کرناٹک کے وزیر  رمیش جارکی  ہولی کے استعفیٰ کے بعد دنیش کلہلی نے کیا مزید 3 بارسوخ سیاسی قائدین کی سی ڈی ہونے کا دعویٰ

Source: S.O. News Service | Published on 4th March 2021, 12:27 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،4؍مارچ (ایس او نیوز ) کرناٹک کے وزیر  رمیش جارکی  ہولی کی مبینہ  شہوت پرستی کی سی ڈی منظر عام پر لانے والے سماجی  کا رکن دنیش کلہلی  نے ایک اور چونکانے والی خبر دیتے ہوئے بتایا ہے  کہ اُس کے  پاس مزید تین با رسوخ قائدین کی ایسی سی  ڈی بھی ہے۔ خیال رہے کہ  ایک خاتون کے ساتھ سیکس معاملہ کی سی ڈی  منظر عام پر آنے کے بعد بی جے پی ہائی کمان کی ہدایت پر عمل کرتے ہوئے  رمیش جارکی ہولی  نے ریاستی کابینہ سے استعفی دے دیا تھا اور گورنر نے ان کا استعفیٰ قبول بھی کیا تھا۔ جس کے  بعدردعمل  ظاہرکرتے ہوئے دنیش کلہلی  نے  دعویٰ کیا کہ اُس کے پاس مزید تین اثر ورسوخ والے افرادکی سی ڈیز ہیں۔ 

دنیش کلہلی کا کہنا ہے کہ  جا رکی  ہولی کے علاوہ دیگر تین لوگوں کی سی ڈیز میرے پاس ہیں ۔ ان میں سے ایک موجودہ کابینہ میں شامل ہیں ۔ میں اس سلسلہ میں قانونی ماہرین کے ساتھ تبادلہ خیال کرنے کے بعد ان ناموں کا انکشاف کروں گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ جن تین لوگوں کی سی ڈی  میرے پاس ہیں وہ تمام سیاسی پس منظر والے ہیں  تینوں اعلی اور اہم عہدوں پر فائز ہیں ۔ ان تمام کے کرتوت منظر عام پر  لاؤں گا۔ اس حوالے سے مزید سی  ڈی جاری کرنے کا انہوں نے عندیہ دیا۔

انہوں نے  ایک الزام کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ میرا کسی بھی کانگریس قائد سے کوئی تعلق نہیں ہے۔ کسی بھی کانگریس لیڈر سے نہ  میری وابستگی ہے نہ رابطہ ۔ میں 10 برسوں سے سماجی خدمات انجام دیتا آرہا ہوں ۔ شمالی کر ناٹک  سے  تعلق رکھنے والی متاثرہ لڑکی کے کنبہ والوں نے  مجھ سے مدد طلب کی تھی،  حقیقت سے واقفیت کے بعد خاطیوں کے خلاف سخت کارروائی کرنے کا مطالبہ میں نے پولیس والوں سے کیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ ذمہ داری اور عہدہ پر رہنے والوں کو ایمانداری اور شفافیت سے کام کرنے کی ضرورت ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

گوکرن کے مہابلیشور مندر کے متعلق سپریم کورٹ کا اہم فیصلہ : مندرکی نگرانی کے لئے کمیٹی تشکیل دینے کا حکم

اترکنڑاضلع کے ہندؤوں کے مشہورو تاریخی مذہبی مقام گوکرن کی مہابلیشور مندر کے تعلق سے سپریم کورٹ نے حکم دیا ہے کہ  ریاستی حکومت  مندر کے انتظامی امور کو رام چندر پور مٹھ سے واپس لے۔ یاد رہے کہ  پچھلی بی جے پی کی حکومت نے گوکرن کے مہابلیشور مندر کی انتظامیہ اور نگرانی رام چندر ...

لاک ڈاؤن کی بجائے دفعہ 144 نافذ کی جائے : سی ایم ابراہیم| کورونا سے شہید ہونے والے مسلمانوں کی تدفین کیلئے علاحدہ جگہ دی جائے : ضمیر احمد خان 

کورونا سے شہید ہونے والے مسلم طبقے کے افراد کی تدفین کے لئے علاحدہ جگہ دی جائے ۔رکن اسمبلی ضمیر احمد خان نے  ودھان سودھا میں ہوئی بنگلورو کے اراکین اسمبلی،اراکین پارلیمان کی میٹنگ میں یہ مطالبہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ ہر ایک رکن اسمبلی کے لئے 25 کووڈ بیڈ اسپتالوں میں ریزرو کئے ...

کرناٹک میں لاک ڈاؤن ضروری نہیں، نائٹ کرفیو کے اوقات میں تبدیلی نہیں، دفعہ 144 نافذ کریں؛ ریاستی حکومت کو اپوزیشن کے مشورے 

بنگلورو میں کووڈ۔ 19 معاملات تیزی سے بڑھنے کے سبب  وزیر اعلیٰ  یڈیورپا، بنگلورو کے وزراء، اراکین پارلیمان اور اراکین اسمبلی کے ساتھ ویڈیو کانفرنس منعقد کی گئی۔  جس میں حکومت کو مشورہ دیا گیا کہ لاک ڈاؤن نافذ نہ  کر یں ،اسپتالوں میں کووڈ بستروں کی قلت دور  کریں۔مہلوکین کی ...

کرناٹک میں کورونا کی دہشت کا ایک اور ریکارڈ ، تقریباً 20 ؍ ہزار متاثر ، بنگلورو میں لاک ڈاؤن یا سخت امتناعی احکامات ؟

اتوارکے روز کرناٹک میں کورونا نے اپنا خوفناک ترین رخ پیش کیا اور اب تک متاثرین کی تعداد کا ایک نیا ریکارڈ سامنے آیا ریاست بھر میں 7 6 0 9 1 تازه معاملات سامنے آئے ۔ 81 لوگوں کی موت واقع ہوئی ہے۔

بھٹکل: ریاست میں کورونا کے بڑھتے معاملات سےپریشان طلبہ نے پیر سے شروع ہونے والے امتحانات منسوخ کرنے ٹوئیٹر پر چلائی مہم

کورونا کی دوسری لہر میں  بڑھتے کیسس کے دوران ایک طرف  میٹرک اور سکینڈ پی یوسی کے امتحانات ملتوی اور منسوخ کئے جارہےہیں تو وہیں دوسری طرف ویشویشوریا ٹیکنالوجیکل یونیورسٹی (وی ٹی یو) کے تحت آنے والی کالجس میں کل  پیر سے فرسٹ سیمسٹر کے امتحانات شروع ہورہےہیں۔