مہاراشٹر میں صدر راج سے متعلق نوٹیفکیشن راجیہ سبھا میں پیش کیاگیا

Source: S.O. News Service | Published on 20th November 2019, 8:48 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،20/نومبر(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) مہاراشٹر میں گزشتہ دنوں صدر راج لگائے جانے سے متعلق نوٹیفکیشن کی کاپی بدھ کو راجیہ سبھا میں پیش کیاگیا۔وزیر داخلہ نتیاند رائے نے آئین کے آرٹیکل 356 کے تحت مہاراشٹر میں صدر راج نافذ کرنے کے لئے صدر کی طرف سے 12 نومبر کو جاری کئے گئے نوٹیفکیشن کی کاپی ایوان کی میز پر رکھی۔اس کے ساتھ ہی رائے نے صدر راج کے سلسلے میں مہاراشٹر کے گورنر بھگت سنگھ کوشیاری طرف سے بھیجی گئی رپورٹ کی کاپی بھی ایوان میں پیش کی ہے کہ مہاراشٹر میں اسمبلی انتخابات 21 اکتوکو ہوا تھا اور اس کے نتیجے کا اکتوبر 24اکتوبر کیاگیا۔بی جے پی 105 سیٹوں کے ساتھ سب سے بڑی پارٹی کے طور پر ابھری وہیں شیوسینا کو 56،این سی پی کو 54 اور کانگریس کو 44 سیٹیں ملیں۔انتخاب سے قبل اتحاد کے اتحادیوں بی جے پی اور شیوسینا نے مجموعی طور پر 161 سیٹیں جیتیں لیکن وزیر اعلی کے عہدے کو لے کر دونوں جماعتوں کے درمیان بحران پیدا ہو گیا۔اس کے بعد کوئی پارٹی یا اتحاد اکثریت کے لئے ضروری اعداد و شمار پیش نہیں کر سکی اور ریاست میں صدر راج نافذکیا گیا۔ 

ایک نظر اس پر بھی

ملک میں کورونا نے توڑا اب تک کا تمام ریکارڈ، 24 گھنٹے میں 24,805 نئے معاملے، 613 اموات

 ملک میں کورونا انفیکشن کے بڑھتے ہوئے پھیلاؤ کے درمیان گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران سب سے زیادہ 24،850 نئے معاملے رپورٹ ہونے کے سبب ہندوستان انفیکشن سے متاثرہ ممالک کی فہرست میں تیسرے نمبر پر روس کے بہت قریب پہنچ گیا ہے۔ اس عرصے میں ریکارڈ 613 افراد کی موت ہوئی ہے۔

معروف عالم دین اور جمعیۃ علما ہند کے نائب صدر مولانا امان اللہ قاسمی کا انتقال

 کوہ کن کے معروف عالم دین اور جمعیۃ علما ء ہند کے نائب صدر مولانا امان اللہ قاسمی نے سنیچر کے روز مختصر علالت کے بعد 84 سال کی عمر میں داعی اجل کو لبیک کہہ دیا۔ موصوف قدیم دینی و علمی درسگاہ دار العلوم حسینیہ شری وردھن ضلع رائے گڑھ (مہاراشٹرا) کے مہتمم بھی تھے۔

’کیا چین کا ہندوستانی سرزمین پر قبضہ نہیں ہے؟ مودی جی کو بتانا چاہیے‘

 کانگریس نے کہا ہے کہ چین نے وادی گلوان میں ہندوستانی حدود میں دراندازی کی ہے اور اس کے فوجی دستے ملک کے اسٹریٹجک نقطہ نظر سے متعدد اہم علاقوں میں تعینات ہیں، اس لیے اب وزیر اعظم نریندر مودی کو یہ بتانا چاہiے کہ کیا چین کا ہندوستانی سرزمین پر قبضہ نہیں ہے۔