بارش کا قہرجاری، مہاراشٹرا میں 27؍افراد ہلاک، فوج ہائی الرٹ ، 20 ؍ہزار افراد کا تخلیہ، تلنگانہ میں مہلوکین کی تعداد 50

Source: S.O. News Service | Published on 16th October 2020, 11:14 AM | ریاستی خبریں | ملکی خبریں |

حیدرآباد؍نئی دہلی؍ممبئی،16؍اکتوبر (ایس او نیوز؍پی ٹی آئی)  تلنگانہ میں گذشتہ چند دنوں میں طوفانی بارش سیلاب سے ہلاک ہونے والوں کی تعداد 50 تک پہنچ گئی ہے۔ ریاستی حکومت نے بتایا کہ گریٹر حیدر آباد میونسپل کارپوریشن علاقہ سے 11 نعشیں برآمد ہوئی ہے۔ 

چیف منسٹر کے چند شیکھر راؤ کی جانب سے جائزہ اجلاس کے بعد سرکاری بیان میں یہ بات بتائی گئی ہے۔ چیف منسٹر نے ابتدائی تخمینہ پیش کرتے ہوئے کہا کہ ریاست بالخصوص حیدرآباد میں بھاری بارش کے سبب تقریباً 5 ہزار کروڑ روپئے کا نقصان ہوا ہے۔ انہوں نے وزیر اعظم نریندر مود کو مکتوب روانہ کرتے ہوئے ریلیف باز آباد کاری اور دیگر امدادی کارروائیوں کیلئے 13 ہزار روپئے فوری طور پر جاری کرنے کامطالبہ کیا۔ 

ادھر مہاراشٹرا میں شیدید بارش کا سلسلہ جاری ہے۔ حکومت نے فوج بشمول بحریہ اور فضائیہ کو ہائی الرٹ کردیا ہے۔ چیف منسٹر مہاراشٹرا ادھو ٹھاکرے نے ریاستی انتظامیہ کو ہدایت دی ہے کہ وہ ناگہانی صورتحال سے نمٹنے کیلئے  تیار رہے۔ مغربی مہاراشٹر اور مراٹھواڑہ میں بھاری بارش کے سبب سیلاب جیسی صورتحال پیدا ہونے کا اندیشہ ہے۔ 

ادھو ٹھاکرے نے حالات سے نمٹنے کیلئے آج اعلیٰ سطحی اجلاس منعقد کیا۔ مہاراشٹرا کے علاقہ پونے ، شولاپور اور کولہاپور میں بھاری بارش کی کی اطلاعات ہیں۔ شولا پور ضلع سے 8 ہزار افراد تخلیہ کروایا گیا ہے۔ چیف منسٹر کے دفتر نے بتایا کہ این ڈی آر ایف کی ٹیمیں عثمان آباد، شولا پور اور پنڈھ پور روانہ کردی گئی ہے۔ ہنگامی آپریشن کیلئے فوج کو بھی ہائی الرٹ کردیا گیا ہے۔ ریاست کے کئی علاقوں میں نہایت تیز ہواؤں کے ساتھ بھاری بارش ہورہی ہے۔ بادل پھٹ پڑنے کے بھی واقعات پیش آئے ہیں۔ پونے میں 4 افراد سیلاب میں بہہ گئے۔ 20 افراد کو محفوظ مقامات پر منتقل کردیا گیا ہے۔ جبکہ کرناٹک میں سیلاب کی صورتحال اور زیادہ سنگین ہوگئی ہے۔ حیدرآباد میں حالات معمول پر آرہے ہیں۔

محکمہ مسوسمیات نے بتایا کہ آئندہ 48 گھنٹوں میں جنوب وسطی مہاراشٹرا اور جنوبی کونکن علاقہ میں ہواؤں کے دباؤ میں کمی واقع ہوئی ہے لہٰذا بھاری بارش کا اندیشہ ہے۔ آئندہ 2 دن میں گجرات میں بھی شدید بارش ہوسکتی ہے۔ مہاراشٹرا میں گذشتہ دو دن میں بارش سے مربوط حادثات میں 27؍افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔ 

اسی دوران موصولہ اطلاع کے مطابق شمالی کرناٹک میں گذشتہ دو تین دن سے موسلادھار بارش کا کا سلسلہ جاری ہے۔ ساحلی اور نشیبی علاقوں میں سیلاب آگیا۔ عام زندگی مفلوج ہوگئی۔ سڑکیں جھیل میں تبدیل ہوئی ہیں۔ دریائے کرشنا، تنگ بھدرا، بھیما اور کاویری پر واقع ڈیم میں خطرے کے نشان کو عبور کرچکا ہے۔ لہٰذا ڈیم سے پانی چھوڑ دیا گیا ہے۔ جس کے نتیجہ میں ساحلی، شمالی اور شمال مغربی علاقوں میں ہزاروں ٹاؤنس اور مواضعات میں سیلاب کا پانی بھر گیا۔ پانچ ہزار افراد کا تخلیہ کروایا گیا ہے۔ متاثرہ افراد کی امداد کیلئے 36 ریلیف کیمپ قائم کئے گئے ہیں۔ 

ایک نظر اس پر بھی

'ریپبلک ٹی وی' کے ادارتی عملہ کے خلاف ایف آئی آر، ممبئی پولس کو بدنام کرنے کا الزام

ممبئی پولس نے آج ریپبلک ٹی وی کے متعدد ادارتی عملے کے خلاف محکمہ پولس کی بدنامی اور اشتعال انگیزی کے الزامات کے تحت ایف آئی آر درج کی ہے۔ این ایم جوشی مارگ پولس اسٹیشن میں ممبئی سی آئی ڈی کے اسپیشل برانچ میں تعنیات پولس سب انسپکٹر ششکانت پوار کی شکایت پر ایف آئی آر درج کی گئی ہے۔

لاک ڈاؤن کے دوران مودی اور نتیش نے مہاجر مزدوروں کو بے سہارا چھوڑ دیا: راہل گاندھی

راہل گاندھی نے جمعہ کے روز سے بہار انتخابات کے لئے تشہیر کا آغاز کر دیا۔ تیجسوی یادو کے ساتھ نوادا میں مشترکہ ریلی سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے وزیر اعظم مودی اور بہار کے وزیر اعلیٰ نتیش کمار پر زبردست حملہ بولا۔

پاکستان سے لوٹی گیتا کو خودکفیل بنانے کی کوششیں جاری

 پاکستان سے ہندوستان لائی گئی قوت گویائی سے محروم لڑکی گیتا کو مدھیہ پردیش کے اندور میں پانچ سالوں تک ادارہ جاتی بازآبادکاری میں رکھنے کے بعد اب اسے یہیں معاشی طور سے خودکفیل اور معاشرتی بحالی کی جانب لے جانے کی کوشش شروع کردی گئی ہے۔