شیوسینا بلٹ ٹرین منصوبے کا بوجھ لوگوں کے سروں پر ڈالنے کے خلاف ہے: سنجے راوت

Source: S.O. News Service | Published on 2nd December 2019, 11:01 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،2دسمبر(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) مہاراشٹر میں کانگریس،این سی پی اور شیوسینا کی نئی حکومت کے بعد سے، احمد آباد سے ممبئی تک چلنے والے بلٹ ٹرین منصوبے کے بارے میں بہت سی قیاس آرائیاں جاری ہیں۔ اتحاد کے رہنماؤں نے پہلے ہی اشارہ دیا تھا کہ وزیر اعظم مودی کے  منصوبے پر ان کی حکومت آنے کے بعد اس کا جائزہ لیا جائے گا کیونکہ وہ ریاست کے کسانوں پر خرچ ہونے والے اس پیسہ پر مہاراشٹر پر بوجھ نہیں ڈالنا چاہتے ہیں۔ ادھر، شیوسینالیڈر سنجے راوت نے کہا ہے کہ پارٹی بلٹ ٹرین منصوبے کابوجھ لوگوں کے سروں پر ڈالنے کے خلاف ہے۔ انہوں نے کہا ہے کہ مہاراشٹر کی معاشی صورتحال بہت سنگین ہے۔ بی جے پی کے سابق وزیر پنکجا منڈے نے شیوسینا میں شمولیت کے سوال پر، راوت نے کہاہے کہ بہت سے رہنما ہمارے رابطے میں ہیں۔ اس کے بعد، جب سنجے راوت سے اننت ہیگڑے کے40000 کروڑ روپیے کے بیان پر ایک سوال پوچھا گیا تو سنجے راوت نے کہاکہ بی جے پی اورفڑنویس ریاست کے مجرم ہیں، چیف سکریٹری اور ادھوو ٹھاکرے اس رقم کو واپس کرنے پر وضاحت کریں گے۔بتایا جاتا ہے کہ مہاراشٹرا اسمبلی انتخابات میں اپنے کزن کے ہاتھوں انتخاب ہارنے کے پیچھے ہٹ دھرمی کے خدشے کے بعد پنکجا منڈے بی جے پی سے ناراض ہیں۔ اتوار کو لکھے گئے اپنے ٹویٹر پروفائل اور فیس بک پوسٹ سے ”بی جے پی“ کے ٹیگ کو ہٹانے سے اشارہ ملتا ہے کہ پنکجا نے 12 دسمبر کو والد گوپی ناتھ منڈے کے یوم پیدائش پر حامیوں کی ایک میٹنگ بلا رکھی ہے، جس میں وہ ایک اہم فیصلہ لے سکتی ہیں۔ حامیوں کا الزام ہے کہ او بی سی طبقے اور پارٹی میں قیادت کو ختم کرنے کے لیے، بی جے پی کے صرف چند لیڈروں نے انتخاب میں پنکجامنڈے کو شکست دی۔مراٹھی میں لکھی گئی اس پوسٹ میں، انہوں نے کہا ہے کہ بدلے ہوئے سیاسی ماحول کو دیکھتے ہوئے، اس کے بارے میں یہ سوچنا ضروری ہے کہ آگے کیا کریں؟ اپنی طاقت کو پہچاننے کی ضرورت ہے۔ مجھے خود سے بات کرنے کے لیے 8-10 دن درکارہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

ہریانہ: جمنا نگر میں شہریت قانون مخالف مظاہرہ، تمام مذاہب کے ہزاروں لوگوں کی شرکت

مرکزی حکومت کی جانب سے بنائے گئے قانون سی اے اے ،این پی آراور این آر سی کی مخالفت میں دستور بچاو اور ملک بچاو کے موضوع پر مجلس احرار اسلام اور بھائی چارہ ایکتا منچ کے سانجھا بینر تلے ہریانہ کے جمنا نگر میں ایک مظاہرہ اور جلسہ عام کا انعقاد کیا گیا۔

دہلی انتخابات: جے ڈی یو-ایل جے پی کے آنے سے بی جے پی کو ہوگا فائدہ،منوج تیواری کا دعویٰ

بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کی دہلی یونٹ کے صدر منوج تواری نے بدھ کو کہا کہ اسمبلی انتخابات کے لئے جنتا دل یونائیٹڈ (جے ڈی یو) اور لوک جن شکتی پارٹی (ایل جے پی) کے آنے سے پارٹی کی پوزیشن اور مضبوط ہوئی ہےاور وہ کم از کم 50 سیٹیں جیت کر مضبوط حکومت بنائیں گے۔

سی اے اے پر امت شاہ کا چیلنج قبول، جب چاہیں بحث کر لیں: اکھلیش

 سماج وادی پارٹی (ایس پی) سربراہ وسابق و زیر اعلی اکھلیش یادو نے شہریت (ترمیمی) قانون اور این آر سی پر امت شاہ کے بحث کرنے کے چیلنج کو قبول کرتے ہوئے کہا کہ وہ اس ضمن میں بی جے پی لیڈروں سے بحث کرنے کو تیار ہیں، وہ جب چاہے بحث کر سکتے ہیں۔

یوپی میں خاتون مظاہرین پر پولس نے برسائی لاٹھیاں! ویڈیو وائرل

 اترپردیش کے ضلع اٹاوہ میں شہریت(ترمیمی)قانون کے خلاف احتجاج کے لئے کثیر تعداد میں اکٹھا ہونے والی خواتین پر پولیس نے دھکا مکی کے بعد اس وقت لاٹھی چار ج کردیا جب تحریک کار خواتین نے احتجاج ختم کرنے سے انکار کر دیا۔