شاہین باغ احتجاج پرسپریم کورٹ نےکہا، ماحول نہیں ہےسازگار، سماعت23مارچ تک ملتوی

Source: S.O. News Service | Published on 26th February 2020, 12:26 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

نئی دہلی،26/فروری (ایس او نیوز) دہلی کے شاہین باغ سے این اے سی اے اور این آر سی مخالف مظاہرین کو ہٹانے کے لئے درخواستوں پر سپریم کورٹ میں سماعت ہوئی۔ اس کیس کی سماعت جسٹس سنجے کشن کول اور جسٹس کے ایم جوزف پر مشتمل بینچ کررہی ہے۔ سپریم کورٹ نے کہا ، 'ہم اس پٹیشن کے دائرہ کار کو بڑھانے نہیں جا رہے ہیں۔ ہم صرف اس علاقے میں ہونے والے احتجاج کے متعلق امور کی سماعت کرینگے۔ کورٹ نے کہا کہ عدالت نے مصالحت کاروں کو مقرر کیاتھا جس کے بعد مصالحت کاروں نے اپنی رپورٹ پیش کی ہے۔عدالت ان رپورٹس کا جائزہ لے رہی ہے۔ ساتھ ہی عدالت نے کہا کہ ، شاہین باغ میں جاری مظاہرے سے متعلق درخواست کی سماعت کے لئے کوئی سازگار ماحول نہیں ہے۔اسی لیے، کیس کی سماعت 23 مارچ کے لئے ملتوی کردی گئی ہے۔

وہیں دہلی میں تشدد کے واقعات پر سپریم کورٹ نے دہلی پولیس پربرہمی کا اظہارکیا ۔ سپریم کورٹ میں شاہین باغ کیس کی سماعت کے دوران ، بنچ نے شمال مشرقی دہلی میں جاری تشدد کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ - "مسئلہ پولیس کی پیشہ ورانہ مہارت اور ان کی آزادی کی کمی کا ہے۔ اگر پولیس مکمل طور پر کام کرتی ہے تو قانون کے مطابق ، ان میں سے بہت سے مسائل پیش نہیں آئیں گے۔ " سپریم کورٹ نے کہا کہ "اگر کوئی اشتعال انگیز ریمارکس کرتاہے تو ، پولیس کارروائی کرے گی ۔

عدالت نے کہا کہ موجودہ درخواست میں دہلی میں تشدد کے معاملے کو شامل نہیں کیا جائے گا۔ اس موضوع پر ایک علیحدہ پٹیشن دائر کی جاسکتی ہے۔ عدالت نے مزید کہا کہ دہلی ہائی کورٹ نے پہلے ہی اس معاملے میں پولیس کو نوٹس جاری کردیاہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ہندوستان میں کورونا وبا سے 21/اموات،متاثرین کی تعداد902پہنچی۔ دنیا میں 23,950اموات، 526,544 افراد متاثر

دنیا کے بیشتر ممالک میں پھیل چکے کورونا وائرس‘کووڈ 19’کا قہر تھمنے کا نام نہیں لے رہا ہے اور اب تک اس خطرناک وائرس سے23,950/افراد کی موت ہو چکی ہے جبکہ تقریباً526,544/افراد اس سے متاثرہ ہوئے ہیں۔

کورونا وائرس کے پھیلتے اثرات کے سبب این پی آر، مردم شماری کا پہلا مرحلہ ملتوی

کورونا وائرس کے سد باب کیلئے وزیر اعظم نریندر مودی کی طرف سے اعلان کیے گئے21 روزہ لاک ڈاؤن کی وجہ سے متنازعہ قومی آبادی رجسٹر (این پی آر)کواپ ڈیٹ کرنے اور2021 کی مردم شماری کے پہلے مرحلے کوملتوی کر دیاگیاہے۔

بھٹکل کے شہری خوف زدہ نہ ہوں۔ آئندہ جمعہ تک کاروار میں کروناوائرس کے علاج کے لئے اسپتال تیار ہوجائے گا۔ ڈی سی کا بیان

ضلع شمالی کینرا کے ڈپٹی کمشنر ڈاکٹر ہریش کمارنے اعلان کیا ہے کہ بھٹکل کے شہریوں کو خوف زدہ ہونے کی ضرورت نہیں ہے، کیونکہ ضلع انتظامیہ کووِڈ 19کی وباء سے نپٹنے کے لئے پوری طرح تیار ہے۔

کورونا وائرس کے پھیلتے اثرات کے سبب این پی آر، مردم شماری کا پہلا مرحلہ ملتوی

کورونا وائرس کے سد باب کیلئے وزیر اعظم نریندر مودی کی طرف سے اعلان کیے گئے21 روزہ لاک ڈاؤن کی وجہ سے متنازعہ قومی آبادی رجسٹر (این پی آر)کواپ ڈیٹ کرنے اور2021 کی مردم شماری کے پہلے مرحلے کوملتوی کر دیاگیاہے۔