بریکنگ نیوز

’ہماری اخلاقیات کس حد تک گر گئی ہے‘، گوا میں اراکین اسمبلی کے پارٹی بدلنے پر سپریم کورٹ کا تلخ تبصرہ

Source: S.O. News Service | Published on 6th December 2022, 11:21 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی، 6؍دسمبر (ایس او نیوز؍ایجنسی) گوا میں اراکین اسمبلی کے ذریعہ اپنی پارٹی چھوڑ کر دوسری پارٹی میں شامل ہونے سے متعلق ایک معاملے پر سماعت کے دوران آج سپریم کورٹ نے انتہائی تلخ تبصرہ کیا۔ عدالت عظمیٰ نے کہا کہ ’’اب ہماری اخلاقیات کس حد تک گر گئی ہے۔‘‘ سپریم کورٹ نے بامبے ہائی کورٹ کے حکم کو چیلنج پیش کرنے والی گوا کانگریس کے لیڈر گریش چوڈنکر کی عرضی پر سماعت کرتے ہوئے یہ تبصرہ کای اور پھر اس معاملہ کو آئندہ سال سماعت کے لیے فہرست بند کرنے کی ہدایت دی۔ اس سے قبل 2019 میں کانگریس اور مہاراشٹروادی گومانتک پارٹی (ایم جی پی) سے بی جے پی میں شامل ہونے والے گوا اسمبلی کے 12 اراکین کو نااہل ٹھہرانے کا مطالبہ کرنے والی عرضی خارج کر دی گئی تھی۔

عرضی دہندہ کی نمائندگی کرنے والے ایک وکیل نے جسٹس ایم آر شاہ اور ہیما کوہلی کی بنچ سے معاملے کو ملتوی کرنے کی گزارش کی، کیونکہ ان کے سینئر کسی دیگر عدالت میں تھے۔ پھر بنچ نے سوال کیا کہ ’’چونکہ اگلا انتخاب ہو چکا ہے، تب کیا یہ بے معنی نہیں ہو گیا ہے؟‘‘ اس پر وکیل نے کہا کہ اس میں خاص طور سے مہاراشٹر کی حالت کے پس منظر کے خلاف قانون کا ایک بڑا سوال شامل ہے۔

عرضی دہندگان کے وکیل نے کہا کہ یہ پوری طرح سے ایک اکیڈمک پریکٹس بن گیا ہے۔ بنچ نے عرضی دہندہ کے وکیل سے کہا کہ وہ اپنے سینئر کو سہ پہر 3.30 بجے عدالت میں موجود ہونے کے لیے کہیں۔ جب معاملے کو دوپہر 3.30 بجے کے بعد سماعت کے لیے کہا گیا تو عرضی دہندہ کے وکیل نے عدالت سے معاملے کی سماعت یہ کہتے ہوئے بدھ کو مقرر کرنے کی گزارش کی کہ یہ ایک اہم معاملہ ہے۔ وکیل نے کہا کہ حال ہی میں کانگریس کے 9 اراکین اسمبلی بی جے پی میں شامل ہو گئے تھے اور اس معاملے میں شامل بڑے قانونی سوال پر غور کرنے کے لیے عدالت پر دباؤ ڈالا۔ اس دوران جسٹس شاہ نے کہا کہ ’’اب ہماری اخلاقیات کس حد تک گر گئی ہے۔‘‘ بنچ نے معاملے کی سماعت آئندہ سال کے لیے مقرر کی تاکہ وہ قانونی سوالات پر غور کر سکے۔

ایک نظر اس پر بھی

گھرسے ماں اور  اس کے دوبچوں کی جلی ہوئی نعشیں برآمد : بیوی ، بیٹا اور بیٹی ہلاک

ریاست تمل ناڈو کے کُنّم کولم کے پنّیتا ڈمنلی میں ماں اور اس کے دو بچوں کی  گھر میں نعشیں پائی گئیں ۔ صبح سویرے  نعشیں جلی ہوئی  حالت میں پتہ چلیں۔ مہلوکین کی شناخت حارث کی بیوی شفینہ ، تین سالہ اجوہ اور ڈیڑھ سالہ امن کے طورپر کی گئی ہے۔ واقعے کے وقت گھر میں صرف حارث کی ماں ہونے کی ...

دہلی میں بی بی سی دفتر کے سامنے ہندو سینا کا احتجاج

ہندوسینا کارکنوں نے نئی دہلی میں کستورباگاندھی مارگ پر واقع بی بی سی دفتر کے سامنے پلے کارڈس رکھے۔ وہ 2002ء کے گجرات فسادات پر بی بی سی سیریز کے خلاف احتجاج کررہے تھے۔بی بی سی کا صدر دفتر برطانیہ میں ہے۔

بینک ملازمین کی 30 اور 31 جنوری کی ہڑتال ملتوی

 یونائیٹڈ فورم آف بینک یونینز (یو ایف بی یو) نے ممبئی میں ہونے والی مفاہمت کی میٹنگ میں طے پانے والے معاہدے کے بعد 30 اور31 جنوری کو ہونے والی دو روزہ ملک گیر بینک ہڑتال کو ملتوی کر دیا ہے۔

کانگریس کے سینئر رہنما  رندیپ سنگھ سرجے والا کا بی جے پی پر حملہ، کہا؛ ملک میں نہ نفرت چلے گی نہ تقسیم

کانگریس کے سینئر رہنما  رندیپ سنگھ سرجے والا نے کہا کہ وزیر اعظم مودی اپنے دل  کے چور کو دیکھیں، تب انہیں پتہ چلے گا کہ ملک میں نفرت کون پھیلا رہا ہے اور  ملک کو تقسیم کون کر رہا ہے۔

بھارت جوڑو یاترا اپنے آخری پڑاؤ پر،پلوامہ پہنچ گئی

بھارت جوڑو یاترا  جو کشمیر میں اپنے آخری پڑائو میں پلوامہ پہنچ گئی ہے سنیچر کو دوبارہ شروع ہوئی۔ کانگریس کے رکن پارلیمنٹ راہل گاندھی نے اونتی پورہ سے  یاترا کا آغاز کیا۔ اس دوران پی ڈی پی سربراہ محبوبہ مفتی  اور پرینکا گاندھی بھی یاترا میں شامل  ہوئیں۔ یاترا کے دوران راہل ...