دلتوں اور مسلمانوں کو ان کے آئینی حقوق سے محروم کرنے کی سازش: مایاوتی

Source: S.O. News Service | Published on 2nd December 2019, 12:08 PM | ملکی خبریں |

لکھنؤ،2/دسمبر (ایس او نیوز/یو این آئی)  بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) سپریمو مایاوتی نے اتوار کو یہاں پارٹی ذمہ داروں کے ساتھ میٹنگ کر کے آگے کی حکمت عملی پر غوروخوض کیا اور متعدد ہدایات دیں۔ اترپردیش کو چھوڑ کر ملک کے دیگر حصوں سے آئے پارٹی ذمہ داران کے ساتھ ہوئی میٹنگ میں مختلف ریاستوں اور ملک کی سیاسی حالات کاجائزہ لیا گیا اور آگے کے چیلنجز کا صحیح ڈھنگ سے سامنا کرنے کے لئے پارٹی تنظیم کو ہر قسم سےچست ودرست کرنے کی ہدایت دی گئی۔

میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے مایاوتی نے کہا کہ بابا صاحب ڈاکٹر بھیم راؤ امبیڈکر کی چھ دسمبر کو ہونے والے برسی کے پروگرام سیمنار کی شکل میں اس سال بھی منعقد کیے جائیں گے جس میں بڑے پیمانے پر افراد کی شراکت درای یقینی بنائیں۔ ان سیمناروں کے ذریعہ بہوجن سماج کے ہاتھوں میں اقتدار کی ’’ماسٹر کی ‘‘ حاصل کرنے کے لئے ان کے ذریعہ کی گئی کوششوں اور اس کی اہمیت سے لوگوں کو بیدار کرنے کی ضرورت ہے۔

مایاوتی نے کہا کہ موجودہ سیاسی حالات میں دلت، قبائلی، پسماندہ طبقات اور مسلم سماج کے کروڑوں افراد کو ان کے بنیاد قانونی و آئینی حق سے محروم رکھنے کا ہر قسم کی سازش کی جارہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ لکھنؤ ڈویژن کے افراد پہلے کی طرح امبیڈکر کی برسی کا پروگرام گومتی ندی کے ساحل پر واقع بھیم راؤ امبیڈکر سماجک پریورتن استھل پر ہی کریں گے۔

مایاوتی نے کہا کہ جلد بازی میں ناپختہ طریقے سے ملک میں نوٹ بندی اور جی ایس ٹی تھوپنے کا ہی نتیجہ ہے کہ ملک کو اقتصادی کساد بازاری کے خطرے کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ روزگار چوپٹ ہے اور بے روزگار زبردست طریقے سے لوگوں کو پریشان کر رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ بابا صاحب کی صحیح آئینی و انسانی سوچ کی بنیاد پر ہی ملک کو چلا نے میں ہی ہم سب کی بھلائی ہے اور بی ایس پی مومنٹ اسی کی جدوجہد کررہا ہے جس کے تئیں افراد کو بیدار کرنے کی ضرور ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ریپ کے معاملے پرسوال سے بھاگ جانے والے سشیل مودی نے زبان کھولی،راہل کو چیلنج کرتے ہوئے ٹویٹ کیا، اپنے آپ پر اعتماد کرو، اپنے حقیقی نام پر الیکشن لڑو

پٹنہ سیلاب کے موقعہ پربھاگ جانے والے اورریپ کے واقعے پرسوال سے فرارہوجانے والے نائب وزیراعلیٰ سوشیل کمارمودی کی زبان راہل گاندھی پرکھل گئی ہے۔بے چارے نے ان معاملات پرچپی کے بعدکچھ توبولاہے۔