راجستھان: عیدگاہ علاقہ میں فرقہ وارانہ کشیدگی، 5 لوگ زیر حراست

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th August 2019, 10:14 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

جے پور، 13 اگست(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) راجستھان کے دارالحکومت جیپور کے عید گاہ علاقے میں ایک بس پر پتھراؤ،توڑ پھوڑ اور آتش زدگی کے واقعات کے بعد ماحول پرامن ہے جبکہ اس معاملے میں پانچ لوگوں کو حراست میں لیاگیا ہے اور پچاس سے زیادہ کو نامزد کیاگیا ہے۔پولس کے مطابق پیر کی رات کو ہوئے ہنگامے کے بعد دیر رات سے حالات قابو میں ہیں۔حالانکہ علاقے میں تناؤ کے پیش نظر اضافی پولس دستہ تعینات ہے اور حالات پرامن ہیں۔اس معاملے میں پانچ لوگوں کو حراست میں لیا گیا اور پچاس سے زیادہ لوگوں کو نامزد کیاگیا ہے۔علاقے میں امن برقرار رکھنیکیلئے انٹرنیٹ خدمات بھی بند کردی گئی ہیں۔واضح رہے کہ عید گاہ علاقے میں پیر کی رات گلتا گیٹ کے سامنے دہلی روڈ پر ہری دوار جانے والی ایک بس پر کچھ سماج شمن عناصر نے پتھراؤ شروع کردیا۔اس دوران کئی گاڑیوں کے شیشے توڑ دیئیگئے۔اس سے علاقے میں تنازع ہے۔پتھراؤ اور ہنگامے میں تقریباً دو درجن لوگ زخمی ہوگئے۔ان میں آدھار درجن سے زیادہ پولس اہلکار زخمی ہوگئے۔اس دوران کچھ گاڑیوں میں آگ بھی لگا دی گئی۔پولس نے آنسو گیس کے گولے چھوڑکر بھیڑ کو کھدیڑ کر حالات کو قابو کیا۔فی الحال علاقے میں بڑی تعداد میں پولس دستہ تعینات ہے اور تناؤ کے درمیان حالات پر امن ہیں۔دو فریقوں میں اتوار کی صبح کانوڑ یاترا کے سلسلے میں جھگڑا ہوگیاتھا۔اس کے بعد پیر کی رات تقریباً دس بجے ہری دوار جانے والی ایک بس پر پتھراؤ کرنے سے تناؤ بڑھ گیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ریزرویشن سے متعلق آر ایس ایس اور بی جے پی کے ارادے ٹھیک نہیں: تیجسوی یادو

  بہار اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر تیجسوی پرساد یادو نے ریزرویشن کے معاملے پر راشٹریہ سوئم سیوک سنگھ ( آر ایس ایس ) کے چیف موہن بھاگوت کے حالیہ بیان پر پلٹ وار کرتے ہوئے کہا کہ ریزرویشن کو لے کر آر ایس ایس اور بھارتیہ جنتا پارٹی ( بی جے پی ) کے ارادے ٹھیک نہیں ہیں۔

بھٹکل: مرڈیشور میں راہ چلتی خاتون کو اغوا کرنے کی کوشش ہوگئی ناکام؛ علاقہ میں تشویش کی لہر

تعلقہ کے مرڈیشور میں ایک خاتون کو اغوا کرنے کی کوشش اُس وقت  ناکام ہوگئی جب اُس نے ہاتھ پکڑ کھینچتے وقت چلانا اور مدد کے لئے پکارنا شروع کردیا،  وارات  منگل کی شب قریب نو بجے مرڈیشور کے نیشنل کالونی میں پیش آئی۔واقعے کے بعد بعد نہ صرف مرڈیشور بلکہ بھٹکل میں بھی تشویش کی لہر ...

کاروارمیں ریڈ الرٹ کے باوجود کوسٹل سیکیوریٹی پولیس کی انٹر سیپٹر کشتیاں نہیں اتریں سمندر میں!

ابھی دو دن پہلے ملک کی خفیہ ایجنسی نے سمندری راستے سے دہشت گردانہ حملہ ہونے کا خدشہ ظاہر کیا تھا جس کے بعد پوری ریاست کرناٹکا میں اور بالخصوص ساحلی کرناٹکا میں ریڈ الرٹ جاری کیا گیا ہے۔