بھٹکل تعلقہ میں برسات کی تباہ کاریاں - اہم دستاویزات سیلاب کی نذر ہونے سے متاثرین کو ہوسکتی ہیں دشواریاں

Source: S.O. News Service | Published on 9th August 2022, 5:57 PM | ساحلی خبریں |

بھٹکل ،9 ؍ اگست (ایس او نیوز) بھٹکل تعلقہ کے مختلف علاقوں میں پچھلے دنوں شدید بارش کے بعد جو سیلابی کیفیت پیدا ہوئی تھی اس دوران جن گھروں میں پانی گھس آیا تھا ان میں سے کئی لوگوں کا کہنا ہے کہ ان کے ساز و سامان کے علاوہ کئی اہم دستاویزات بھی  پانی میں بھیگ کر خراب ہوگئے ہیں جس کی وجہ سے انہیں بڑی دشواریوں کا سامنا ہو سکتا ہے ۔
    
متاثرین میں کئی لوگوں نے کہا ہے کہ اسکول اور کالجوں کے سرٹی  فیکٹیس ، ایوارڈس کی سندیں ، زمین کی خریداری کے اگریمنٹس، پاور آف اٹارنی کے کاغذات ، خرید و فروخت کے سلسلے میں دئے بیعانہ (ایڈوانس رقم) کے کاغذات، اتی کرم سے متعلق جمع کروائی گئی درخواستوں کی نقلیں اور دستاویزات اور دیگر مختلف اہم دستاویزات بھیگ کر برباد ہوگئے ہیں ۔ اگر سرکاری افسران کی طرف سے تعاون نہیں ملا اور جلد از جلد ان کی مصدقہ نقلیں فراہم نہیں کی گئیں تو ان کے لئے بہت سی مشکلات پیش آ سکتی ہیں ۔ 
    
متاثرین نے سرکاری افسران اور منتخب عوامی نمائندوں سے درخواست کی ہے کہ برسات اور سیلاب سے متاثرین کو درپیش اس طرح کی مشکلات کا بھی حل نکالنے کی طرف فوری توجہ دیں ۔ 

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل: ایس پی کے تبادلے کی افواہوں کو ڈسٹرکٹ انچارج منسڑ نے دی مزید ہوا، کہا؛ افسران کے تبادلے کوئی نئی بات نہیں!

ایماندار افسر کے طورپر مشہور اترکنڑا ضلع ایس پی ڈاکٹر سمن پنیکر کے تبادلے کی افواہوں کو ہوا دیتےہوئے ضلع نگراں کار وزیر پجاری نے کہاکہ افسران کے تبادلے کوئی نئی بات تو نہیں ہے۔

بھٹکل: معاوضہ تقسیم میں تفریق پر رکن اسمبلی کا سخت اعتراض : وزیر شری نواس پجاری نے افسران کو کی فوری کارروائی کی تاکید

گذشتہ ماہ 2اگست کو برسی موسلا دھاربارش سےنقصان اٹھانے والےمتاثرین میں امداد تقسیم کےدوران تفریق کی گئی ہے اور غریبوں کو امداد فراہم کرنےمیں افسران پس و پیش کئے جانے پر رکن اسمبلی سنیل نائک نے سخت اعتراض جتایا ۔

ہلیال:  آوارہ کتوں کو پکڑنے کا معاملہ - چیف آفیسر کے خلاف کیس درج 

آوارہ کتوں کو پکڑ کر جنگل میں چھوڑنا ہلیال ٹی ایم سی کے چیف آفیسر پرشورام شیندے کو مہنگا پڑا کیوںکہ اس کارروائی کو ظالمانہ انداز میں انجام دئے جانے کا الزام لگاَتے ہوئے چیف آفیسر کے خلاف پولیس میں معاملہ درج کیا گیا ہے ۔