پنجاب میں  پولیس ہیڈ کانسٹیبل نے بیوی سمیت 5 لوگوں پر چلائی گولی، 4 کی موت 

Source: S.O. News Service | By INS India | Published on 17th February 2020, 12:37 AM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

موگا، چنڈی گڑھ/16 فروری (آئی این ایس انڈیا) پنجاب پولیس کے ہیڈ کانسٹیبل نے گاؤں جلال پور میں گھریلو تنازعہ کے باعث اتوار کی صبح قریب 6 بجے بیوی اور 3 سسرال والوں (ساس اور سالے کی بیوی) کا گولی مار کر قتل کر دیا۔ واقعہ میں سالے کی 10 سال کی بچی بھی زخمی ہے۔

دراصل ہفتے کی شام ملزم کانسٹیبل کا سسرال میں تنازعہ ہوا تھا۔ اس کے بعد دھرم کوٹ پولیس اسے لے کر چلی گئی تھی۔ ملزم نے صبح 6 بجے لوٹ کر اے کے -47 سے واردات کو انجام دیا۔ بعد میں اس نے اپنے جرم کو قبول کرلیا۔ملزم کلویندر سنگھ موگا پولیس لائن میں انسداد فساد گروپ کو لیڈ کرتا ہے۔ بیوی کے سا تھ تنازعہ چل رہا تھا۔  بتایا گیا ہے کہ جھگڑے کے بعد بیوی میکے چلی جاتی تھی۔ اس بات پرکلویندر سسرال کے لوگوں سے بھی انتہائی خفا تھا۔

ملزم کانسٹیبل نے سسرال پہنچتے ہی سرکاری اے کے- 47 رائفل نکالی اور فائرنگ شروع کر دی۔ واقعہ میں بیوی، اس کاسالا اور سالے کی بیوی کی موقع پر ہی موت ہو گئی۔ 65 سالہ ساس کور کو سنگین حالت میں موگا کے سول ہسپتال میں لایا گیا تھا. یہاں علاج کے دوران اس کی بھی موت ہو گئی۔ واقعہ میں سالے  کی 10 سالہ بیٹی زخمی ہو گئی۔ وہیں مارے گئے سالے کے 2 بچوں نے پڑوسیوں کے گھر میں چھپ کر جان بچائی۔ دس سالہ بچی کو متھراداس سول ہسپتال میں داخل کرایا گیا ہے۔

واردات کے بعد ملزم نے چھت پر چڑھ کر زور سے چیخنے لگا۔ پولیس کے پہنچنے پر ہتھیار ڈال دیا۔ پولیس کے مطابق ابتدائی جانچ میں پتہ چلا ہے کہ ملزم پولیس اہلکار کی   بیوی کے ساتھ تنازعہ ہوا تھا جس کے بعد وہ بیٹی کو لے کر میکے چلی گئی تھیں۔

ایک نظر اس پر بھی

کشمیر: فور جی موبائل انٹرنیٹ سروس پر جاری پابندی طلباء کے مستقبل پر لٹکتی تلوار

عالمی سطح پر پھیلنے والے کورونا وائرس کے خطرات و خدشات کے باعث گھروں میں ہی محصور اور قریب آٹھ ماہ سے فور جی انٹرنیٹ خدمات سے محروم وادی کے طلبا کو اپنا تعلیمی مستقبل تاریک ہی نہیں بلکہ خطرے میں نظر آرہا ہے۔

کشمیر میں کورونا وائرس کی وباء سے دوسری موت، 62 سالہ شخص فوت

وادی کشمیر میں شمالی ضلع بارہمولہ کے ٹنگمرگ علاقے سے تعلق رکھنے والے ایک 62 سالہ شخص کی کورونا وائرس کے باعث موت واقع ہوئی ہے جس کے بعد وادی میں اس عالمی وباء کی وجہ سے جاں بحق ہونے والوں کی تعداد بڑھ کر 2 ہوگئی ہے۔

’ہزاروں مہاجر مزدوروں کا پیدل سفر کرنا ’کورونا‘ سے بھی بڑا سانحہ‘: اجے ماکن

کانگریس کے سینئر رہنما اجے ماکن نے کہا کہ ہزاروں کی تعداد میں پریشان حال غریب، مزدور، خواتین اور بچوں کا لاک ڈاؤں کے دوران شہروں سے اپنے گھروں کو لوٹنے کے لئے سینکڑوں کلو میٹر کا سفر پیدل طے کرنا آج کے دور کا ایک عظیم انسانی سانحہ ہے۔

سعودی عرب میں کرونا وائرس سے چوتھی موت کی تصدیق، مزید 99 افراد کے ٹیسٹ مثبت

سعودی عرب کی وزارتِ صحت نے ہفتے کے روز کرونا وائرس سے چوتھی ہلاکت کی تصدیق کی ہے اور بتایا ہے کہ گذشتہ 24 گھنٹے کے دوران میں مزید 99 افراد کے اس مہلک وائرس کے ٹیسٹ مثبت آئے ہیں اور اس کے مریضوں کی تعداد 1203 ہوگئی ہے۔