سپریم کورٹ الیکشن کمیشن معاملے پر ہوا سخت، مرکز سے مانگی الیکشن کمشنر ارون گویل کی تقرری سے متعلق فائل

Source: S.O. News Service | Published on 24th November 2022, 11:21 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی، 24؍نومبر (ایس او نیوز؍ایجنسی) سپریم کورٹ نے بدھ کے روز مرکزی حکومت سے کہا کہ وہ ارون گویل کی الیکشن کمشنر کی شکل میں حال ہی میں ہوئی تقرری سے متعلق فائلوں کو دیکھنا چاہتا ہے اور اس بات پر زور دیا کہ وہ یہ دیکھنا چاہتا ہے کہ کس طریقہ کار سے ان کی تقرری کی گئی اور اسے (فائلیں) پیش کرنے میں کوئی خطرہ نہیں ہے۔ عرضی دہندہ کی نمائندگی کر رہے وکیل پرشانت بھوشن نے گویل کی تقرری کے سلسلے میں ایشو اٹھایا۔ انھوں نے کہا کہ گویل موجودہ سکریٹری ہیں، انھیں جمعہ کو اپنی خواہش پر سبکدوشی دی گئی تھی۔ تقرری نامہ ہفتہ کو جاری کیا گیا تھا اور پیر کے روز انھوں نے الیکشن کمشنر کی شکل میں کام کرنا شروع کیا۔

پرشانت بھوشن نے کہا کہ انھوں نے تقرری کے سلسلے میں عرضی دی تھی اور عدالت اس معاملے کی سماعت کر رہی تھی، پھر بھی حکومت نے تقرری کر دی۔ یہ نشاندہی کرتے ہوئے کہ مرکز نے کسی کو ایک ہی دن میں تقرری کی ہے، انھوں نے پوچھا کہ انھوں نے کس طریقہ کار پر عمل کیا اور سیکورٹی کی ترکیب کیا ہے؟

جسٹس کے ایم جوسف کی صدارت والی پانچ ججوں کی آئینی بنچ نے اس معاملے میں کہا کہ عدالت نے جمعرات کو معاملے کی سماعت کی اور بھوشن نے کہا کہ اسامی کے سلسلے میں مداخلت کی درخواست دی ہے اور مرکز نے ایک شخص کو الیکشن کمشنر کی شکل میں تقرر کیا ہے۔ جسٹس جوسف نے اٹارنی جنرل اور وینکٹ رمنی سے کہا کہ اس افسر کی تقرری کی فائلیں پیش کریں۔ آپ کہتے ہیں کہ اس میں کوئی لچھے دار بات نہیں ہے۔ کیا انھیں اپنی خواہش سے سبکدوشی کی بنیاد پر تقرر کیا گیا۔ ان کی تقرری کیسے ہوئی، کس نظام (عمل) سے انھیں تقرر کیا گیا۔

انھوں نے اٹارنی جنرل سے کہا کہ اگر کوئی لاقانونیت نہیں ہے تو آپ کو خوف نہیں کرنا چاہیے اور اگر سب کچھ مناسب طریقے سے چل رہا ہے تو ہمیں فائل دکھائیں۔ اس پر اٹارنی جنرل نے کہا کہ مجھے نہیں لگتا کہ ہمیں اتنی دور کی سوچنی چاہیے یا ایسا کرنا چاہیے۔ جسٹس جوسف نے کہا کہ عدالت تقرری پر فیصلہ نہیں دے گی اور ہم اس فائل کو دیکھنا چاہتے ہیں جب تک کہ آپ کچھ خصوصی اختیار کا دعویٰ نہیں کرتے۔ ہم چاہتے ہیں کہ دیکھیں کہ چیزیں کیسے کام کرتی ہیں۔

عدالت عظمیٰ نے زبانی طور پر کہا کہ تقرری کا حکم جمعرات کو معاملے کی سماعت شروع ہونے کے بعد دیا گیا تھا، اور بھوشن نے آسامی سے متعلق ایک درخواست داخل کر کہا تھا۔ اٹارنی جنرل نے کہا کہ انھیں اعتراض ہے کہ اس واحد مثال کا استعمال نہیں کیا جا سکتا، کیونکہ معاملہ ایک بڑے سوال سے جڑا ہے۔ اس پر جسٹس جوسف نے کہا کہ ہم فائل دیکھنا چاہتے ہیں کیونکہ یہ ہماری ذمہ داری سے جڑی للک ہے۔

بنچ نے کہا کہ اٹارنی جنرل جمعرات کو فائلیں اپنے ساتھ لا سکتے ہیں اور اگر انھیں لگتا ہے کہ انھیں اس کا انکشاف نہیں کرنا چاہیے تو انھیں بنچ کو بتانا چاہیے کہ وہ انکشاف کیوں نہیں کر سکتے۔ اس معاملے میں سماعت ختم کرتے ہوئے جسٹس جوسف نے کہا کہ گویل کی تقرری سے متعلق فائلوں کو ہمیں دینے سے کوئی خطرہ نہیں ہے، اور اٹارنی جنرل کو بتایا کہ یہ اطلاع کو واپس لینے کا معاملہ نہیں ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

راہل گاندھی کی بھارت جوڑو یاترا اندور سے برولی پہنچی

 کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی کی بھارت جوڑو یاترا چھٹے دن آج صبح اندور سے مدھیہ پردیش کے برولی گاؤں کی طرف روانہ ہوئی۔ ان کے ساتھ کانگریس کے درجنوں سینئر رہنما اورافسران کے علاوہ ہزاروں کارکنان بھی موجود ہیں۔

مہاراشٹر میں ریلوے فٹ اوور برڈج کاحصہ گرپڑا 20افراد سے زیادہ زخمی،8کی حالت تشویشناک

) مہاراشٹر کے چندر پور میں بلارشاہ ریلوے اسٹیشن پر فٹ اوور برڈج کا ایک حصہ گرنے سے ایک بڑا حادثہ پیش آیا- کئی مسافر تقریباً 60فٹ کی بلندی سے پٹری پر پل سے گر گئے- حادثے میں 20مسافر زخمی ہو گئے-8 افراد کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے-

گجرات کے نوجوان نوکریاں دینے کے جھانسے کو سمجھ چکے ہیں: ملکارجن کھرگے

کانگریس کے صدر ملکارجن کھڑگے نے اتوار کے روز بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) پر نوجوانوں کو روزگار فراہم کرنے کے نام پر صرف جھانسہ دینے کا الزام لگاتے ہوئے کہا کہ گجرات کے نوجوان اس کی اصلیت کو سمجھ چکے ہیں اور اسمبلی انتخابات میں بی جے پی کو اس کا مناسب جواب ملے گا۔

راہل گاندھی نے 'بھارت جوڑو یاترا' میں چلائی بلیٹ موٹر سائیکل، پدیاترا میں انہیں دیکھنے کے لیے امڈا جم غفیر

مدھیہ پردیش میں کانگریس کی 'بھارت جوڑو یاترا' جاری ہے۔ پدیاترا میں کافی بھیڑ جمع ہو رہی ہے۔ روزانہ ہزاروں کی تعداد میں لوگ پد یاترا میں شامل ہو رہے ہیں۔ راہل گاندھی کو آج 'بھارت جوڑو یاترا' کے دوران بلٹ موٹر سائیکل چلاتے ہوئے دیکھا گیا۔ اس جی تصاویر اور ویڈیوز منظر عام پر آگئی ...

مدھیہ پردیش کی شیوراج سنگھ حکومت عوام کو دے رہی ’انتخابی دھوکہ‘:میناکشی نٹراجن

حال ہی میں صدر دروپدی مرمو نے مدھیہ پردیش میں دو دن کا قیام کیا۔ ریاستی حکومت کی طرف سے شہڈول ضلع کے لال پور میں برسا منڈا جینتی کے موقع پر منعقدہ ’آدیواسی گورو دیوس‘ میں مدھیہ پردیش 'پی ای ایس اے' اصول کے باضابطہ نفاذ کا اعلان کیا گیا۔