نا بینا افراد کی حوصلہ افزائی کیلئے’سمارتنم کا واکا تھن‘ کنڑا فلم اداکارہ سمیت دیگر افراد کی شرکت

Source: S.O. News Service | Published on 21st November 2022, 12:15 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو، 21؍نومبر(ایس او نیوز)سمار تنم کا واکاتھن2022کے برانڈ امباسڈر وکنڑا فلم اداکار ہ سپتامی گوڑا نے کہا کہ نابینا افراد کا کرکٹ کھیلنا ایک چیلنج ہے،انہیں تعجب ہو رہا ہے کہ وہ کس طرح کرکٹ کھیلتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ نابینا افراد کے کرکٹ کھیل کو فروغ دینے کے ساتھ ساتھ ان کی حوصلہ افزائی ضروری ہے۔ شہر کے کنٹیروا اسٹیڈیم میں سمار تنم ادارہ کے زیر اہتمام ”سمار تنم واکا تھن بنگلور2022“ کو ہری جھنڈی دکھانے کے بعد سپتامی گوڑا نے ان خیالات کا اظہار کیا۔

انہوں نے کہا کہ ملک کے نابینا کرکٹ کھلاڑیوں کی حوصلہ افزائی اور انہیں 5دسمبر سے شروع ہونے والے تیسرے ٹی۔ٹوئنٹی عالمی کرکٹ کپ میں جیت کے لئے نیک تمنا ؤں کا اظہار ضروری ہے۔ انہوں نے کہا کہ واکا تھن سے نابینا افراد کے کرکٹ کے بارے میں بیداری لانے اور اسے فروغ دینے میں مدد ملے گی۔ انہوں نے کہا کہ تیسرے عالمی کپ ٹی20 ٹورنمنٹ 2022 کو بھی فروغ ملے گا جو5تا17دسمبر2022کو ہندوستان میں منعقد ہونے والا ہے۔

رکن پارلیمان پی سی موہن نے خطاب کر تے ہو ئے کہا کہ ہر سال سمار تنم کا واکا تھن کا اہتمام کیا جا رہا ہے،جس کوعوام کی بھرپور تائید حاصل ہے۔انہوں نے کہا کہ سماج میں معذورافراد کی فلاح وبہبودی اور ان کی ترقی ہر شعبہ میں ہونی چاہئے۔سمارتنم ادارہ کے منیجنگ ٹرسٹی ڈاکٹر مہانتیش جے نے کہا کہ سماج میں معذورین کو بھی ان کے حقوق فراہم ہونے چاہئے۔انہوں نے کہا کہ ان کا ادارہ نا بینا افراد کے کرکٹ کے فروغ کو اولین ترجیح دیتے آرہا ہے اور ان کھلا ڑیوں کی حوصلہ افزائی کر رہا ہے۔انہوں نے بتا یا کہ 5دسمبر سے شروع ہونے والے نا بینا افراد کے تیسرے عالمی کپ ٹی ٹوئنٹی ٹورنمنٹ 2022 میں آسٹریلیا،جنوبی افریقہ، پاکستان، نیپال، بنگلہ دیش،سری لنکا اور میزبان ہندوستان سمیت7 ٹیمیں حصہ لے رہی ہیں۔

انہوں نے بتا یا کہ مقابلے ملک کے8 شہروں میں ہوں گے،اس سے دنیا بھر میں نا بیناؤں کے کرکٹ کو فروغ دینے اور عوامی بیداری پیدا کرنے میں مدد ملے گی۔اس موقع پر آئی اے ایس کے ایس لتا کماری، ڈپارٹمنٹ آف یوتھ امپاورمنٹ اینڈ اسپورٹس کے چیرمین ایم پی ملائے، ڈپٹی کمشنر آف پو لیس (ٹرافک ایسٹ)،کلا کرشنا مورتی کے علاوہ رضاکارانہ تنظیموں کے اراکین، طلباء نوجوان بڑی تعداد میں شریک رہے۔گزشتہ پانچ سالوں میں ریاست میں 1,243 بچوں کو گود لیا گیا ہے، جن میں سے8سال سے زیادہ عمر کے50 لڑکے اور8سال سے اوپر کی 68 لڑکیوں کو گود لیا گیا ہے۔ اس وقت3,588 جوڑوں نے ویب سائٹ کے ذریعے بچوں کو گود لینے کیلئے رجسٹریشن کرائی ہے، لیکن سالانہ صرف 200 سے 300 بچے گود لینے والی ایجنسیوں میں شامل ہو رہے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

کرناٹک میں بی جے پی حکومت کے دوران ہندوؤں کا سب سے زیادہ قتل ہوا، یہی ان کا اصلی چہرہ ہے: سابق وزیر اعلیٰ سدارامیا

کرناٹک کے سابق وزیر اعلیٰ اور کانگریس لیڈر ایس سدارامیا نے منگل کے روز ریاست میں برسراقتدار بی جے پی پر زوردار حملہ کیا۔ انھوں نے بی جے پی پر الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ ریاست میں بی جے پی حکومت میں سب سے زیادہ ہندوؤں کا قتل کیا گیا۔ انھوں نے کہا کہ ہمارے دور میں نہ صرف ہندو، ...

بی جے پی کے ریاستی صدر نلین کمار کٹیل کی بھٹکل آمد؛ آنے والے انتخابات کو لے کر کٹیل نے کہا؛ ساورکر اور ٹیپو نظریات کے درمیان ہوگا الیکشن

اس بار ریاستی انتخابات کانگریس اور بی جے پی کے بجائے ساورکر اور ٹیپو  نظریات کے درمیان ہوں گے۔ یہ بات  بی جے پی ریاستی یونٹ کے صدر نلین کمار کٹیل نے کہی۔ شرالی میں منعقدہ بی جے پی پروگرام میں شریک ہوتے ہوئے  کٹیل نے سوال کیا کہ آپ کو محب وطن ساورکرچاہئے  یا جنونی ٹیپو  چاہئے ...

 اڈانی کمپنی کے خُرد بُرد معاملہ پر کانگریس کا بنگلورو میں احتجاج

ریاست کرناٹک کے دارلحکومت بنگلورو کے میسور بینک سرکل پر کانگریس کی جانب سے اڈانی کمپنی سے جڑے معاملات پراحتتجاج کیاگیا جس میں پارٹی کے رہنما و کارکنان شریک تھے۔ احتجاج کے دوران کانگریس کے رہنماؤں نے کہا کہ راہل گاندھی نے پہلے ہی اس معاملہ سے متعلق پیشن گوئی کی تھی۔

منگلورو: نیشنل ایجوکیشن پالیسی 'ہندوتوا راشٹرا' بنانے کا ٹوُل کِٹ ہے؛ ماہر تعلیم ڈاکٹر نرنجنارادھیا 

کمیونسٹ پارٹی آف انڈیا کی آل انڈیا یوتھ فیڈریشن (اے آئی وائی ایف) جنوبی کینرا و اڈپی، سمدرشی ویدیکے منگلورو، کرناٹکا تھیولوجیکل ریسرچ انسٹی ٹیوٹ منگلورو کے اشتراک سے 'نیشنل ایجوکیشن پالیسی (این ای پی) اور اسکولی تعلیم' کے عنوان پر شہر میں منعقدہ  سیمینار میں اپنے خیالات کا ...

پتور: آپسی اختلافات بھول کر بی جے پی کو شکست دینے کے لئے متحد ہوجائیں - کانگریس پارٹی کارکنان سے لیڈروں کی اپیل 

کانگریس پارٹی لیڈران نے  پتور کے نیلیاڈی سے  ملناڈ اور ساحلی علاقے کے لئے اپنی 'پرجا دھونی یاترا' کا دوسرا مرحلہ شروع کرتے ہوئے اپنی کارکنان کو آواز دی کہ وہ آپسی اختلافات بھول کر بی جے پی کی  "بد عنوان، غیر فعال، غیر مخلص، غیر موثر اور عوام سے دور" حکومت کو ہٹانے کے لئے متحد ...