سکینڈ پی یو میں بھٹکل کی طالبات کا شاندار پرفارمینس؛ ضلعی سطح پر آرٹس میں بھٹکل کی چار اور سائنس اور کامرس میں دو دو طالبات نے حاصل کئےرینکس

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 16th April 2019, 2:30 PM | ساحلی خبریں |

بھٹکل 16/ اپریل (ایس او نیوز) کل پیر کو کرناٹک میں سکینڈ پی یو سی دوم کے نتائج کا اعلان ہوا جس میں ضلع اُتر کنڑا کو  چوتھا مقام حاصل ہوا ہے۔ ضلع بھر میں دیگر تعلقہ جات کے ساتھ ساتھ بھٹکل کالج کی طالبات نے بھی  امتیازی نمبرات سے کامیابی حاصل کیں ہیں۔ شعبہ آرٹس میں بھٹکل انجمن پی یو کالج فور ویمن کی چار طالبات نے ضلع میں رینک حاصل کرنے میں کامیاب ہوئیں ہیں تو وہیں شعبہ سائنس میں آر این ایس کالج مرڈیشور کی دو طالبات   اور شعبہ کامرس میں نیو انگلش پی یو کالج بھٹکل کی ایک طالبہ  نیز  سدھارتھ پی یو کالج بھٹکل کی ایک طالبہ نے ضلع میں رینک حاصل کرنے میں کامیاب ہوئیں ہیں۔ تعجب کی بات یہ ہے کہ بھٹکل کی کسی بھی کالج کا لڑکا ضلعی لیول پر رینک حاصل نہیں کرپایا ہے۔

شعبہ آرٹس میں انجمن پی یو کالج کی ہُمنا بنت ڈاکٹر سمیع اللہ نے95.67 فیصد اوسط کے ساتھ ضلع بھر میں فرسٹ ر ینک سے کامیابی حاصل کی   ہیں تو  نُسینہ بنت الطاف کوبٹے 94.83 فیصد کے ساتھ ضلع بھر میں دوسرا مقام حاصل کیا ہے۔ 92.33 فیصد کے ساتھ تنظیفہ  مہک  کو ساتواں رینک اور 91.17 فیصد کے ساتھ عائشہ یونا ڈونا کو نواں رینک حاصل ہوا ہے۔

شعبہ سائنس میں آر این ایس پی یوکالج مرڈیشور کی اپیکشا نے 97.67 فیصد کے ساتھ پورے ضلع میں دوسرا مقام اور اسی کالج کی کاویا ایم ہیگڈے نے  96.67 فیصد کے ساتھ  چھٹا مقام حاصل کیا ہے۔

شعبہ کامرس میں نیو انگلش پی یو کالج بھٹکل کی چیترا  ونود مہالے نے 97.17 فیصد کے ساتھ ضلع بھر میں تیسرا رینک حاصل کرنے میں کامیاب ہوئی ہیں جبکہ  سدھارتھا پی یو کالج بھٹکل کی پرجاول  گولی نے  96.67 فیصد کے ساتھ چھٹا مقام حاصل کرنے میں کامیاب ہوئی ہیں۔

ضلعی سطح پر پھر ایک بار سرسری نظر دوڑائیں تو  شعبہ آرٹس میں بھٹکل کی طالبہ  ہُمنا  بنت ڈاکٹر سمیع اللہ کو اول مقام حاصل ہواہے تو شعبہ کامرس میں MPES SDM  پی یو کالج ہوناور کی انکیتا سدھارتھ بھٹ کو98 فیصد کے ساتھ  اول مقام اور شعبہ سائنس میں ایم ای ایس چیتنیا کالج سرسی کے طالب العلم  نکھل وشوناتھ ہیگڈے اور اسی کالج کے ساتویک نارائن بھاگوت دونوں  کو 98.17 فیصد کے ساتھ اول مقام حاصل ہوا ہے۔یہ دونوں طلبا ریاست گیر سطح پر پانچواں رینک پانے میں بھی کامیاب ہوئے ہیں۔

انجمن پی یو کالج فور ویمن  بھٹکل:

اس کالج سے امسال 326 طالبات نے سکینڈ پی یو سی امتحان  میں حصہ لیا تھا، جس میں 281 کامیاب ہوئی ہیں،43 طالبات نے امتیازی نمبرات سے کامیاب ہوئی ہیں تو 184 طالبات فرسٹ کلاس سے کامیاب ہوئی ہیں۔  شعبہ کامرس میں اس کالج کی کامیابی  کا اوسط 94.19 فیصد، شعبہ سائنس میں 73.75 فیصد اور شعبہ آرٹس میں 84.6 فیصد  درج کیا گیا ہے۔ شعبہ سائنس میں خدیجہ ضُحیٰ  بنت عبدالرحمن  رکن الدین نے 95.16 فیصد کے ساتھ  پورے کالج میں اول مقام سے کامیاب ہوئی ہیں۔ اسی طرح شعبہ کامرس میں عائشہ سعادہ بنت شعیب رکن الدین  نے 95.83 فیصد کے ساتھ اول اور شعبہ آرٹس میں ہُمنا بنت ڈاکٹر سمیع اللہ نے  95.60  فیصد کے ساتھ اول مقام پایا ہے۔

انجمن پی یو  کالج بھٹکل (بوائز)

انجمن پی یو کالج بوائز کے کامرس شعبہ کی کامیابی کی شرح 70.10 فیصد، شعبہ سائنس کی شرح 69.09 فیصد اور آرٹس کی شرح 50 فیصد ریکارڈ کی گئی ہے۔شعبہ کامرس میں یوسف احمد ابن اسلم  علی اکبرا نے 89.16 فیصد کے ساتھ کالج میں ٹاپ کیا ہے، شعبہ سائنس میں عُبادہ برماور ابن محمد ذکریا برماور نے 85.83 فیصد کے  ساتھ اول  اور شعبہ آرٹس میں عبدالرُمان  ابن عبدالوحید منیار نے 70.05 فیصد کے ساتھ اول مقام پر ہے۔اس کالج سے جملہ 162 میں سے 111 طلبا کامیاب ہوئے ہیں۔کامیابی کی شرح 68.51 فیصد ریکارڈ کی گئی ہے۔

 سدھارتھ پی یو کالج بھٹکل 

اس بار 189 طلبا پی یو سی امتحانات میں شریک ہوئے تھے ، 183 کامیاب ہوئے ہیں، اس کالج کے 38 اسٹوڈینٹس  نمایاں نمبرات سے کامیاب ہوئے ہیں شعبہ سائنس میں سندیپ مراٹھی 96.5فیصد کے ساتھ کالج میں اوم مقام اور شعبہ کامرس میں پرجاول گولی نے 96.67 فیصد کے ساتھ اول مقام سے کامیاب ہوئی ہیں۔

آر این ایس کالج، مرڈیشور

جملہ 179 اسٹوڈینٹس میں 163 کامیاب ہوئے ہیں  اس طرح کامیابی کی شرح 91.6 فیصد درج کی گئی ہے۔ سائنس میں اپیکشا منوج نے 97.66 فیصد کے ساتھ اول اور شعبہ کامرس میں گائتری ہلّیر نے 92.16 فیصد کے ساتھ دوسرا مقام پایا ہے۔

آنند آشرم پی یو کالج بھٹکل

آنند آشرم پی یو کالج  شعبہ سائنس کی کامیابی کی شرح 92.85 فیصد اور شعبہ کامرس کی کامیابی کی شرح 98.07 فیصد ریکارڈکی گئی ہے۔شعبہ سائنس میں اس کالج کی کیرتھانا   نے 91.66 فیصد کے ساتھ اول مقام حاصل کی ہے تو وہیں شعبہ کامرس میں احمد فراز نے 95.5 فیصد کے ساتھ پہلا مقام حاصل کیا ہے۔

اس کالج سے جملہ کتنے اسٹوڈینٹس  سکینڈ پی یو سی امتحانات میں شریک ہوئے تھے، اُس کی تفصیلات کالج کی طرف سے موصول نہیں ہوسکی، البتہ شعبہ کامرس میں جملہ 8 طلبا امتیازی نمبرات سے ، 38 فرسٹ کلاس سے اور 6 سکینڈ کلاس سے کامیاب ہونے کی خبر دی گئی ہے، اسی طرح شعبہ کامرس میں 15 طلبا امتیازی نمبرات لے کر ، 30 فرسٹ کلاس اور 6 سکینڈ کلاس سے کامیاب ہوئے ہیں۔

دی نیو انگش پی یو کالج بھٹکل

دی نیو انگلش پی یو کالج بھٹکل سے اس بار 184 میں  سے 175 طلبا کامیاب  ہوئے ہیں،40 اسٹوڈینٹس نے امتیازی نمبرات اور 102 فرسٹ کلاس سے کامیاب ہوئے ہیں۔  اس طرح کامیابی کا اوسط 95.10 فیصد رہا۔ شعبہ سائنس کی کامیابی کی شرح 95.34 فیصد، شعبہ کامرس کی کامیابی کی شرح 99.06  فیصد اور شعبہ آرٹس کی کامیابی کی شرح 82.35  فیصد ریکارڈ کی گئی ہے۔

95.16 فیصد کے ساتھ ماروتی نائک نے شعبہ سائنس میں اول مقام حاصل کیا ہے، آرٹس میں ایرنّا دوشگار نے 90.66  فیصد کے ساتھ اول اور شعبہ کامرس میں چیترا مہالے نے 97.16 فیصد کے ساتھ اول مقام پایا ہے۔

نیشنل پی یو کالج مرڈیشور

گرلس سیکشن میں اس کالج سے جملہ 23 میں 22 کامیاب رہی ہیں اس طرح   کامیابی کا اوسط 95.65 فیصد رہا جبکہ بوائز سیکشن میں کامیابی کا اوسط 46.66 فیصد ریکارڈ کیا گیا ہے۔ شعبہ کامرس میں فاطمہ وردا بنت پرویز احمد ہیگڈے نے 94.15 فیصد کے ساتھ پورے کالج میں اول مقام سے کامیاب ہوئی ہیں ۔

جنتاودیالیہ کالج  شرالی کی کامیابی کی شرح 75فیصد،  بینا ویدیا مرڈیشور کی کامیابی کی شرح 96 فیصد  اسی طرح سرکاری پی یو کالج بھٹکل کی کامیابی کی شرح 60.4 فیصد ریکارڈ کی گئی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

لوک سبھا انتخابات؛ کرناٹک میں دوسرے مرحلے کی ووٹنگ جاری؛ دوپہر ایک بجے تک اُترکنڑا میں 39 فیصد پولنگ، سرسی میں سب سے زیادہ 47 فیصد پولنگ (پل پل کی آپڈیٹس)

ملک  کے تیسرے مرحلے اور ریاست کرناٹک کے دوسرے اور آخری مرحلے کی ووٹنگ آج صبح سات بجے سے جاری ہے  اور صبح نو بجے تک کی اطلاع کے مطابق  پوری ریاست میں  نہایت سست روی کے ساتھ پولنگ ہورہی ہے۔

بھٹکل : کل منگل کو ہونے والے انتخابات کے لئے اُترکنڑا میں تیاریاں مکمل؛ سبھی پولنگ بوتھوں پر ووٹنگ مشین روانہ؛ صبح سات بجے سے شروع ہوگی ووٹنگ

سات مرحلوں میں ہونے والی ملک کے عام انتخابات کا تیسرا مرحلہ کل منگل کو شروع ہورہا ہے، جس کے لئے تیاریاں تقریباً مکمل ہوچکی ہیں۔ ضلع اُترکنڑا کے مختلف  حلقوں میں  آج صبح سے  ووٹنگ مشینوں کو  پولنگ بوتھوں پر روانہ کرنے کی کاروائی شروع ہوئی۔

شمالی کینرا کے ڈی سی نے سمندری لہروں پر تقسیم کیں نوجوان ووٹروں کو پرچیاں

ضلع شمالی کینرا کی انتظامیہ کی طرف سے ووٹروں میں پولنگ کی اہمیت کا شعور بیدار کرنے کے لئے پچھلے چند مہینوں سے بہت سارے طریقے اپنائے گئے۔تازہ ترین اقدام کے طور پر ضلع ڈی سی ڈاکٹر ہریش کمار نے پہلی مرتبہ ووٹ ڈالنے والے نوجوان ووٹروں کو اسکوبا ڈائیونگ کا موقع فراہم کرتے ہوئے ...

اُترکنڑا لوک سبھا انتخابات؛ دوسرے مرحلے کی پولنگ کے لئے تشہیری مہم کا اختتام۔ اننت کمارہیگڈے نے مسلمانوں کے خلاف کہیں بھی زہر نہیں اُگلا

پارلیمانی انتخابا ت کے دوسرے مرحلے کی پولنگ سے پہلے امیدواروں کی طرف سے عوامی تشہیر کے لئے اتوار کی شام تک موقع تھا۔ اس سے فائدہ اٹھانے کے لئے سابق وزیراعظم دیوے گوڈا سمیت کئی قد آور سیاسی لیڈروں نے ضلع شمالی کینرا کا دورہ کیا اور ووٹروں سے اپنے امیدوار کے لئے ووٹ طلب ...

ضلع شمالی کینرا میں انتخابی ذمہ داری اداکرنے میں مصروف پولیس عملے کو ڈرائی فروٹ کِٹ کا تحفہ 

کل ہونے والے لوک سبھا انتخابات کے لئے پورے ضلع میں  جتنے بھی پولس اہلکاروں کو تعینات کیا گیا ہے، اُنہیں ضلع کے سپرنٹنڈینٹ  آف پولس کی طرف سے  پہلی بار  ڈرائی فروٹ کے کٹس فراہم کئے گئے ہیں۔ بتایا گیا ہے کہ  پارلیمانی انتخابات کو پرامن طریقے پر انجام دینے کے لئے تین ہزارسے ...