رہ چکی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

دیپا ملک کو کھیل رتن اور رویندر جڈیجہ سمیت 19 کو ارجن ایوارڈ دینے کا اعلان

ریو پیرا اولمپکس کی چاندی کا تمغہ فاتح پیرا کھلاڑی دیپا ملک کو ملک کے اعلی ترین کھیل اعزاز راجیو گاندھی کھیل رتن سے نوازا جائے گا جبکہ کرکٹر رویندر جڈیجہ سمیت 19 کھلاڑیوں کو باوقار ارجن انعام ملے گا۔

ہندوستان ’اے‘ نے پانچویں ونڈے میں ویسٹ انڈیز ’اے‘کو شکست دے کر سیریز 4-1سے اپنے نام کر لی

روتوراج گائیکواڈ، شبھمن گل اور شريس ایر کی شاندار اننگز کی مدد سے ہندستان اے نے پانچویں غیر سرکاری ون ڈے میچ میں آٹھ وکٹ سے یکطرفہ جیت درج کرنے کے ساتھ پانچ میچوں کی سیریز میں ویسٹ انڈیز اے کے خلاف 4- 1 سے جیت اپنے نام کر لی ہے۔

ہندوستانی ایتھلیٹ ہما داس نے 1 مہینے میں جیتا 5 واں گولڈ میڈل

ہندوستان کی اسٹار ایتھلیٹ ہما داس نے شاندار مظاہرہ جاری رکھتے ہوئے یہاں اپنی پسندیدہ 400 میٹرکی دوڑ میں 52.09سیکنڈکے سیشن میں اس مہینے کا 5واں گولڈ میڈل جیتا ہے۔سنیچر کو ہما کا یہ مظاہرہ حالانکہ 50.79 کے ان کے نجی بہترین ریکارڈ سے دھیما ہے جو انھوں نے جکارتا ایشیائی کھیلوں کے دوران ...