مظفر نگر فسادات کے مقدمات پر فیصلہ انصاف کے ساتھ مذاق:ایس ڈی پی آئی 

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 21st July 2019, 12:49 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

نئی دہلی،21/جولائی (ایس او نیوز/ پریس ریلیز) سوشیل ڈیموکریٹک پارٹی آف انڈیا (SDPI) نے مظفر نگر فسادات کے مقدمات جن میں 41میں سے 40مقدمات میں قتل اور عصمت دری کے الزام میں ملوث ملزمان کو بری کئے جانے کو انصاف کے ساتھ مذاق قرار دیا ہے۔ اس ضمن میں ایس ڈی پی آئی قومی جنرل سکریٹری محمد شفیع نے اپنے جاری کردہ اخباری اعلامیہ میں کہا ہے کہ استغاثہ میں خاطر خواہ وقفہ کی وجہ سے5استغاثہ گواہوں نے عدالت میں اپنا بیان بدل دیا اور 6استغاثہ گواہ مخالف بن گئے۔ نیز قتل کے 5معاملوں میں جو اسلحہ استعمال کیا گیا تھا اس کو پولیس عدالت میں پیش نہیں کرسکی۔ استغاثہ نے پولیس کی اپنی ڈیوٹی سے لاپرواہی کے تعلق سے کوئی جرح نہیں کیا ہے، اس طرح سے انصاف کا یہ پورا عمل مذاق بن گیا ہے کیونکہ مظفر نگر فسادات کے 40مقدمات میں ملزمین بری ہوگئے۔محمد شفیع نے مزید کہا ہے کہ سال 2017مظفر نگر کی عدالت نے فساد سے متعلق 41معاملوں میں فیصلہ سنایا ہے اور قتل کے صرف ایک کیس میں سزا سنا یا ہے۔ جن 40مقدمات میں ملزمان بری کئے گئے ہیں وہ تمام مسلمانوں پر حملے کے مقدمات تھے۔ 8فروری 2019کو صرف ایک سزا سنایا گیا تھا،جس میں سیشن عدالت نے 7ملزمان۔ مزمل، مجسم، فرقان، ندیم، جہانگیر، افضل اور اقبال کو27اگست 2013کو کاول گاؤں کے گورو اور سچن کے قتل کے الزام میں عمر قید کی سزا سنایا تھا۔بتایا جاتا ہے کہ اس قتل کے بعد ہی فساد برپا ہوئے تھے۔ محمد شفیع نے مزید کہا ہے کہ جن 53افراد کو عدالت نے قتل اور عصمت دری میں مبینہ طور پر ملوث قرار دیا تھا لیکن ان کو بی جے پی لیڈروں نے حفاظت کیا۔ ملزمان کو بری کئے جانے سے پولیس اور شر پسندوں کے درمیان ملی بھگت کا انکشاف ہوا ہے اور یہ بات ایک بار پھر ثابت ہوا ہے کہ کمزور طبقوں کو انصاف نہیں ملتا ہے۔
 

ایک نظر اس پر بھی

ملک میں گزشتہ 24 گھنٹے میں کورونا کے 6387 نئے معاملے، متاثرین کی تعداد 1.50 لاکھ سے متجاوز

ملک میں گزشتہ دو دنوں کے دوران کورونا انفیکشن کے نئے معاملوں میں جزوی کمی آئی اور تقریباً 4000 لوگوں کے صحت مند ہونے سے جہاں تھوڑی راحت ملی ہے، وہیں گزشتہ 24 گھنٹے میں انفیکشن کے 6387 نئے کیس سامنے آنے سے ملک میں اس سے متاثر ہونے والے لوگوں کی تعداد 1.50 لاکھ سے تجاوز کر گئی ہے۔

گجرات کے سورت سے نکلی ٹرین ، بہار کے چھپرا کے بجائے پہنچی کرناٹک کے بنگلورو: مزدورں کا حال بے حال

لاک ڈاؤن کی مدت میں مزدوروں کو ان کے وطن لوٹانے گجرات سے نکلی ایک مزدور ٹرین (شریمک ریل ) بہار پہنچنے کے بجائے کرناٹکا کے بنگلورو پہنچ کر سب کو حیرت میں ڈال دیا ہے۔ گرچہ یہ ایک مذاق لگتا ہے مگر ہے حقیقت۔ اسی طرح اور ایک خصوصی مزدور ریل گجرات کے سورت سے 1200مزدوروں کو لے کر بہار کے ...

تبلیغی جماعت کے 57 غیر ملکی افراد عدالت سے بری، حکومت ہریانہ کو ان کے ملک بھیجنے کا حکم

  ہریانہ کی ایک عدالت نے اہم فیصلہ سناتے ہوئے سبھی چھ ممالک کے 57 غیرملکی جماعتیوں پرغیرملکی قوانین کے تحت عائد تمام دفعات کو بے بنیاد تسلیم کرتے ہو ئے سبھی جماعتیوں کو بری کردیا اورہریانہ حکومت کو حکم دیا کہ جلد سے جلد سبھی جماعت والوں کو ان کے ملک بھیجنے کا انتظام کرے۔ یہ بات ...

مزدور پیدل نہ جائیں، سب کے لئے مفت ریل سفر کے انتظامات: منیش سسودیا

  دہلی کے نائب وزیر اعلی منیش سسودیا نے تارکین وطن مزدوروں سے پیدل سفر نہ کرنے کی اپیل کی ہے۔ انہوں نے کہا ہے کہ دہلی حکومت نے تمام مفت ریل سفروں کا انتظام کیا ہے۔ 7 مئی سے 25 مئی تک ، 2،41،169 افراد کو 196 ٹرینوں کے ذریعے ان کے گھر بھیج دیا گیا ہے۔ بہار میں سب سے زیادہ 1،25،711 افراد ہیں ...

ملک میں پہلی بار 5 ہزار مسلمانوں نے عید کی نماز آن لائن ادا کی

 کورونا وائرس کے سبب جب لوگوں کو مسجد میں جا کر نمازیں پرھنے اورعبادت کرنے پرروک لگی ہوئی ہے اور مسلمان اجتماعی عبادت کے بجائے انفرادی عبادت کرنے پر مجبور ہیں تو ایسی استثنائی صورتحال میں نئی اور جدید ٹیکنالوجی کے استعمال کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے

انکولہ ۔ہبلی ریلوے منصوبہ : ماہرین ماحولیات کے خلاف اسنوٹیکر گرم

انکولہ۔ ہبلی ریلوے لائن منصوبے کو لے کر ماہرین ماحولیات کے خلاف  جے ڈی ایس لیڈر آنند اسنوٹیکر نے سخت اعتراض جتاتے ہوئے کہا ہے کہ اس منصوبے کے تعلق سے مداخلت یا مخالفت نہ کریں تو بہتر ہے ورنہ ماہرین ماحولیات کی طرف سے فاریسٹ کی جتنی زمین ہتھیائی گئی ہے ثبوت کے ساتھ پیش کرنے کی ...

مزدور پیدل نہ جائیں، سب کے لئے مفت ریل سفر کے انتظامات: منیش سسودیا

  دہلی کے نائب وزیر اعلی منیش سسودیا نے تارکین وطن مزدوروں سے پیدل سفر نہ کرنے کی اپیل کی ہے۔ انہوں نے کہا ہے کہ دہلی حکومت نے تمام مفت ریل سفروں کا انتظام کیا ہے۔ 7 مئی سے 25 مئی تک ، 2،41،169 افراد کو 196 ٹرینوں کے ذریعے ان کے گھر بھیج دیا گیا ہے۔ بہار میں سب سے زیادہ 1،25،711 افراد ہیں ...

بھٹکل میں خدمات انجام دینے والے کورونا کے خصوصی آفسر ڈاکٹر شرتھ نائیک اب ہوں گے ضلع ہیلتھ آفسر

بھٹکل میں کورونا وباء پر قابو پانے کے لئے کاروار سے ڈاکٹر شرتھ نائیک کو بھٹکل روانہ کرکے انہیں نوڈل آفسر کی ذمہ داری سونپی گئی تھی، اُنہیں اب ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفسر کے طور پر نامزد کیا گیا ہے۔ ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق  ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفسر کے طور پرخدمات انجام دینے والے  ڈاکٹر ...