سرسی پولیس سرکل انسپکٹرگریش بھٹ ایک متعصب آفیسرہے۔ ایس ڈی پی آئی ضلع صدر توفیق بیاری کا الزام

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 16th October 2019, 6:16 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بھٹکل 16/اکتوبر (ایس او نیوز) سوشیل ڈیموکریٹک پارٹی آف انڈیا کے ضلع صدر توفیق بیاری نے یہاں ایک پریس کانفرنس کے دوران کہا کہ سرسی پولیس سرکل انسپکٹر گریش بھٹ ایس ڈی پی آئی کے تعلق سے ایک متعصب ذہنیت والا آفیسر ہے۔

سرسی میں مصنف نامی نوجوان کو پولیس کے ذریعے زد وکوب کیے جانے کے سلسلے میں بھٹکل میں ایس ڈی پی آئی کے ضلعی دفتر میں منعقدہ پریس کانفرنس میں بات چیت کرتے ہوئے توفیق بیاری نے کہا مصنف جب اپنے دوست کی گاڑی کے انشورنس کاغذات دینے کے لئے پولیس اسٹیشن پہنچا تو سرکل انسپکٹرگریش نے اسے اپنے کمرے میں اس کا فون لینے کے بعداس سے پوچھا کہ ”ابھی بھی تم ایس ڈی پی آئی سے جڑے ہو؟ کیا تم سمجھتے ہو کہ میں سرسی میں ایس ڈی پی آئی کی سرگرمیاں جار ی رکھنے دوں گا؟“پھر اس کے بعد دو پولیس اہلکاروں نے مل کر مصنف کی پیٹائی کی ہے۔پھر نیومارکیٹ پولیس اسٹیشن میں لے جاکر شام تک وہاں بٹھائے رکھنے کے بعد اس کے خلاف دفعہ 110کے تحت کیس داخل کیا گیا ہے۔

  توفیق بیاری نے بتایا کہ مصنف پچھلے کچھ برسوں سے بیمار چل رہا ہے۔ اب پولیس کے ظلم وستم کی وجہ سے مزید اس کی طبعیت بگڑ گئی ہے، اور اسے علاج کے لئے منگلورو اسپتال میں داخل کیاگیا ہے۔ سی پی آئی گریش بھٹ نے اس سے قبل بھی ایسا سلوک کیا ہے۔ اس لئے سی پی آئی کو فوری طور پر معطل کیا جاناچاہیے اور اس کے خلاف قانونی کارروائی کی جانی چاہیے۔    پریس کانفرنس کے موقع پر بھٹکل اسمبلی حلقے کے ایس ڈی پی آئی صدر وسیم اور رکن  جلال الدین موجود تھے۔
 

ایک نظر اس پر بھی

بھاری برسات کے وقت منگلوروایئر پورٹ پر طیاروں کو اترنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ ایئر پورٹ ڈائریکٹر راؤ کا بیان

منگلورو انٹر نیشنل ایئر پورٹ کے دائریکٹر وی وی راؤ نے ایک بیان جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھاری برسات اور خراب موسم کی وجہ سے چیزیں صاف دکھائی نہ دینے کی صورت میں ایئر پورٹ پر طیاروں کو لینڈنگ کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

کیرالہ میں پیش آیا چٹان کھسکنے کا خطرناک حادثہ۔ 15ہلاک اور60سے زائدافراد ہوگئے لاپتہ۔ ملبے میں دب گئیں 30جیپ گاڑیاں 

کیرالہ کے مشہور تفریحی مقام ’مونار‘ سے قریب ’ایڈوکی‘ میں چٹان کھسکنے کا ایک خطرناک حادثہ پیش آیا جس میں تاحال 15افراد ہلاک ہونے اور 60سے زیادہ لوگ لاپتہ ہونے کے علاوہ 30جیپ گاڑیاں چٹان کے ملبے میں دب کر رہ جانے کی خبر ہے۔

عالمی ادارہ صحت نے کہا؛ سماجی فاصلہ برقرار نہ رکھنے سے بڑھ رہے ہیں کورونا کے معاملات، نوجوان مریضوں کی تعداد میں تین گنا اضافہ

عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) کا کہنا ہے کہ سماجی فاصلہ برقرار نہ رکھنے کی وجہ سے گزشتہ پانچ ماہ کے دوران کرونا وائرس سے متاثرہ نوجوانوں کی تعداد میں تین گنا اضافہ ہوا ہے۔ڈبلیو ایچ او کی رپورٹ کے مطابق فروری کے آخر سے لے کر جولائی کے وسط تک، کرونا وائرس کا شکار ہونے والے 60 لاکھ ...