روی شنکر پرساد بولے، 10 سال پرانے مقدمات کو جلد حل کیا جائے

Source: S.O. News Service | Published on 20th November 2019, 8:56 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،20/نومبر(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) حکومت 10 سالہ سول اور فوجداری مقدمات کے جلد نپٹارے پر زور دے رہی ہے۔وزیر قانون روی شنکر پرساد نے بدھ کو لوک سبھا میں کہا کہ وہ ہائی کورٹ کے تمام چیف جسٹس کو زیر التواء پڑے 10 سالہ سول اور فوجداری مقدمات کے جلد نپٹارے کے لئے خط لکھیں گے۔انہوں نے کہا کہ حکومت صرف بنیادی ڈھانچہ دے سکتی ہے لیکن عدالت کی کارروائی میں مداخلت نہیں کر سکتی۔وزیر قانون بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) لیڈر دانش علی کے سوال کا جواب دے رہے تھے۔دانش علی مغربی یوپی کے لئے ہائی کورٹ بنچ کا مطالبہ کر رہے تھے۔روی شنکر پرساد نے کہا ہے کہ وزارت جیل کے قیدیوں کی ذات اور عقیدہ کی بنیاد پر فہرست نہیں دیتا ہے لیکن وہ مختلف ہائی کورٹ کو خط بھی لکھ رہے ہیں تاکہ وہ مقدمے میں پھنسے لوگوں کے حقوق کی حفاظت کر سکیں۔اگر کوئی شخص اپنی مدت کو 50 فیصد ٹرم پورا کرتا ہے اور خواتین اپنا 25 فیصد ٹرم مکمل کرتی ہیں، تو عدالت اسے رہا کرنے کا فیصلہ لے سکتی ہے۔اس کے علاوہ روی شنکر پرساد نے یہ بھی اعلان کیا کہ سرکاری موبائل کمپنی ہندوستانی مواصلات کارپوریشن لمیٹڈ (بی ایس این ایل) کو پھر سے زندہ کرنے کے لئے حکومت پوری کوشس کر رہی ہے۔حکومت کا زور فائدہ دینے والی کمپنی بنانے پر ہے۔گزشتہ ماہ مرکزی حکومت نے بدحالی کا شکار بن چکی پی ایس یو کمپنی بی ایس این ایل اور میٹروپولیٹن ٹیلی فون کارپوریشن لمیٹڈ (ایم ٹی این ایل) میں نئی جان پھونکنے کے لئے ہری جھنڈی دیتے ہوئے انہیں سورین بانڈ کے ذریعے 1,500 کروڑ روپے جمع کرنے کی اجازت دے دی۔ساتھ ہی عوامی علاقے کی ان کمپنیوں کو 2016 کی قیمت پر 4 جی اسپیکٹرم کا الاٹمنٹ کیا جائے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

عصمت دری کی راجدھانی بن گیا ہندوستان پھر بھی خاموش ہیں پی ایم مودی: راہل

 کانگریس کے سنیئر لیڈر راہل گاندھی نے اتر پردیش میں ایک لڑکی کے ساتھ ہوئی عصمت دری معاملے پر وزیراعظم نریندر مودی پر خاموشی اختیار کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے آج کہاکہ ہندوستان دنیا کی عصمت دری کی راجدھانی میں تبدیل ہو رہا ہے ،