گوا میں جوئیڈا کے نوجوان کی رپورٹ دوسری مرتبہ آئی نگیٹیو۔ ممبئی سے آئی تھی پوزیٹیو رپورٹ!

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 20th May 2020, 1:21 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

کاروار 20/ مئی (ایس او نیوز) کاروار چیک پوسٹ سے ہوتے ہوئے گوا میں داخل ہونے والے جوئیڈا کے جس نوجوان کی کووِڈ رپورٹ ایک دن پہلے پوزیٹیو آئی تھی اس کی دوبارہ جانچ گواکی لیباریٹری میں کرنے پر رپورٹ نگیٹیو نکلنے کی بات سامنے آئی ہے۔

 بتایا جاتا ہے کہ یہ نوجوان گوا کی ایک دواساز کمپنی میں ملازمت کرتا ہے۔ کچھ دیگر افراد کے ساتھ اس شخص نے 14مئی کو گوا کاروار سرحد عبور کی تھی۔ جب گوا چیک پوسٹ سے اس کوواسکو میں کوارنٹین کے لئے بھیجا گیا اور وہاں سے اس کے گلے سے تھوک کا نمونہ نکال کر ممبئی کی(ٹرو نیٹ) جانچ لیباریٹری میں بھیجا گیا تھا۔ ممبئی سے آنے والی رپورٹ پوزیٹیو آئی تھی۔ مگر گوا میڈیکل کالج کی لیباریٹری میں جب اس کے  نمونہ کی دوبارہ جانچ کی گئی  تو اس کی رپورنگیٹیو نکلی ہے۔  اب کس لیباریٹری میں کہاں غلطی ہوئی ہے اس کا خلاصہ ہونا باقی ہے، جبکہ گوا کے محکمہ صحت کے وزیر وشواجیت رانے نے اپنی ریاستی لیباریٹری کی جانچ رپورٹ آنے سے پہلے ہی ممبئی کی رپورٹ کو بنیاد مان کر اس کیس کو پوزیٹیو قرار دے دیا ہے۔
 

ایک نظر اس پر بھی

بھاری برسات کے وقت منگلوروایئر پورٹ پر طیاروں کو اترنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ ایئر پورٹ ڈائریکٹر راؤ کا بیان

منگلورو انٹر نیشنل ایئر پورٹ کے دائریکٹر وی وی راؤ نے ایک بیان جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھاری برسات اور خراب موسم کی وجہ سے چیزیں صاف دکھائی نہ دینے کی صورت میں ایئر پورٹ پر طیاروں کو لینڈنگ کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

کیرالہ میں پیش آیا چٹان کھسکنے کا خطرناک حادثہ۔ 15ہلاک اور60سے زائدافراد ہوگئے لاپتہ۔ ملبے میں دب گئیں 30جیپ گاڑیاں 

کیرالہ کے مشہور تفریحی مقام ’مونار‘ سے قریب ’ایڈوکی‘ میں چٹان کھسکنے کا ایک خطرناک حادثہ پیش آیا جس میں تاحال 15افراد ہلاک ہونے اور 60سے زیادہ لوگ لاپتہ ہونے کے علاوہ 30جیپ گاڑیاں چٹان کے ملبے میں دب کر رہ جانے کی خبر ہے۔

عالمی ادارہ صحت نے کہا؛ سماجی فاصلہ برقرار نہ رکھنے سے بڑھ رہے ہیں کورونا کے معاملات، نوجوان مریضوں کی تعداد میں تین گنا اضافہ

عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) کا کہنا ہے کہ سماجی فاصلہ برقرار نہ رکھنے کی وجہ سے گزشتہ پانچ ماہ کے دوران کرونا وائرس سے متاثرہ نوجوانوں کی تعداد میں تین گنا اضافہ ہوا ہے۔ڈبلیو ایچ او کی رپورٹ کے مطابق فروری کے آخر سے لے کر جولائی کے وسط تک، کرونا وائرس کا شکار ہونے والے 60 لاکھ ...