آگسٹا ویسٹ لینڈ کیس: ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ پہنچی ای ڈی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 24th June 2019, 11:03 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی، 24 جون (ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) آگسٹا ویسٹ لینڈ معاملے میں ای ڈی نے سپریم کورٹ میں عرضی دائر کی ہے۔اس معاملے میں کورٹ جلد سماعت کے لئے تیار ہے۔ای ڈی نے دہلی ہائی کورٹ کے اس فیصلے کو سپریم کورٹ میں چیلنج کیا ہے، جس میں ہائی کورٹ نے راجیو سکسینہ کو بیرون ملک جانے کی اجازت دی تھی۔دہلی ہائی کورٹ نے صحت بنیاد پر راجیو سکسینہ کو بیرون ملک جانے کی اجازت دی تھی۔دہلی ہائی کورٹ کے حکم کے مطابق راجیو 25 جون سے 24 جولائی تک بیرون ملک رہیں گے۔ہائی کورٹ کے اس حکم کے خلاف ای ڈی سپریم کورٹ پہنچ گئی ہے۔سپریم کورٹ منگل کو معاملے کی سماعت کریگا۔وی وی آئی ہیلی کاپٹر ڈیل سے منسلک منی لانڈرنگ کیس میں بچولئے سے گواہ بنے راجیو سکسینہ کو عدالت نے بیرون ملک سفر کی اجازت دے دی تھی۔دہلی ہائی کورٹ نے راجیو سکسینہ کو ایک ماہ تک بیرون ملک جانے کی اجازت دی تھی۔دراصل نچلی عدالت نے کچھ وقت پہلے راجیو سکسینہ کو علاج کے لیے بیرون ملک جانے کی اجازت دی تھی۔کورٹ نے ای ڈی کی عرضی پر نچلی عدالت کے حکم پر روک لگا دی تھی۔نچلی عدالت نے سکسینہ کو برطانیہ اور دبئی جانے کی اجازت دی تھی۔راجیو سکسینہ نے اسی سال 27 فروری کو گواہ بننے کے لیے پٹیالہ ہاؤس کورٹ میں عرضی داخل کی تھی،انہیں بیمار ہونے کی بنیاد پر 25 فروری کو عدالت سے پہلے ہی ضمانت بھی دی جا چکی ہے۔راجیو سکسینہ کو 31 جنوری کو دبئی سے حوالگی کر لایا گیا تھا۔آگسٹا ویسٹ لینڈ وی وی آئی پی ہیلی کاپٹر سودے معاملے میں پہلے سکسینہ کو ملزم بنایا گیا تھا لیکن راجیو سکسینہ نے جانچ ایجنسی کو اس معاملے میں گواہ بننے کی پیشکش کی اور کہا کہ وہ جانچ ایجنسی کی اس صورت میں معلومات دینے میں مکمل مدد کریں گے۔آگسٹا ویسٹ لینڈ کیس میں بطور گواہ راجیو سکسینہ اپنے بیان بھی کورٹ میں درج کرا چکے ہیں۔دبئی کے کاروباری راجیو سکسینہ کے سرکاری گواہ بننے کے بعد جانچ ایجنسی سی بی آئی اور ای ڈی کو امید ہے کہ وہ ملزمان کے خلاف تحقیقات کے بعد پختہ ثبوت عدالت میں پیش کرنے میں کامیاب ہوں گے کیونکہ سکسینہ نے کورٹ کو بتایا تھا کہ کافی سوچ غور کرنے کے بعد انہوں نے گواہ بننے کا فیصلہ کیا۔
 

ایک نظر اس پر بھی

یوپی اسمبلی: پرینکا گاندھی کو سون بھدر جانے سے روکنے اور حراست پر زَبردست ہنگامہ

ریاستی حکومت کے ذریعہ کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی واڈرا کو سون بھد رجانے سے روکنے، انہیں 27 سے زیادہ گھنٹوں تک حراست میں رکھنے و ریاست میں ایس پی حامیوں کے ہوئے رہے قتل پر یو پی اسمبلی میں کانگریس و ایس پی اراکین نے جم کر ہنگامہ کیا۔

مودی حکومت نے لوک سبھا میں ’آر ٹی آئی‘ ختم کرنے والا بل پیش کیا: کانگریس

  کانگریس نے الزام لگایا ہے کہ ’کم از کم گورنمنٹ اور زیادہ سے زیادہ گورننس‘ کی بات کرنے والی مرکزی حکومت لوگوں کے اطلاعات کے حق کے تحت حاصل حقوق کو چھین رہی ہے اور اس قانون کو ختم کرنے کی کوشش کررہی ہے۔