جے پی نڈانے کہا، کانگریس اور جے ایم ایم کی دوستی صرف کرسی کے لیے ہے

Source: S.O. News Service | By INS India | Published on 2nd December 2019, 10:55 PM | عالمی خبریں |

چائباسایکم دسمبر(آئی این ایس انڈیا) بی جے پی کے ایگزیکٹوصدر جے پی نڈا اتوار کے روز چائباسا پہنچے۔ یہاں سے بی جے پی کے امیدوار جے بی توبینڈ کے حق میں انتخابی مہم چلائی۔ اس موقع پر جے پی نڈا نے کہاہے کہ میں آج کل کانگریس اور جے ایم ایم کو ملی ہوئی دیکھ رہا ہوں۔ بس یہ کرسی کی دوستی ہے۔ ان کا ترقی سے کوئی لینا دینا نہیں ہے۔ اس کو موزوں جواب دینے کے لیے یہ خود غرضی کااتحادہے۔جھارکھنڈ میں ترقی کا امکان ہے۔ وہ جنگل پٹا کی بات کرتے ہیں۔ سبھی جانتے ہیں کہ عام لوگ کس پارٹی سے اترتے ہیں۔ اپنا الو سیدھا کرنا ان کا مقصد ہے۔جے پی نڈانے کہاہے کہ جھارکھنڈ کو 70 سالوں میں تین میڈیکل کالج ملے۔ جبکہ بی جے پی حکومت نے پانچ سالوں میں 5 میڈیکل کالج دیئے۔ کانگریس اور جے ایم ایم نے کچھ نہیں کیا۔ اگر وہ ایسی سیاسی جماعت ہیں تو وہ لوگوں کو ذاتوں میں بانٹ دیتے ہیں۔ وہ ترقی کی بات نہیں کرتے۔ انہوں نے کہاہے کہ نکسل ازم یہاں پروان چڑھا۔ آج نکسل ازم کاجڑسے خاتمہ ہورہا ہے۔جے پی نڈا نے کہاہے کہ یہ الیکشن کسی شخص کا نہیں ہے۔ یہ الیکشن کسی کووزیریاچیف منسٹر بنانے کے بارے میں نہیں ہے۔ بلکہ جھارکھنڈ کی تقدیر اور تصویر کا فیصلہ کرنا یہ الیکشن ہے۔ لہٰذا،نقطہ نظرپرتوجہ دی جانی چاہیے۔ جب آپ دیکھیں کہ ہم کہاں جا سکتے ہیں تو کون ہمیں منزل کی طرف لے جاتا ہے۔ ریاست کس طرح ترقی کرے گی تب آپ پائیں گے کہ بی جے پی کے علاوہ کوئی نہیں۔ انہوں نے کہاہے کہ آپ نے 5 سال میں بدعنوانی سے پاک، مستحکم حکومت دیکھی۔ لوگ بی جے پی میں شامل ہوگئے۔ جھارکھنڈ کی تصویر بدل گئی۔ آپ نے لوک سبھاانتخابات کی بھی حمایت کی۔

ایک نظر اس پر بھی

شہریت ترمیمی بل: دستور سے کھلواڑ ........... آز: معصوم مرادآبادی

ہندوستان کے سیکولرجمہوری آئین پر ایک ایسا خطرناک ہتھوڑا چلنے والا ہے جس کی زد میں آنے والی ہر چیز ٹوٹ پھوٹ کر رہ جائے گی ۔حکومت شہری قانون میں ایک ایسی تباہ کن ترمیم کرنے جارہی ہے جو مذہبی تعصب اور مسلم دشمنی کی بدترین مثال ہے۔عام خیال یہ ہے کہ مجوزہ شہریت ترمیمی بل مسلمانوں ...

  بغداد میں مسلح حملہ آوروں کے مظاہرین پرخونیں حملے کے باوجود احتجاج جاری

عراق کے دارالحکومت بغداد میں نامعلوم مسلح حملہ آوروں کے خونریز حملے کے باوجود مظاہرین نے حکومت مخالف احتجاج جاری رکھا ہوا ہے اور وہ جنوبی شہروں میں بھی اپنے مطالبات کے حق میں احتجاجی مظاہرے کررہے ہیں۔بغداد میں جمعہ اور ہفتہ کی درمیانی شب نامعلوم حملہ آوروں نے مظاہرین پر ...