سرسی زون میں پرانی بسوں کی زیادہ تعداد  : نئی بسوں کے انتظار میں افسران

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 25th May 2022, 9:00 PM | ساحلی خبریں |

سرسی :25؍مئی  (ایس اؤ نیوز) کےایس آر ٹی سی سرسی زون میں 10لاکھ کلومیٹر سے زائد فاصلہ طئےکئے 150بسیں ہیں ، جن میں سے اکثر بسوں کی ڈرائیونگ قوت کمزورہے۔ نئی بسیں نہ خریدے جانے کی وجہ سے پرانی بسوں سے ہی مجبوری میں کام لیا جارہاہے۔

سرسی زون سے بیرونی ریاستوں سمیت روزانہ 475بسیں مختلف روٹس پر دوڑتی ہیں۔ زون کی مختلف ڈبو میں 535بسیں ہیں۔  انہی بسوں کے ذریعے عوام کے مطالبات کو پورا کئےجانےکی بات کہی جارہی ہے ۔ زیادہ تر انحصار پرانی بسوں پر ہے۔ اترکنڑا ضلع کو پہاڑی ضلع کہاجاتاہے۔ ضلع کے کئی مقامات پر بسوں کا دوڑنا دشوار ہے، دیہاتوں میں دوڑنے والی بسیں اکثر راستے کے درمیان ہی خراب ہوکر کھڑی رہتی ہیں، اور بسوں کی نگرانی کے لئے بھی زیادہ خرچ ہونےکی بات کہی جارہی ہے۔

اصولوں کے مطابق ایک بس 10لاکھ کلومیٹر کا فاصلہ طئے کرتی ہے تو اس کو دوبارہ استعمال نہیں کیاجاسکتا، کیونکہ اس کے انجن اور دیگر اجزاء میں بار بار خرابی ہوتی رہتی ہے۔ ایسی بسوں کو لے کر دور درازمقامات کوجانا ایک چیلنج ہوتاہے، بسوں کی قلت ہے اسی لئے مجبوری ان بسوں کو استعمال کئے جانےکی جانکاری ایک سنئیر ڈرائیور نےدی۔

سرسی زون کے افسر اے راج کمار نے بتایا کہ زیادہ فاصلہ طئے کرنے کے بعد بھی بسوں کے انجن کی وقت پر درستی و مرمت کی جاتی ہے تو مزید کئی برس اس کو دوڑا سکتےہیں۔ سرسی زون میں زیادہ فاصلہ طئے کرنے کے بعد بھی ڈرائیونگ کی قوت رکھنےوالی کافی بسیں ہیں۔

دیہاتوں میں بس کا مسئلہ : سرسی ، سداپور تعلقہ جات کے کئی دیہاتوں کے لئے بسوں کا انتظام روکا گیا ہے، اسکول اور کالج شروع ہوچکے ہیں بسیں نہیں ہونے سے طلبا پریشانی میں مبتلا ہونے کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔ متعینہ بسیں ہونےکے باوجود ڈرائیوروں اور کنڈکٹروں کی قلت ہے، زون میں 200سے زائد ڈرائیوروں کی کمی ہونے سے بسوں کو دوڑانے میں کافی دشواریاں پیش آرہی ہیں۔ دیہی علاقوں کی ضرورت کو پوراکرنے کے لئے دور دراز مقامات کو جانے والی بسوں کو روک دئیے جانےکی جانکاری ایک سنئیر افسر نے بتائی ۔زون کے افسر راج کمار نے بتایا کہ  سرسی زون کے لئے نئی بسوں کی پیش کش ارسال کی جاچکی ہے۔ حال ہی  میں سرسی کا دورہ کئے ٹرانسپورٹ وزیر نے 150نئی بسیں دینے کا تیقن دیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل میونسپل عمارت پر اُردو بورڈ تنازعہ؛ کیا وزیر اعلیٰ کا فون موصول ہونے پر ڈپٹی کمشنر نے اُردو عبارت کو ہٹانے کا دیا تھا حکم ؟ بھٹکل میں جمعہ سے سنیچر آدھی رات تک دفعہ 144 نافذ

بھٹکل  میونسپالٹی کی تزئین شدہ عمارت پر سے اُردو میں لکھی ہوئی   ٹاون میونسپل کونسل   کی عبارت کو بھلے ہی ڈپٹی کمشنر  نے    قانون  کا حوالہ دے کر نکال دیا ہو، مگر   بھٹکل رکن اسمبلی سُنیل نائک نے دعویٰ کیا ہے کہ  اُردو عبارت کو ہٹانے کے لئے اُس کی (سنیل نائک کی)ٰ کی کوششیں ...

کاروار: انسٹاگرام پر غیر ملکی خاتون سے دوستی پڑی مہنگی ۔ 4.90لاکھ روپوں سے ہاتھ دھو بیٹھا نوجوان

ہوناور گنونتے کے رہنے والے شریپاد ہیگڈے نامی ایک نوجوان کی دوستی پچھلے دنوں مبینہ طور پر ایک غیر ملکی خاتون سے ہوگئی۔ پھر وہاٹس ایپ چیاٹنگ کا سلسلہ شروع ہوا ۔ لیکن یہ دوستی شریپاد کو بڑی مھنگی پڑی کیونکہ خاتون کی طرف سے انعام و اکرام کی آس میں اس کو اپنے 4.90 لاکھ روپوں سے ہاتھ ...

بھٹکل میونسپالٹی اُردو بورڈ تنازعہ ؛ میونسپالٹی میٹنگ سے پہلے ہی ڈپٹی کمشنر کے حکم پر نکال دی گئی اُردو عبارت ؛ مسلمانوں میں سخت ناراضگی

بھٹکل میونسپالٹی کی عمارت پر  تین روز پہلے لگائے گئے  بورڈ پر سے آج بالاخر اُردو عبارت کو ہٹادیا گیا اور   عبارت کو  نکالنے کے لئے  میونسپالٹی  کی خصوصی طور پر بلائی گئی  جنرل بوڈی میٹنگ کا بھی انتظار نہیں کیا گیا ۔ جس کو لے کر مقامی مسلمانوں میں سخت  ناراضگی دیکھی جارہی ہے۔ 

بھٹکل سرکاری بس اسٹانڈ کے صحن کی درگت پر عوام برہم  : صحن کے گڑھوں میں گندا پانی جمع ہونے سے سواریوں اور عوام کو دشواری

بھٹکل کا نیا سرکاری بس اسٹانڈ تعمیر ہوکر دوبرس ہورہےہیں  لیکن  ابھی تک بس اسٹانڈ کا صحن مسطح نہیں کیاگیا ہے۔اور جہاں تہاں بڑے بڑے گڑھے بن جانے اور بارش کاپانی بھر جانے سے چھوٹے چھوٹے تالاب میں منتقل ہوگئے ہیں تو بسیں بس اسٹانڈ کے اندر جانے اور باہر نکلنے کے وقت سرکس کرتے ...

منگلورو : جنوبی کینرا میں زبردست بارش - سڑکیں بن گئیں تالاب - اسپتال میں گھسا پانی - نجی اسکولوں نے دی چھٹی 

گزشتہ دو دنوں سے برسنے والی بھاری بارش کی وجہ سے ایک طرف منگلورو شہر کی سڑکیں تالاب بن گئیں تو دوسری طرف برساتی پانی ایک پرائیویٹ اسپتال کے اندر گھس گیا ۔ موسلا دھار بارش کو دیکھتے ہوئے بعض نجی اسکولوں نے چھٹی کا اعلان کر دیا ۔  

کاروار : سٹی میونسپل کاونسل میں کام مکمل ہونے کے بعد ٹینڈر طلب کرنے کے خلاف ستیش سائل نے دیا دھرنا

سٹی میونسپل کاونسل میں کام پورا ہونے کے بعد ٹینڈر طلب کرنے کا معاملہ اٹھاتے ہوئے سابق ایم ایل اے ستیش سائل نے  سی ایم سی کمشنر آر پی نائک  کو آڑے ہاتھوں لینے بعد کے کمشنر کے چیمبر میں ہی دھرنا دیا ۔