سدارامیا کے فوراً وزیراعلیٰ بن جانے کی بات میں نے نہیں کہی، موجودہ مخلوط حکومت 5سالہ میعاد پوری کرے گی؛ ضمیر احمدخان کا بیان

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 2nd May 2019, 10:11 AM | ریاستی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بنگلورو، یکم مئی (ایس او نیوز) ریاستی وزیر برائے اقلیتی امور، حج اور غذا و شہری رسدات بی زیڈ ضمیر احمد خان نے کہا کہ ابھی بھی سدارامیا ہی ان کے لیڈر ہیں - لیکن انہوں نے سدارامیا کے کل ہی وزیر اعلیٰ بن جانے کی بات کہیں بھی نہیں کی ہے- انہوں نے بتایا کہ آئندہ اسمبلی انتخابات کے بعد وزیر اعلیٰ بننے کی بات سدارامیا نے کہی ہے- انہوں نے کہا کہ وہ سدارامیا کو دوبارہ وزیر اعلیٰ کے طور پر دیکھنا چاہتے ہیں - یہی ان کے خواہش بھی ہے- ریاستی عوام بھی چاہتے ہیں کہ سدارامیا پھر وزیر اعلیٰ کے طورپر خدمت انجام دیتے ہوئے پاک و صاف انتظامیہ فراہم کریں - انہوں نے امید ظاہر کی کہ سدارامیا اگلے اسمبلی انتخابات کے بعد وزیر اعلیٰ ضرور بنیں گے- فی الحال موجود مخلوط حکومت کے وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی اپنی 5سالہ میعاد پوری کرلیں گے-

ضمیر احمد نے کہا کہ مخلوط حکومت کی کوئی خطرہ نہیں ہے- یہ حکومت عوامی مفادات کے پروگرامس جاری کرتے ہوئے ہر ایک کو ان پروگرامس سے استفادہ کرنے کے مواقع فراہم کررہی ہے-آپریشن کنول کے متعلق وزیر موصوف نے کہا کہ ہر کوئی رات کے وقت خواب دیکھتا ہے لیکن بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) دن میں خواب دیکھنے لگی ہے جو کبھی بھی شرمندہ تعبیر نہیں ہوں گے- انہوں نے کہا کہ بی جے پی کے ریاستی صدر بی ایس ایڈی یورپا درمیانی شب نیند سے بیدار ہوکر وزیراعلیٰ نہ بننے پر افسوس کا اظہار کرنے لگے ہیں - ضمیر احمد نے پیشن گوئی کرتے ہوئے کہا کہ ایڈی یورپا اب دوبارہ وزیر اعلیٰ  نہیں بنیں گے- کیونکہ ان کی پارٹی میں ان کا کوئی مقام نہیں ہے- جس طرح ایل کے اڈوانی کو پارٹی سے مکمل طور پر نظر انداز کردیا گیا ہے اسی طرح ریاست میں بھی ایڈی یورپا کو بی جے پی نظر انداز کردے گی- انہوں نے کہا کہ سابق وزیر رمیش جارکی ہولی کے جسم میں کانگریس کا خون دوڑرہا ہے وہ کبھی بھی کانگریس کو خیر باد کہنے والے نہیں ہیں - انہوں نے کہا کہ وزارت سے ہٹائے جانے پر وہ ناراض ضرور ہیں لیکن وہ کانگریس چھوڑکر بی جے پی فرقہ پرست پارٹی میں ہرگز شمولیت اختیار نہیں کریں گے-ضمیر احمد نے کہا کہ جارکی ہولی برادران میں کسی بھی قسم کے اختلافات نہیں ہیں - دونوں بھائیوں میں کافی محبت ہے- بی جے پی جتنی بھی کوشش کرلے جارکی ہولی برادران بی جے پی میں شامل نہیں ہوں گے-

ایک نظر اس پر بھی

باغی اراکین اسمبلی ایوان کی کارروائی میں حاضر ہونے کے پابند نہیں:سپریم کورٹ عدالت کے فیصلہ سے مخلوط حکومت کو جھٹکا -کانگریس عدالت سے دوبارہ رجوع کرے گی

کرناٹک کے باغی اراکین اسمبلی کے استعفوں سے متعلق سپریم کورٹ نے آج جو فیصلہ سنایا ہے وہ ”آڑی دیوار پر چراغ رکھنے“ کے مصداق ہے- کیونکہ اس سے نہ کرناٹک کا سیاسی بحران ختم ہوگا اورنہ ہی مخلوط حکومت کو بچانے میں کچھ مدد ملے گی-

سرسی ڈی وائی ایس پی سے کی گئی یلاپور رکن اسمبلی شیورام کوڈھونڈنکالنے کی گزارش

کانگریس اور جے ڈی ایس کے اراکین نے بغاوت کرتے ہوئے اسمبلی اجلاس سے دور رہنے اور وزیر اعلیٰ کمارا سوامی کی جانب سے پیش کی گئی ’اعتماد‘ کی تحریک کے حق میں ووٹ نہ دینے کا جو فیصلہ کیا ہے اس سے مخلوط حکومت گرنا یقینی ہوچلا ہے۔ 

بھٹکل اوراطراف کے  طلبہ وطالبات کے لئے15ڈسمبر کو ہوگا سائنسی وتحقیقی مقابلہ جات کاانعقاد : تعلیمی ادارے توجہ دیں

شہر بھٹکل کا معروف تعلیمی و فلاحی ادارہ تربیت اخوان(شمس اسکول)کے زیر اہتمام  اے جے اکیڈمی فار ریسرچ اینڈ ڈیلوپمنٹ کے اشتراک سے15ڈسمبر 2019 بروز اتوار کو سانتسی و تحقیقی مقابلہ جات کا انعقاد کیا گیا ہے جس میں  بھٹکل‘ مرڈیشور‘ شیرور اور منکی کے سرکاری و  غیر سرکاری‘امدادی ...

مویشی چوروں کے ساتھ ساز باز کرنے کے الزام میں 2پولیس والے ہوئے گرفتار۔4کی تلاش جاری

ایک ہفتے پہلے ساستھان ٹول گیٹ پر 21بھینسوں کی ایک بڑی کھیپ جو ضبط کی گئی تھی، اس تعلق سے گرفتار شدہ ملزمین کے بیانات کی روشنی میں پولیس کی تحقیقاتی ٹیم نے محکمہ پولیس سے ہی وابستہ 2افراد کو گرفتار کرلیا،جبکہ مزید چارمفرور پولیس والوں کو گرفتار کرنے کی کوشش جاری ہے۔ ان پر الزام ...

سون بھدر: زمین کے تنازعہ میں خونیں تصادم، فائرنگ میں 9 افراد ہلاک

  اتر پردیش کے سون بھدر میں زمین کے تنازعہ میں دو فریقین میں زبردست خونیں تصادم ہوا۔ دونوں جانب سے چلی تابڑ توڑ فائرنگ میں تقریباً 9 افراد کی جان چلی گئی، جبکہ تقریباً 20 افراد زخمی بتائے جا رہے ہیں۔ ہلاک شدگان میں 4 خواتین اور 5 مرد شامل ہیں۔

بنٹوال میں ایمبولینس اور ٹرک کا تصادم۔ 1خاتون ہلاک، 4زخمی    

نیرلکٹے کے پاس پیش آنے والے ٹرک اور ایمبولینس کے تصادم میں ایک خاتون موقع پر ہی ہلاک ہوگئے جبکہ ایمبولینس میں موجود مریض سمیت دیگر 4افراد زخمی ہوگئے ہیں، جنہیں علاج کے لئے پتور کے سرکاری اسپتال میں داخل کیا گیا ہے۔