بی کام فائنل میں بھٹکل انجمن کالج کے طلبہ کا شاندار پرفارمینس؛ 50طلبہ نے حاصل کی امتیازی کامیابی

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 21st October 2020, 7:59 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بھٹکل 21اکتوبر (ایس او نیوز) انجمن آرٹس ، سائنس اینڈ کامرس کالج بھٹکل کے بی کام فائنل طلبہ نے اس بار شاندار پرفارمینس پیش کرتےہوئے کالج کا نام روشن کردیا ہے، اس بار پچاس طلبہ نے امتیازی نمبرات سے کامیابی حاصل کی ہے جس میں چھ طلبہ ایسے ہیں جنہوں نے  ایک  سبجیکٹ میں سو میں سو مارکس حاصل کئے ہیں۔

انجمن دفتری ذرائع سے ملی اطلاع کے   مطابق  اس بار بی کام فائنل کےلئے  90 طلبہ امتحانات میں شریک ہوئے تھے جس میں 74 کامیاب رہے۔ اس طرح کامیابی کا اوسط   83.14 فیصد ریکارڈ کیا گیا ہے۔ جملہ پچاس طلبہ ڈسٹنکشن یعنی امتیازی نمبرات سے کامیاب ہوئے ہیں، 21 فرسٹ کلاس سے اور تین سکینڈ کلاس سے کامیاب ہوئے ہیں۔

محمد سمیع کوبٹے ابن الطاف کوبٹے  نے  سب سے زیادہ  95 فیصد اوسط سے شاندار کامیابی درج کرتےہوئے پوری کالج میں ٹاپ کیا ہے، اس نے مینجمنٹ اکاونٹنگ میں سو فیصد مارکس حاصل کئے ہیں، اسی طرح عبدالمُحی قاضیا نے  93.42 فیصد اوسط کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہے، اس طالب علم نے پرنسپل آف فورین ایکسینج میں سو فیصدی مارکس حاصل کئےہیں، ان کے ساتھ ساتھ عبدالملک، محمد سیاف، عبدالبائس، ابوالحسن علی نے بھی اسی سبجیکٹ میں سو فیصدی مارکس حاصل کئے ہیں۔

ممدو آفنان حُسین پوری کالج میں تیسرے نمبر پر ہیں جن کی کامیابی کا اوسط  91.71 فیصد ریکارڈ کیا گیا ہے۔

انجمن طلبہ کی اس  کامیابی پر اراکین انتظامیہ سمیت کالج کے پرنسپال اور دیگر لیکچرار نے تمام  کامیاب ہونے والوں کو مبارکباد پیش کی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

منگلورو: دیواروں پر اشتعال انگیزتحریر کے سلسلے میں کسی کو گرفتار نہیں کیا گیا۔ پولیس کی وضاحت 

کل 3 دسمبر کو میڈیا میں یہ خبر عام ہوگئی تھی کہ چند دن پہلے منگلورو شہر میں دو مقامات پر لشکر طیبہ اور طالبان کی حمایت میں جو اشتعال انگیزپیغام لکھنے کے الزام میں منگلورو سٹی پولیس نے تیرتھ ہلّی کے محمد نذیر نامی ایک شخص کو گرفتار کرلیا ہے۔

سرسی : وشوناتھ کی طرف سے ظاہری طورپر بیان دینا ٹھیک نہیں ہے: وزیر جگدیش شٹر

اگرکسی کو لیڈران کے خلاف عدم اطمینا ن ہے کوئی شکایت ہے تو وہ ریاستی پارٹی صدر کے ساتھ بات کرے ۔ اس طرح سب کے سامنے ظاہری طورپر  بیان بازی  اچھی روایت نہیں ہونے کا وزیر برائے بڑی اور متوسط صنعت کاری جگدیش شٹر نے خیال  ظاہر  کیا۔

کاروار:وزیر داخلہ بسوراج بومائی کا کاروار دورہ : رات کےکرفیو کے متعلق اگلے دودنوں میں فیصلہ ہوگا

’مراٹھا ترقی بورڈ‘ کے  قیام کے خلاف مختلف تنظیموں کی جانب سے اعلان کئے گئے 5دسمبر کے بند کے دوران اگر  زبردستی بند کرایا گیا تو ان کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی، اس بات کا انتباہ   ریاستی وزیر داخلہ بسوراج بومائی نے  دیا۔

منی پال : خصوصی اساتذہ اور غیر تدریسی عملے کی تنخواہوں کو دوگنا کرنے کی مانگ لے کر علامتی احتجاج

ریاست کے خصوصی اسکولوں (معذور واپاہج اسکول) کے معذور و اپاہج اساتذہ اور غیر تدریسی عملہ اپنے اعزازیہ کو دوگنا کرنےسمیت کئی مطالبات کو لےکر کرناٹکا راجیہ  خصوصی اساتذہ سنگھ اُڈپی ضلع شاخ کی جانب سے منی پال میں واقع ڈپٹی کمشنر دفترکے سامنے ایک دن کا علامتی احتجاج درج کیا۔

اتر پردیش میں لو جہاد کے نام پر 14 افراد کے خلاف معاملہ درج

 اترپردیش کے ضلع مئو میں دو مختلف مذاہب سے تعلق رکھنے والے عاشق جوڑے کے گھر سے بھاگ جانے کے بعد مئو پولس نے مبینہ لوجہاد پر کنٹرول کے دعوی کے ساتھ ریاستی حکومت کی جانب سے پاس کئے گئے تبدیلی مذہب قانون کے تحت 14افرادکے خلاف مقدمہ درج کیا ہے۔افسران کے مطابق لڑکا پہلے سے شادی شدہ ...

پہلے ٹی-20 میں چہل-نٹراجن نے ہندوستان کو فتح سے کیا ہمکنار، آسٹریلیاکو 11 رنوں سے شکست

لیگ اسپنریوزویندر چہل(25 رن پر تین وکٹ)اور بائیں ہاتھ کے تیز گیندباز ٹی نٹراجن(30 رن پر تین وکٹ) کی خطرناک گیندبازی کی سے ٹیم انڈیا نے آسٹریلیا کو پہلے ٹی-20 مقابلے میں جمعہ کو 11 رنوں سے شکست دے کر تین میچوں کی سیریز میں 0-1 کی برتری قائم کرلی

کسانوں کی حمایت میں اب ’ایوارڈ واپسی‘ کا سلسلہ شروع، بڑھ گئیں مودی حکومت کی پریشانیاں

زرعی قوانین کے خلاف ایک طرف کسانوں کی تحریک اپنے عروج پر ہے اور وہ کسی بھی حال میں  پیچھے ہٹنے کو تیار نہیں ہیں تو وہیں دوسری طرف  اب کسانوں کی حمایت میں سرکاری ایوارڈس کی واپسی کا سلسلہ بھی شروع ہو گیا جس سے مودی حکومت کی پریشانیوں میں اضافہ ہو گیا ہے۔  کسانوں کا  کہنا ہے کہ ...

منگلورو: دیواروں پر اشتعال انگیز پیغام لکھنے کے معاملے میں سٹی پولیس نے کیا ایک شخص کو گرفتار

چند دن قبل منگلورو کے دو مقامات پر راتوں کودیواروں کے اوپر لشکر طیبہ اور طالبان کی حمایت میں اشتعال انگیز پیغام اور نعرے لکھنے کے جو واقعات پیش آئے تھے ، اس تعلق سے آج پولیس نے ایک شخص کو گرفتار کرلیا ہے۔