ٹرمپ کے مالیاتی ریکارڈ کا انکشاف کیا جا سکتا ہے: امریکی سپریم کورٹ

Source: S.O. News Service | Published on 10th July 2020, 10:50 PM | عالمی خبریں |

واشنگٹن،10؍جولائی(ایس او نیوز؍ایجنسی) امریکہ کی عدالت عظمیٰ نے جمعرات کے روز صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے ٹیکس گوشوارے منظر عام پر لانے کیلئےمین ہٹن کے ڈسٹرکٹ اٹارنی کے مطالبے کو تو تسلیم کیا ہے؛ تاہم ایک الگ مقدمے میں جس میں کانگریس نے صدر کا مالیاتی ریکارڈ طلب کیا تھا، عدالت نےبیشتر ریکارڈ تک کانگریس کی رسائی فی الحال روک دی ہے۔

صدر ٹرمپ کیلئے دو مقدمات پر فیصلے کم مدتی فتح بھی ہیں اور شکست بھی، کیونکہ وہ گزشتہ دو برس سے اپنے مالیاتی ریکارڈ کو منظر عام پر لانے سے رکے ہوئے ہیں۔

تاہم، مین ہٹن کے ڈسٹرکٹ اٹارنی والے مقدمے میں سپریم کورٹ کے ججوں نے صدر ٹرمپ کےوکیل اور محکمہ انصاف کے اِن دلائل کو مسترد کر دیا کہ جب تک صدر اپنے منصب پر فائز ہیں، ان کے خلاف تحقیقات نہیں ہو سکتی یا استغاثہ کو ریکارڈ حاصل کرنے کیلئے عمومی حالات کی بجائے غیر معمولی حالات ظاہر کرنا ہونگے۔ ایک گرینڈ جیوری نے صدر ٹرمپ کے ٹیکس گوشوارے طلب کئے تھے۔

چونکہ گرینڈ جیوری کی تحقیقات خفیہ ہیں، اس لئے اس فیصلے سے ممکنہ طور پر صدر ٹرمپ کے مالیاتی ریکارڈ جلد منظر عام پر نہیں آ سکیں گے۔

کانگریس کی جانب سے ریکارڈ کی طلبی والے مقدمے میں، عدالتِ عظمیٰ کا کہنا ہے کہ ماتحت عدالت نے مقدمے میں دی گئی تقسیم اختیارات کی دلیل پر پوری طرح سے غور نہیں کیا۔ اس لئے کانگریس فی الحال ریکارڈ کو پوری طرح سے نہیں دیکھ سکتی۔

سپریم کورٹ کیلئے صدر ٹرمپ کے تعینات کردہ دو ججوں جسٹس نیل گورسچ اور جسٹس بریٹ کیوانوگ نےبھی دونوں مقدمات میں چیف جسٹس جان رابرٹس اور چار لبرل خیالات کے حامی ججوں کے موقف سے اتفاق کیا۔ دونوں فیصلے چیف جسٹس رابرٹس نے تحریر کیے۔

اس فیصلے سے دونوں مقدمات اب دوبارہ ماتحت عدالتوں میں واپس بھیج دئے گئے ہیں۔

کرونا وائرس سے پھیلنے والی عالمی وبا کی وجہ سے ایک مقدمے میں اس سال مئی میں ٹیلیفون پر شنوائی ہوئی تھی۔

ایک نظر اس پر بھی

لبنان: تین روزہ قومی سوگ کا آغاز، عالمی امداد بھی جاری

لبنان میں جہاں ایک طرف زبردست دھماکے کی وجوہات کی تفتیش جاری ہے وہیں جمعرات سے تین روزہ قومی سوگ کا آغاز ہوگیا ہے۔ بیروت میں ہونے والے دھماکے میں 135 افراد ہلاک ہوئے تھے۔لبنان کے دارالحکومت بیروت میں منگل کے روز ہونے والے بم دھماکے سلسلے میں حکومت نے جس تین روزہ سوگ کا اعلان کیا ...

عالمی ادارہ صحت نے کہا؛ سماجی فاصلہ برقرار نہ رکھنے سے بڑھ رہے ہیں کورونا کے معاملات، نوجوان مریضوں کی تعداد میں تین گنا اضافہ

عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) کا کہنا ہے کہ سماجی فاصلہ برقرار نہ رکھنے کی وجہ سے گزشتہ پانچ ماہ کے دوران کرونا وائرس سے متاثرہ نوجوانوں کی تعداد میں تین گنا اضافہ ہوا ہے۔ڈبلیو ایچ او کی رپورٹ کے مطابق فروری کے آخر سے لے کر جولائی کے وسط تک، کرونا وائرس کا شکار ہونے والے 60 لاکھ ...

جاپانی ماہرین کا کورونا وائرس کی وبا پر قابو پانے کے لئے سوپر کمپیوٹر کے استعمال کا اعلان

کورونا وائرس کی روکتھام کے اقدامات سے متعلق جاپان کے انچارج وزیر نیشی مورا یاسوتوشی نے امید ظاہر کی ہے کہ حکومت، مصنوعی ذہانت اور دیگر ٹیکنالوجیز کو بروئے کار لاتے ہوئے، انفیکشنز پر قابو پانے کے نئے موثر اقدامات دریافت کرنے میں، رواں ماہ کے آخر تک کامیاب ہو جائے گی۔ جاپانی ...

بیروت میں ہوئے زبردست دھماکہ کی کیا ہے اصل کہانی ؟ 6 سال سے ایک بحری جہاز پر 2750 ٹن دھماکا خیز مواد امونیم نائٹریٹ رکھا ہوا تھا؛ اب تک 135 کی موت

بیروت،06 /اگست (آئی این ایس انڈیا)منگل چار اگست کی سہ پہر ہونے والے زور دار دھماکے کے نتیجے میں بیروت میں بحری جہازوں کے لنگر انداز ہونے کا مقام مکمل طور پر تباہ ہو گیا۔ اس کا شمار لبنان کے اہم ترین مقامات میں ہوتا ہے جو ریاستی خزانے میں مالی رقوم پہنچانے کا نمایاں ترین ذریعہ تھا۔ ...