شامی مہاجرین کو سحر و افطار کی تیاری میں مشکلات

Source: S.O. News Service | Published on 20th April 2021, 1:51 PM | عالمی خبریں |

لبنان، 20؍اپریل (ایس او نیوز؍ایجنسی) عائشہ العبد لبنان کے ایک مہاجر کیمپ میں مقیم ہیں۔انہیں مہاجر کیمپ میں سحر و افطار کی تیاری میں مشکلات کا سامنا ہے۔ وہ دو بچوں کی ماں ہیں اور انہیں کئی قسم پریشانیاں پیش آ رہی ہیں۔

مشکل صورت حال: عائشہ العبد نام شامی خاتون نے نیوز ایجنسی اے پی کے نمائندے سے گفتگو کرتے ہوئے کہا یہ کہنا ہے کہ روزے میں بہتر خوراک کی ضرورت ہوتی ہے اور اس کے کھانے سے ہی جسم میں غذائیت کی کمی رفع ہوتی ہے۔ شامی مہاجرین کو ان روزوں میں شدید مصائب کا سامنا ہے۔ کیمپ میں افطار کے وقت ان مہاجرین کو چاول، دال اور آلو کے چپس ہی دستیاب ہیں۔

اسی کیمپ میں ایک اور خاتون راہف الصغیر کا کہنا ہے کہ ان کی بیٹیاں گوشت، چکن، بسکٹس اور پھل کھانے کی طلب کرتی ہیں لیکن کہاں سے یہ خرید کر لائی جائیں۔ الصغیر بیوہ ہیں اور ان کی تین بیٹیاں ہیں۔

رمضان اور مہنگائی: لبنان میں شامی مہاجرین کے کیمپ کے ایک مکین رعد مطار کا کہنا ہے کہ اس مرتبہ رمضان میں بہت زیادہ مہنگائی ہے اور لوگ اس کی وجہ سے بہت زیادہ پریشان ہیں۔ لبنان میں دس لاکھ سے زائد شامی مہاجرین مقیم ہیں۔ یہ امر اہم ہے کہ ان مہاجرین کے میزبان ملک لبنان کو شدید اقتصادی مشکلات درپیش ہیں۔ اس کے ساتھ ساتھ کورونا وبا نے مجموعی سماجی صورت حال بھی خراب سے خراب تر ہو چکی ہے۔

لبنان کی اقتصادی مشکلات کی وجہ سے روزمرہ کے استعمال کی اشیا کی قیمتیں آسمان کو چُھو رہی ہیں اور مہنگائی کی شرح سن 2020 میں نواسی فیصد پر تھی، جو اب اور زیادہ ہو گئی ہے۔ ان حالات میں لبنانی کرنسی کی قدر بھی شدید گر چکی ہے۔ حال ہی میں جاری کردہ اقوام متحدہ کی ایک رپورٹ میں بیان کیا گیا ہے کہ شامی مہاجرین انتہائی غربت میں زندگی بسر کرنے پر مجبور ہیں۔

لبنانی لوگ مہربان ہیں: رعد مطار کا کہنا ہے کہ اس مہنگائی کی وجہ سے لبنان کے مقامی لوگوں کے حالاتِ زندگی بہت خراب ہیں اور ایسے میں شامی مہاجرین کی کیفیت کا اندازہ لگایا جا سکتا ہے۔ مطار کا کہنا ہے کہ وہ جس طرح زندگی کے دن بسر کر رہے ہیں، اس کا اندازہ صرف انہی کو ہے۔ مطار کے مطابق عام لبنانی افراد انتہائی کم آمدنی والی ملازمتوں کے حصول کی کوشش میں ہیں۔ لبنان میں مشکل حالات کی وجہ سے العبد کا خاندان پانچ مرتبہ ایک کیمپ سے دوسری مہاجر بستیوں میں منتقل ہو چکا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

افغانستان کے کابل کی مسجد میں دھماکہ، امام سمیت 12 نمازی جاں بحق

افغانستان کے دارالحکومت کابل کی مسجد میں دھماکے کے نتیجے میں امام سمیت 12 نمازی جاں بحق ہوگئے، دھماکہ   جمعہ  کی نماز کی ادائیگی کے دوران کیا گیا۔افغان پولیس  ترجمان کے مطابق کابل کے ضلع شکر درہ میں مسجد کے اندر دھماکہ کیا گیا جس میں مسجد کے امام مفتی نعمان  سمیت ۱۲ نمازی جاں ...

فلسطین میں اسرائیلی فضائی حملے جاری؛ شہید ہونے والوں کی تعداد 119 کو پہنچ گئی؛ بمباری کے باوجود قبلہ اول میں فرزندان توحید نے ادا کی عید الفطر کی نماز

اسرائیل کے غزہ کی پٹی پر جاری فضائی حملوں میں گذشتہ چار روز میں شہید ہونے والے فلسطینیوں کی تعداد بڑھ کر113 ہوگئی ہے جن  میں 31 بچے بھی شامل ہیں۔ میڈیا رپورٹوں کے مطابق ایک طرف بمباری جاری تھی اور دوسری طرف غزہ پر بمباری کے دوران  قبلہ اول میں ایک لاکھ سے زائد فرزاندن توحید  عید ...