سعودی عرب میں کرونا وائرس کرفیو:10 عام سوال اوران کے جوابات

Source: S.O. News Service | Published on 8th April 2020, 10:35 PM | خلیجی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

ریاض،8؍اپریل (ایس او نیوز؍ایجنسی) دنیا بھر کے ممالک میں کرونا وائرس کی وَبا کو پھیلنے سے روکنے کے لیے مختلف احتیاطی اقدامات کیے جارہے ہیں اور لوگوں کی آزادانہ نقل وحرکت پر پابندی عاید کی جارہی ہے۔سعودی عرب نے بھی مہلک وائرس کو پھیلنے سے روکنے کے لیے مختلف تدابیر اختیار کی ہیں اور دارالحکومت الریاض سمیت کئی ایک شہروں میں 24 گھنٹے کا کرفیو اور لاک ڈاؤن نافذ کیا ہے۔

سعودی عرب کی وزارت صحت نے کرونا وائرس کے بدھ تک 2932 تصدیق شدہ کیسوں کی اطلاع دی ہے۔ان میں سے 631 افراد صحت یاب ہوچکے ہیں۔مملکت میں اس مہلک وائرس کا شکار 41 افراد جان کی بازی ہار گئے ہیں۔

سعودی وزیر صحت توفیق الربیعہ نے خبردار کیا ہے کہ مملکت میں آیندہ چند ہفتوں کے دوران میں کرونا وائرس کے کیسوں کی تعداد بڑھ کر ایک لاکھ سے دو لاکھ تک ہوسکتی ہے۔انھوں نے سعودی اور غیرملکی ماہرین کے چار تحقیقی مطالعات پر مبنی یہ اعداد وشمار جاری کیے ہیں۔

سعودی خبررساں ایجنسی (ایس پی اے) کے مطابق ڈاکٹر توفیق الربیعہ نے کہا:’’اس میں کوئی شک نہیں کہ ہدایات اور طریق کار کی پاسداری کی وجہ سے کرونا وائرس کے کیسوں کی تعداد کو کم سے کم رکھنے میں مدد ملی ہے جبکہ ان ہدایات پر عمل درآمد نہ کرنے کی صورت میں کیسوں کی تعداد میں بہت زیادہ اضافہ ہوسکتا ہے۔‘‘

سعودی عرب میں کرونا وائرس کی روک تھام کے لیے حکومت کے اقدامات کے حوالے سے بعض عام سوالوں کے یہاں جواب دیے جارہے ہیں۔ملاحظہ کیجیے:

کن سعودی شہریوں میں 24 گھنٹے کا لاک ڈاؤن نافذ ہے؟

سعودی وزارت داخلہ کے مطابق پانچ شہروں الریاض،تبوک ، الدمام ، ظہران ، الہفوف کے علاوہ چار گورنریوں جدہ ، طائف ، القطیف اور الخُبر میں دن رات کا کرفیو اور لاک ڈاؤن نافذ ہے۔

سعودی حکومت نے قبل ازیں مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ میں 24 گھنٹے کا کرفیو اور مکمل لاک ڈاؤن نافذ کردیا تھا اور الحرمین الشریفین (مسجد الحرام اور مسجد نبوی صلی اللہ علیہ وسلم) میں تاحکم ثانی عام لوگوں کا داخلہ بند ہے اور ان کے وہاں نمازیں ادا کرنے پر پابندی عاید ہے۔

کیا دوسرے شہرے میں بھی پابندیاں عاید ہیں؟

دوسرے شہروں اور گورنریوں میں سہ پہر تین بجے سے صبح چھے بجے تک کرفیو نافذ ہے۔اس کا آغاز گذشتہ بدھ کو ہوا تھا۔

کیا سعودی شہروں میں کرفیو کے دوران میں دواخانے اور گراسری اسٹور بھی بند ہیں؟

نہیں ۔ مذکورہ شہروں میں تمام تجارتی سرگرمیاں معطل ہیں لیکن صرف دواخانے اور گراسری اسٹور کھلے رکھنے کی اجازت ہے۔

کرفیو کے دوران میں دوسری کون سے ضروری خدمات دستیاب ہوں گی؟

لانڈری ،مستری کے کام ، بجلی ،ائیرکنڈیشننگ اور نکاسی آب کے شعبوں کو کام کرنے کی اجازت ہے۔ایندھن اسٹیشن کھلے ہیں اور ان کے اندر گاڑیوں کی مرمت کے کام کی بدستور اجازت ہے۔

کیا دوسرے ورکروں کو بھی کرفیو سے مستثنا قرار دیا گیا ہے؟

طبّی عملہ ، سکیورٹی اہلکار اور میڈیا کے ارکان کرفیو کی پابندیوں سے مستثنا ہیں۔

اگر کوئی ضروری اشیاء کی خریداری کے جاتا ہے تو پھر کیا ہوگا؟

سعودی وزارت داخلہ کے مطابق مذکورہ شہروں کے مکین کرفیو کے دوران میں اپنے گھروں اور اقامت گاہوں ہی میں رہیں گے اور صرف صبح چھے بجے سے سہ پہر تین بجے تک سوداسلف ، خوراک کی اشیاء اور ادویہ کی خریداری کے لیے گھروں سے باہر نکل سکتے ہیں مگر انھیں اشیائے ضروریہ کی خریداری کے لیے بھی اپنے اپنے علاقوں تک محدود رہناچاہیے۔

کیا پورا خاندان اکٹھے گراسری اسٹور پر خریداری کے لیے جاسکتا ہے؟

نہیں۔ ایک گھر یا خاندان کے صرف ایک فرد کو ڈرائیور کے ساتھ خریداری کے مذکورہ اوقات میں اپنے ہی علاقے میں کسی گراسری اسٹور پر جانے کی اجازت ہے۔

کیا خوراک کی اشیاء گھروں پر مہیا کرنے کی اجازت ہے؟

سعودی عرب کے تمام علاقوں میں ریستوران رات دس بجے تک گھروں میں کھانے پینے کی اشیاء مہیا کرسکتے ہیں اور شہری ان سے منگوا سکتے ہیں لیکن خوراک فروخت کرنے والے ٹرکوں اور ریستورانوں کو تقریبات منعقد کرنے کی اجازت نہیں ہے۔

کیا فارمنگ اور زرعی خدمات کو کرفیو سے استثنا حاصل ہے؟

کاشت کاری کی صنعت بہ شمول گلہ بانی اور مگس بانی، مرغی خانوں اور ماہی گیروں کو وزارت ماحول ، پانی اور زراعت کے جاری کردہ اجازت ناموں کے ساتھ کام کرنے کی اجازت ہے۔یہ پرمٹ ایک ہفتے کے لیے کارآمد ہیں۔

کیا خیراتی تنظیمیں اور رضاکار کام کرسکتے ہیں؟

خیراتی تنظیموں ، سوسائٹیوں ، رضاکاروں اور محلہ مراکز کو بھی صبح چھے بجے سے سہ پہر تین بجے تک کرفیو سے استثنا حاصل ہے اور وہ اس دورانیے میں کام کرسکتے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

سعودی عرب کی حکومت کا اہم فیصلہ

سعودی پبلک پراسیکیوشن نے قانون تحفظ اطفال کے حوالے بعض نکات کی وضاحت کی ہے، جس کے مطابق بچوں کے ساتھ کیے جانے والے غیر قانونی سلوک پر سخت سزائیں دی جائیں گی۔ ...

مطافِ کعبہ میں تنہا دعا کرنے والی دنیا کی خوش قِسمت خاتون

کورونا وائرس کی وَبا کے پیش نظر اس مرتبہ حج کے ایّام میں بعض بڑے نادر اور منفرد واقعات پیش آئے ہیں جن کا عام حالات میں تصور بھی ممکن نہیں۔ ایسے واقعات میں تازہ اضافہ ایک تنہا مسلم خاتون کی کعبۃ اللہ کے سامنے عبادت وریاضت ہے اور ان کے ساتھ مطاف میں کوئی دوسرا فرد نظر نہیں آرہا ہے۔

ترکی عرب امور میں مداخلت سے باز رہے: متحدہ عرب امارات کا انتباہ

متحدہ عرب امارات نے  لیبیا سے متعلق ترکی کے بیان کا سخت نوٹس لیتے ہوئے ترکی کو کہا ہے کہ وہ عرب ممالک کے امور میں مداخلت کرنے سے باز رہے۔متحدہ عرب امارات کے وزیر مملکت برائے خارجہ امور انور قرقاش نے سلطنت عثمانیہ کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ترکی اب اس دور کی طرح کا رویہ اختیار ...

عالمی ادارہ صحت نے کہا؛ سماجی فاصلہ برقرار نہ رکھنے سے بڑھ رہے ہیں کورونا کے معاملات، نوجوان مریضوں کی تعداد میں تین گنا اضافہ

عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) کا کہنا ہے کہ سماجی فاصلہ برقرار نہ رکھنے کی وجہ سے گزشتہ پانچ ماہ کے دوران کرونا وائرس سے متاثرہ نوجوانوں کی تعداد میں تین گنا اضافہ ہوا ہے۔ڈبلیو ایچ او کی رپورٹ کے مطابق فروری کے آخر سے لے کر جولائی کے وسط تک، کرونا وائرس کا شکار ہونے والے 60 لاکھ ...

جاپانی ماہرین کا کورونا وائرس کی وبا پر قابو پانے کے لئے سوپر کمپیوٹر کے استعمال کا اعلان

کورونا وائرس کی روکتھام کے اقدامات سے متعلق جاپان کے انچارج وزیر نیشی مورا یاسوتوشی نے امید ظاہر کی ہے کہ حکومت، مصنوعی ذہانت اور دیگر ٹیکنالوجیز کو بروئے کار لاتے ہوئے، انفیکشنز پر قابو پانے کے نئے موثر اقدامات دریافت کرنے میں، رواں ماہ کے آخر تک کامیاب ہو جائے گی۔ جاپانی ...

کرناٹک سے 40 امیدوار سیول سرویسز امتحان میں کامیاب

کرناٹک سے زائداز 40 امیدواروں نے 2019 کے یونین پبلک سرویس کمیشن (یو پی ایس سی ) سیول سرویس امتحان میں کامیابی حاصل کی اور اب آئی اے ایس ، آئی ایف ایس اور آئی پی ایس اور دیگر میں ملازمت حاصل کریں گے۔

بھٹکل: مرڈیشور میں علاج نہ ملنے سے مریض کی موت۔ ڈاکٹر کے خلاف کارروائی کے لئے اے سی کو دیا گیا میمورنڈم

دل کا دورہ پڑنے پر مریض کو کورونا وباء کے شک میں مرڈئشور سرکاری اسپتال میں علاج کی سہولت فراہم نہ کرنے سے موت واقع ہونے کا الزام لگاتے ہوئے مریض کے گھروالوں کے علاوہ مقامی افراد نے بھٹکل اسسٹنٹ کمشنر کو میمورنڈم دیا جس میں سرکار ی ڈاکٹر کے خلاف قانونی کارروائی کا مطالبہ کیاگیا ...

بھٹکل میں کل 5 اگست کو 144 نافذ؛ ایودھیا میں رام مندر’شیلا نیاس اور بھومی پوجا‘کے پس منظر میں ریاست کے مختلف علاقوں میں احتیاطی اقدامات

یوپی کے ایودھیا میں 5اگست کو رام مندر کی تعمیر کے لئے ’شیلانیاس اور بھومی پوجا‘کی رسم اداکی جارہی ہے۔ اس پس منظر میں امن وامان اور شانتی بنائے رکھنے کے لئے بھٹکل تعلقہ میں تحصیلدار کی جانب سے دفعہ 144کے تحت 5اگست کی صبح 6بجے سے رات 8بجے تک امتناعی احکامات لاگو کرنے کا اعلان کیا ...

کرناٹک کے سابق وزیر اعلیٰ سدارمیا پر بھی کورونا کا حملہ، اسپتال میں داخل

سیاسی لیڈران کے کورونا انفیکشن کی زد میں آنے کا سلسلہ جاری ہے۔ کرناٹک کے وزیر اعلیٰ بی ایس یدی یورپا اور ان کی بیٹی کے کورونا پازیٹو ہونے کی خبروں کے بعد اب ریاست کے سابق وزیر اعلیٰ اور اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر سدارمیا کے بھی کورونا پازیٹو ہونے کی خبریں سامنے آئی ہیں۔ اس سلسلے ...