کرناٹک اسمبلی انتخاب سے قبل لنگایت طبقہ نے بی جے پی کو دیا جھٹکا!

Source: S.O. News Service | Published on 24th August 2022, 7:55 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،24؍اگست (ایس او نیوز؍ایجنسی) کرناٹک میں برسراقتدار بی جے پی کے لیے 2023 کے اسمبلی انتخاب کی راہ آسان دکھائی نہیں دے رہی، انتخاب سے قبل پارٹی کو کئی طبقات کی مخالفت کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ اس درمیان سرکردہ لنگایت سَنت نے بھگوا پارٹی کے خلاف جمعرات کو بڑے پیمانے پر تحریک شروع کرنے کا اعلان کر دیا ہے۔ اس کے پیش نظر بی جے پی لنگایت ووٹ بینک کے تقسیم ہونے کی فکر میں مبتلا ہو گئی ہے۔

کڈالا سنگما کے پنچم سالی مٹھ کے بسوا جیامرتنجے سوامی جی نے اعلان کیا ہے کہ چونکہ ’2 اے‘ کے تحت لنگایت پنچ ملی طبقہ کو ریزرویشن دینے کی مدت کار ختم ہو گئی ہے، اس لیے جمعرات کو شیوموگا میں تحریک شروع کی جائے گی۔ اس طبقہ کے لیڈران اور سینئر شخصیات نے بھی 23 اکتوبر کو بنگلورو میں پنچم سالیوں کا ایک عظیم الشان سمیلن منعقد کرنے کی تیاری کی ہے۔ آرگنائزرس کا کہنا ہے کہ وہ سمیلن کے لیے 25 لاکھ لوگوں کو اکٹھا کرنے کی کوشش کریں گے۔

اس سے قبل 26 ستمبر کو وزیر اعلیٰ بومئی کے آبائی شہر شگاؤں میں ان کی رہائش کے سامنے دھرنا و مظاہرہ کرنے کا فیصلہ لیا گیا ہے۔ قابل ذکر ہے کہ بی جے پی یدی یورپا کے وقت سے ہی اس طبقہ کو ریزرویشن فراہم کرنے کی یقین دہانی کراتی رہی ہے۔ پارٹی مذہبی مٹھوں کو تقسیم کرنے میں کامیاب رہی ہے اور تحریک کو روکنے کے لیے ایک نئے مٹھ کو قائم کیا۔ حالانکہ بسو جے مرتنجے سوامی جی نے تحریک جاری رکھی اور ایسا لگتا ہے کہ انھیں اس طبقہ کی حمایت مل رہی ہے۔ بی جے پی نے چار بار مدت کار طے کی، لیکن وہ اس سلسلے میں کچھ بھی نہیں کر رہی ہے۔

والمیکی اور کروبا جیسے اہم طبقہ مختلف درجات کے تحت اپنے طبقات کے لیے ریزرویشن کا مطالبہ کرتے رہے ہیں۔ اندرونی ذرائع کے مطابق اپوزیشن کانگریس، پنچم سالی طبقہ کے لنگایت لیڈروں کے ذریعہ سے ذیلی طبقہ کا اعتماد حاصل کر رہی ہے، جس میں لنگایت طبقہ کا ایک بڑا حصہ شامل ہے۔ اس درمیان محکمہ عوامی تعمیرات کے وزیر سی سی پاٹل نے سَنتوں اور پنچم سالی طبقہ کے لیڈروں سے تحریک ختم کرنے کی گزارش کی ہے۔ انھوں نے کہا کہ وزیر اعلیٰ بومئی ریزرویشن دینے کی سمت میں کام کر رہے ہیں۔ حالانکہ پنچم سالی طبقہ کو یقین دلانا وزیر اعلیٰ بسوراج بومئی کے لیے مشکل ہے، جس کے ناکام ہونے پر آئندہ اسمبلی انتخابات میں براہ راست اثر پڑے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

منگلورو:کانگریس لیڈر رماناتھ رائے نے کہا؛ سی ٹی روی کے بیان نے بی جےپی کو ننگا کردیا ہے

بی جے پی میں راؤڈی شیٹر وں کی شمولیت کی حمایت میں سی ٹی روی نے جو بیان دیا ہے، اُس بیان نے بی جے پی کو ننگاکردیا ہے۔ ان خیالات کا اظہار  سابق وزیر  اور کے پی سی سی کے نائب صدر بی ، رماناتھ رائی  نے کیا۔

مہاراشٹر-کرناٹک سرحد تنازعہ میں شدت، بیلگاوی میں مہاراشٹر کے ٹرکوں پر پتھراؤ، حالات کشیدہ

کرناٹک اور مہاراشٹر کے درمیان جاری سرحد تنازعہ نے بیلگاوی علاقہ میں حالات کو کشیدہ کر دیا ہے۔ سرحدی علاقہ بیلگاوی میں تشدد کے واقعات پیش آ رہے ہیں اور منگل کے روز تو بیلگاوی کے باگیواڑی میں شدید احتجاجی مظاہرہ دیکھنے کو ملا۔ اس دوران کرناٹک رکشن ویدیکے سے جڑے کارکنان نے ...

’مہاراشٹر کے وزراء نے بیلگاوی میں قدم رکھا تو ہوگی قانونی کارروائی‘، کرناٹک کے وزیر اعلیٰ بسوراج بومئی نے کیا متنبہ

مہاراشٹر اور کرناٹک کے درمیان سرحدی تنازعہ کو لے کر بیان بازی لگاتار بڑھتی جا رہی ہے۔ تازہ بیان کرناٹک کے وزیر اعلیٰ بسوراج بومئی کا سامنے آیا ہے جس میں انھوں نے مہاراشٹر حکومت کو متنبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر ان کے وزراء نے کرناٹک کے بیلگاوی میں قدم رکھنے کی کوشش کی تو ان کے ...

منڈیا : مالا دھاری بھکتوں نے لگائے سری رنگا پٹن جامع مسجد کو ہنومان مندر بنانے کے نعرے - مسجد میں گھسنے کی کوشش پولیس نے کر دی ناکام  

زعفرانی جھنڈے اٹھائے ہوئے ہزاروں  مالا دھاری ہنومان بھکتوں کا جلوس 'سیکیرتھنا یاترا' کی شکل میں ہنومان مندر کی طرف جاتے ہوئے جب تاریخی سری رنگا پٹن جامع مسجد کے سامنے پہنچا تو نوجوان بھکتوں نے اچانک اشتعال انگیزی شروع کر دی اور جامع مسجد کو ہنومان مندر میں بدلنے کے نعرے لگانے ...

مرکزی حکومت کی طرف سے دلت، پسماندہ اور اقلیتی طلباء کا اسکالرشپ ختم کیا جانا انہیں تعلیمی حقوق سے بتدریج محروم کرنے کی حکمت عملی ہے: ایس ڈ ی پی آئی

سوشیل ڈیموکریٹک پارٹی آف انڈیا کرناٹک کے ریاستی صدر عبدالمجید نے اپنے جاری کردہ اخباری بیان میں کہا ہے کہ مرکزی حکومت کی طرف سے تعلیمی سال 23۔2022سے ایس سی، ایس ٹی، پسماندہ طبقات، اور اقلیتی برادریوں سے تعلق رکھنے والے پہلی سے آٹھویں جماعت کے تمام طلباء کو کوئی اسکالرشپ ختم ...