شرالی میں ماہی گیر خواتین کا پنچایت دفتر کے سامنے  احتجاج جاری

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 24th February 2020, 9:24 PM | ساحلی خبریں |

بھٹکل :24؍فروری(ایس اؤ نیوز)شرالی کی خاتون ماہی گیر وں کے احتجاج کا سلسلہ جاری ہے، پیر کو شرالی علاقے کی ماہی گیر خواتین نے مچھلی مارکیٹ کے باہر بھی مچھلیوں کی فروخت کاری کی مخالفت کرتےہوئے احتجاج کیا۔

ماہی گیر خواتین نے شرالی پنچایت دفتر کے سامنے ہی مچھلیوں کو بیچتے ہوئے پنچایت کے عوامی نمائندوں کو متوجہ کرنے کی کوشش کی۔ خواتین ماہی گیروں کا  احتجاج  جاری رہنے سے ماحول پیچیدہ ہوتا جارہاہے، عورتوں نے بتایا کہ جب تک مارکیٹ کے باہر مچھلیوں کی فروخت کاری پر پابندی عائد نہیں کی جائے گی تب تک ہم دفتر کے سامنے ہی بیٹھ کر مچھلیاں فروخت کریں گے۔ چاہے کوئی بھی آجائے ہم ڈریں گے نہیں ، ہٹیں گے نہیں ، اپنا احتجاج جاری رکھیں گے۔ اس سلسلے میں سب سے اپیل کی کوئی توجہ دینے تیار نہیں ہے۔ اسی لئے ہمارے سامنے اب صرف احتجاج ہی ایک راستہ ہونے کی بات کہی۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل کورونا وائرس معاملہ؛ انتظامیہ نے جاری کیا وبائی مرض اور ہنگامی حالات سے نمٹنے کے لئے سرکاری فنڈ؛ فاقہ کشی پر مجبور افراد کے لئے بھی  کھانے کا انتظام

ضلع شمالی کینرا کے ڈپٹی کمشنر نے ایک بیان جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس قدرتی آفت سے پیدا شدہ صورتحال سے نپٹنے کے لئے ضلع انتظامیہ نے سرکاری فنڈ جاری کردیا ہے۔

بھٹکل کے شہری خوف زدہ نہ ہوں۔ آئندہ جمعہ تک کاروار میں کروناوائرس کے علاج کے لئے اسپتال تیار ہوجائے گا۔ ڈی سی کا بیان

ضلع شمالی کینرا کے ڈپٹی کمشنر ڈاکٹر ہریش کمارنے اعلان کیا ہے کہ بھٹکل کے شہریوں کو خوف زدہ ہونے کی ضرورت نہیں ہے، کیونکہ ضلع انتظامیہ کووِڈ 19کی وباء سے نپٹنے کے لئے پوری طرح تیار ہے۔

بھٹکل ہیلتھ ایمرجنسی:گھروں تک پہنچائی جائیں گی ضروری اشیاء اور دوائیاں؛ گھروں سے باہر نکلنا بند کریں، اب گاڑیاں ضبط کی جائیں گی

ضلع انتظامیہ کی طرف سے بھٹکل میں ’ہیلتھ ایمرجنسی‘ لاگو کیے جانے کے بعد تعلقہ انتظامیہ نے عوام کو سہولیات فراہم کرنے کے لئے مختلف نوڈل افسران کو نامز د کیا ہے، جو اس بات کا خیال رکھیں گے کہ سماجی رابطے سے دور رکھنے کے لئے عوام کو گھروں میں جو بند کرکے رکھا گیا ہے اس سے  بنیادی ...