ترکی جس فوجی حل کا خواہاں ہے اس سے مصائب بڑھیں گے: قرقاش

Source: S.O. News Service | By JD Bhatkali | Published on 11th June 2020, 7:08 PM | عالمی خبریں |

 دبئی،۱۱/جون (آئی این ایس انڈیا) متحدہ عرب امارات کے وزیر مملکت برائے خارجہ امور انور قرقاش کا کہنا ہے کہ انقرہ لیبیا میں جس عسکری حل کے لیے کوشاں ہے وہ لیبیا کے عوام کے مصائب کو طول دے گا،اور یہ بین الاقوامی اتفاق رائے کے مخالف ہے۔

جمعرات کے روز ٹویٹر پر اپنے بیان میں انہوں نے کہا کہ لیبیا کے حوالے سے مصری منصوبہ، لیبیا میں امن و استحکام کی واپسی کے لیے عرب اور بین الاقوامی سیاسی عمل کی ٹھوس بنیاد بن چکا ہے۔اماراتی وزیر نے زور دیا کہ ان کا ملک لیبیا میں فوری فائر بندی اور سیاسی راستے کو متحرک کرنے کے لیے قاہرہ کی کوششوں کے ساتھ تعاون جاری رکھے گا۔

اس سے قبل مصر اور امارات نے بدھ کے روز باور کرایا کہ لیبیا میں صرف سیاسی حل ہی واحد قابل قبول راستہ ہے۔ دونوں ملکوں نے لیبیا میں عسکری کارروائیوں کے روکنے اور اقوام متحدہ کی سرپرستی میں بات چیت دوبارہ شروع کرنے کا مطالبہ کیا۔مصر اور امارات نے خبردار کیا کہ بیرونی طاقتوں کی حمایت یافتہ مسلح جماعتیں لیبیا کے شہر سرت میں عوام کے لیے سنگین خطرہ ہیں۔ یاد رہے کہ مصری صدر عبدالفتاح السیسی نے ہفتے کے روز ایک سیاسی منصوبے کا اعلان کیا تھا۔ اس کا مقصد لیبیا میں معمول کی زندگی کی طرف واپسی کے لیے راہ ہموار کرنا ہے۔ السیسی نے بحران کے حل کے لیے عسکری آپشن کو پکڑے رہنے سے خبردار کیا۔ انہوں نے واضح کیا کہ سیاسی حل اس بحران کے حل کا واحد راستہ ہے۔ یہ منصوبہ ’اعلانِ قاہرہ‘ کے نام سے سامنے آیا ہے۔ منصوبے میں زور دیا گیا ہے کہ لیبیا کی یک جہتی کے حوالے سے تمام تر بین الاقوامی قرار دادوں اور پیر 8 جون سے فائر بندی کا احترام کیا جائے۔

ایک نظر اس پر بھی

بدھ کو ہندوستان بھر  میں منائی جائے گی عیدالاضحٰی  ؛ سعودی عربیہ، دبئی ، عمان و دنیا کے دیگر کئی  ملکوں میں آج منگل کومنائی جارہی ہے  عید 

بھٹکل اور ریاست کرناٹک سمیت پورے ملک میں کل بدھ 21 جولائی   کو عید الاضحیٰ منائی جائے گی، البتہ سعودی عربیہ، متحدہ عرب امارات،  عمان، کویت اور گلف کے دیگر ملکوں سمیت دیگر مختلف ممالک میں آج منگل کو ہی عید منائی جارہی ہے۔

امریکا کا افغان امن عمل کی حمایت کیلئے ’ٹھوس اقدامات‘ کی ضرورت پر زور

امریکا نے افغان امن عمل کی حمایت کے لیے ’ٹھوس اقدامات‘ کی ضرورت پر زور دیا ہے۔ڈان اخبار کی رپورٹ کے مطابق امریکا کی جانب افغان امن عمل سے متعلق بیان افغانستان کے لیے امریکا کے نمائندہ خصوصی زلمے خلیل زاد اور وزیر اعظم عمران خان کے مابین ہونے والی ملاقات کے بعد سامنے آیا۔

حجاب کے متعلق یوروپی عدالت کا فیصلہ اسلاموفوبیا کی علامت ہے: ترکی

  ترکی نے  یورو پی کمپنیوں کو ملازمین کے حجاب پہننے پر پابندی کی اجازت دینے کے یوروپی عدالت انصاف کے فیصلے کی شدید مذمت کرتے ہوئے اسے بڑھتے ہوئے اسلاموفوبیا کی علامت اور مذہبی آزادی کی صریحاً خلاف ورزی قرار دیا ہے۔

آسٹریلیا میں 80 فیصد مسلمانوں کو امتیازی سلوک کا سامنا ہے: انسانی حقوق کمیشن کی رپورٹ

آسٹریلوی انسانی حقوق کمیشن کا کہنا ہے کہ آسٹریلیا میں مسلمانوں کی اکثریت کو امتیازی سلوک کا سامنا ہے۔ آسٹریلوی انسانی حقوق کمیشن کی پیر کے روز شائع ہونے والی ایک رپورٹ کے مطابق آسٹریلیا میں 80 فیصد مسلمانوں کو تعصب یا امتیازی سلوک کا سامنا کرنا پڑا ہے۔

جرمنی کو تاریخ کے بدترین سیلاب کا سامنا، ہلاک شدگان کی تعداد 150 سے تجاوز، 1000 لاپتہ

 جرمنی کو اس وقت 200 سالہ تاریخ کے بد ترین سیلاب کا سامنا ہے، جس کے نتیجہ میں اب تک 150 سے زائد افراد ہلاک ہو چکے ہیں جبکہ 1000 سے زائد افراد لاپتہ ہیں۔ اتنا ہی نہیں سیلابی صورت حال کے پیش نظر 2 لاکھ گھروں کی بجلی کی سپائی بھی منقطع ہو گئی ہے۔

عراق: اسپتال کے کورونا وارڈ میں خوفناک آتشزدگی، 52 افراد جان بحق

عراق کے شہر ناصریہ میں اسپتال کے کورونا وارڈ میں آگ لگ گئی جس کے نتیجے میں 52 افراد جان بحق ہو گئے۔ حکام کے مطابق 16 افراد کو بچا لیا گیا جبکہ 22 زخمی ہیں جن میں سے دو افراد کی حالت نازک ہے۔ حکام کا کہنا ہے کہ کورونا وارڈ میں مزید افراد کی موجودگی کی اطلاعات ہیں جن کی تلاش جاری ہے۔