ادھو ٹھاکرے نے سشانت معاملے میں توڑی خاموشی

Source: S.O. News Service | Published on 1st August 2020, 9:40 PM | ملکی خبریں |

ممبئی،یکم اگست(ایس او نیوز؍ایجنسی) مہاراشٹرا کے وزیر اعلی ادھو ٹھاکرے نے فلمی اداکار سوشانت سنگھ راجپوت کی موت کے معاملے میں خاموشی توڑتے ہوئے پہلی بار کہا ہے کہ ممبئی پولیس اس معاملے کی تحقیقات کرنے میں مکمل طور پر اہل ہے۔ ادھو ٹھاکرے نے کہا کہ کسی دیگر ایجنسی سے تحقیقات کا مطالبہ کرنے کے بجائے اگر کسی کے پاس کوئی ثبوت ہے تو وہ پولیس کے دے۔ ادھو ٹھاکرے کا یہ بیان اپوزیشن لیڈر دیویندر فڈنویس کے رد عمل اور اس معاملے میں انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ کےذریعہ منی لانڈرنگ کا مقدمہ دائر کرنے کے بعد آیا ہے۔

ادھو ٹھاکرے نے گزشتہ روز اپوزیشن لیڈر دیویندر فڈنویس کو ہدف تنقید بناتے ہوئے کہا کہ جو خود پانچ سال وزیر اعلی رہا ہو، وہ ریاستی پولیس کے قابل اعتبار ہونے پر شبہ ظاہر کر رہے ہیں۔ ادھو ٹھاکرے نے کہا کہ ہم ریاستی پولیس پر تبصرے کی مذمت کرتے ہیں۔ فڈنویس نے یہ بھی کہا تھا کہ سوشانت کی موت کے معاملے میں انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ (ای ڈی) کو منی لانڈرنگ کے پہلو سے تحقیقات کے لئے مقدمہ درج کرنا چاہیے۔

ادھو ٹھاکرے نے کہا کہ ممبئی پولیس ایک کورونا وایئرس رہی ہے اور اس کے بہت سے اہلکاروں کے انفیکشن کی وجہ سے موت ہوچکی ہے۔ اس کی اہلیت پر سوال کرنا اس کی توہین کے مترادف ہے اور میں اس کی مذمت کرتا ہوں۔ ریاستی پولیس اس معاملے کی بہتر طریقے سے جانچ کرے گی اور مجرم کو سزا دے گی۔ تاہم ، براہ کرم اس معاملے کو مہاراشٹر بمقابلہ بہار کا مسئلہ نہ بنائیں۔ حال ہی میں مہاراشٹر کے وزیر داخلہ انیل دیشمکھ نے کہا تھا کہ ممبئی پولیس اس معاملے کی تحقیقات کرنے کی صلاحیت رکھتی ہے اور اس معاملے میں سی بی آئی جانچ کی ضرورت نہیں ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

راجستھان: ’جے شری رام‘ نہ کہنے پر بزرگ مسلم ڈرائیور کے ساتھ مار پیٹ، پاکستان جانے کو کہا!

 راجستھان کے سیر میں ایک 52 سالہ آٹو رکشہ ڈرائیور غفار احمد کچاوا کو ’مودی زندہ آباد‘ اور ’جے شری رام‘ نہ بولنے پر بے رحمی سے پیٹا گیا۔ پولیس نے ہفتہ کے روز یہ اطلاع دی۔ متاثرہ ڈرائیور نے بتایا کہ ان پر حملہ کرنے والے دو لوگوں نے ان کی داڑھی کھینچی اور پاکستان جانے کو کہا۔

ہندوستان: کورونا کے نئے معاملہ ایک دن میں65 ہزار سے پار، اب تک کے سب سے زیادہ

ملک میں کورونا وائرس کی دن بدن خراب ہوتی صورتحال کے درمیان سنیچر کی دیر رات تک65,156نئے معاملے سامنے آنے سے متاثرین کی تعداد 21.50لاکھ سے زیادہ ہوگئی اور 875مزید لوگو کی موت سے مرنے والوں کی تعداد 43,446تک پہنچ گئی لیکن راحت کی بات یہ ہے کہ مریضوں کے صحت یاب ہونے کی شرح 69فیصد کے قریب پہنچ ...

ایئر انڈیا کا طیارہ گرنے کی ایک نہیں کئی وجوہات

ماہرین کا ماننا ہے کہ کیرالہ کے کوزی کوڈ میں جمعہ کی رات ہوئے جہاز حادثے میں تیز بارش کے ساتھ کئی وجوہات رہی ہوں گی۔ائر انڈیا ایکسریس کا بوئنگ 737-800 جہاز جب کوزی کوڈ پہنچا اس وقت وہاں تیز بارش ہورہی تھی۔ جب رن وے گیلا ہوتا ہے تو جہاز کو اترنے کے بعد رکنے کے لئے رن وے پر معمول کے ...