کورونا کا خاتمہ جولائی تک نہیں ہوگا: ایکسپرٹ

Source: S.O. News Service | Published on 12th May 2021, 5:51 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

نئی دہلی، 12؍مئی  (ایس او نیوز؍ایجنسی)جس طرح کورونا کے نئے معاملوں کی تعداد میں کمی درج ہو رہی ہے اس سے یہ امید بنی ہے کہ ہندوستان میں کورونا کی دوسری لہر کا خاتمہ جلد ہو جائے گا لیکن وبائی بیماریوں کے ماہر شاہد جمیل کا کہنا ہے کہ بھلے ہی ابھی کچھ ریاستوں میں کورونا کے کیس کم ہوتے نظر آ رہے ہوں لیکن دوسری لہر کا خاتمہ ہونے میں ابھی کچھ ماہ لگیں گے۔ شاہد جمیل کے مطابق جولائی کےآخر تک کورونا کی دوسری لہر کاخاتمہ ہو گا۔

کل یعنی منگل کو وزارت صحت نے بتایا تھا کی ملک کی نو ریاستوں میں اب نئے معاملوں کی تعداد میں کمی آ رہی ہے ۔ وزارت صحت نے بتایا کہ ریاست مہاراشٹر، مدھیہ پردیش اور دہلی جیسی سب سے زیادہ متاثر ریاستیں بھی ان نو ریاستوں میں شامل ہیں۔ وزارت صحت کے اس بیان کے بعد سےعوام میں اس بیماری کے خاتمہ کے تعلق سے کچھ اطمینان پیدا ہو ا تھا۔

شاہد جمیل نے بتایا کہ دوسری لہر کے لئے کچھ نئے ویرئنٹ ہو سکتے ہیں لیکن اس بات کے اشارے نہیں ہیں کہ یہ زیادہ خطرناک ہو سکتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں دوسری لہر میں کورونا کے معاملہ اتنی تیزی سے کم بھی نہیں ہوں گے جتنی تیزی سےعام طور پر دوسری اور تیسری لہر میں ہوتے ہیں ۔

شاہد جمیل نے بتایا کہ پہلی لہر میں ایک دن میں سب سے زیادہ 97 ہزار کیس درج ہوئےتھے لیکن دوسری لہر میں ایک دن میں 4 لاکھ سےزیادہ کیس درج ہوئےہیں اس لئے اس لہر کے ڈھلنے میں بھی وقت لگے گا ۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں اس بات کو دھیان میں رکھنا چاہئے کی کئی ریاستوں میں کورونا کے نئے معاملوں میں اضافہ دیکھنے میں آ رہا ہے۔

نیوز 18 پر شائع خبر کے مطابق شاہد جمیل نے کہا ہے کہ ہندوستان میں کورونا سےہونے والی اموات کےاعداد و شمار صحیح نہیں ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم جس طرح سے اموات کےاعداد و شمار جمع کرتےہیں وہ طریقہ ہی غلط ہے۔ساتھ میں انہوں نے یہ بھی کہا کہ ملک میں کورونا کے معاملوں میں اضافہ کی وجہ کورونا سے متعلق ضابطوں پرعمل نہ کرنا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

 جموں و کشمیر کے راجوری میں گئو رکشکوں کے ذریعے 20 سالہ نوجوان کا پیٹ پیٹ کر قتل! محبوبہ مفتی نے متاثرہ کنبہ کے حق میں اٹھائی آواز

جموں و کشمیر کے راجوری ضلع میں ایک 20 سالہ نوجوان اعجاز ڈار کو کچھ نامعلوم افراد نے اس وقت قتل کر دیا جب وہ اپنی بھینس لے کر جا رہے تھے۔ یہ واقعہ مراد نگر گاؤں کے نزیک پیر کے روز پیش آیا۔

وجے مالیا، نیرو مودی اور میہل چوکسی کے ضبط شدہ 9371 کروڑ روپے سرکاری بینکوں کو منتقل

سرکاری بنیکوں سے اربوں روپے کے قرض لیکر فرار کاروباریوں وجے مالیا، نیرو مودی اور میہول چوکسی کے ملک و بیرون ملک میں ضبط 18170.02 کروڑ روپے اور املاک میں 9317.17 کرور روپے بینکوں اور حکومت کو منتقل کر دیئے گئے ہیں۔

بھٹکل میں پیر سے سڑک پر اتریں 18سرکاری بسیں :دیہی علاقوں میں بسوں کی آمدورفت فی الحال نہیں

کورونا لاک ڈاؤن میں ڈھیل دئیے جانے کے بعد آخر کار بھٹکل بس اسٹانڈ سے سرکاری بسیں باہر نکلیں ۔بھٹکل سے کاروار، کمٹہ ، سرسی کےلئے بسیں شروع کی گئی ہیں۔  چونکہ پڑوس اضلاع اُڈپی ، دکشن کنڑا، دھارواڑ وغیرہ میں کورونا کی ہراسانی جاری رہنے سے بین الاضلاع بسوں کی شروعات نہیں ہوئی ہے۔

بھٹکل میں موسلادھار بارش کا سلسلہ جاری؛ چھ مکانوں کو نقصان؛ بعض راستوں کی حالت بد سے بدترہونے پر عوام سخت پریشان

بھٹکل سمیت ساحلی علاقوں اور ملناڈ وغیرہ  میں گذشتہ ایک ہفتہ سے  موسلادھار بارش کا سلسلہ جاری ہے، بھٹکل میں ویسے تو  تھوڑے تھوڑے وقفے کے بعد  زوردار بارش ہورہی ہے تو وہیں  ملناڈ اور پڑوسی   علاقوں میں زبردست بارش ہونے کی اطلاعات موصول ہورہی ہیں جس کے نتیجے میں ہوناور  کے ...

کیا اکتوبر تک کورونا کی مزید ایک لہر ملک کو دہلائے گی ؟ کیا کہتے ہیں ماہرین

کورونا وائرس کی دوسری لہر نے جس طرح سے ملک میں تباہی مچائی ہے ، اس کے بعد مسلسل تیسری لہر کو لے کر اندیشہ ظاہر کیا جارہا ہے ۔ سرکار کے چیف سائنٹفک ایڈوائزر واضح طور پر کہہ چکے ہیں کہ تیسری لہر ضرور آئے گی ، لیکن اس بات پر ابھی ریسرچ جاری ہے کہ تیسری لہر کتنی خطرناک ہوگی ۔ اب نیوز ...

آصف، دیوانگنا، نتاشا ضمانت معاملہ: دہلی پولیس کی اپیل پر سپریم کورٹ میں سماعت، تینوں سماجی کارکنان کو نوٹس جاری

 شمال مشرقی دہلی فسادات کے تین ملزمان آصف اقبال تنہا، دیوانگنا کالیتا اور نتاشا نارووال کی ضمانت پر رہائی کے خلاف آج دہلی پولیس کی عرضی پر سپریم کورت میں سماعت ہوئی۔ سپریم کورٹ نے ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف پولیس کی اپیل پر رہا ہونے والے تینوں کارکنان کو نوٹس جاری کئے ہیں۔

عوام اپنا پیٹ کاٹ رہی ہے اور مودی حکومت عوام کی جیب: پرینکا گاندھی

ہندوستان کی عوام پر مہنگائی کی مار جاری ہے۔ کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی نے مہنگائی کو لے کر مودی حکومت کو ایک بار پھر تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔ انھوں نے کہا کہ عوام اپنا پیٹ کاٹ رہی ہے اور مودی حکومت عوام کی جیب کاٹ رہی ہے۔