پولیس کی بربریت۔ بنگلورو میں مسلم شخص کے ساتھ مارپیٹ

Source: S.O. News Service | Published on 6th December 2021, 11:51 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،6؍ دسمبر (ایس ا و نیوز)  پولیس بے رحمی کے معاملے میں بنگلورو سے ایک مسلمان نے مبینہ طور پر کہاکہ تفتیش کے دوران سٹی پولیس نے اسے بے رحمی کے ساتھ پیٹا ہے۔ مذکورہ شخص توصیف جس کے ساتھ مبینہ طور پر باتریا نا پورا پولیس اسٹیشن میں سب انسپکٹر ہریش نے اندازے کے مطابق تین گھنٹوں تک اذیتیں دی ہیں۔

متاثرہ کے ویڈیو بیان کے مطابق جو سوشیل میڈیاپر گشت کررہا ہے‘ انہیں باندھ کر نیلا پیلا ہونے تک پیٹاگیا کیونکہ پولیس نے ایک گھریلو معاملے میں مداخلت کی اور باندھ کر اس کو پیٹا۔ جمعرات کے روز توصیف کو واقعہ کے بعد ایک اسپتال میں داخل کیاگیا او روہ خود سے چلنے سے قاصر ہے۔

اپنے ساتھ پیش ائے واقعہ کوبیان کرتے ہوئے ویڈیومیں توصیف نے کہاکہ ”پیسے کی لین دین پر مشتمل یہ ایک گھریلو معاملہ تھا۔ میرے دوست نے ایک شکایت کی اور بعد میں اس سے دستبرداری اختیارکرلی۔

اس کے بعد بھی پولیس نے رات 2بجے کے قریب مجھے اٹھایا اوربے رحمی کے ساتھ مجھے بیاٹ سے پیٹا۔ چار پولیس عہدیدار‘ بشمول ایک دوستارہ افیسر‘ دوکانسٹبل اور ایک کرائم افیسر نے چار گھنٹوں تک مجھے اذیتیں دی“۔

مذکورہ سب انسپکٹر پولیس ہریش نے مبینہ طور سے توصیف کے خلاف مذہبی توہین آمیز ریمارکس کسے اور زبردستی اس کی داڑھی کاٹ دی۔

توصیف نے کہاکہ ”انہوں نے جبراً میری داڑھی کاٹ دی اور جب میں پانی مانگا تو پانی کے بجائے ایک بوتل پیشاب مجھے دیا۔ انہوں نے مجھے لاتیں ماریں‘مجھے روندا‘ اور میرے پرائیوٹ پارٹس کو بھی زخمی کردیا“۔

انہوں نے مزیدکہاکہ ”مجھے کے لئے کوئی بیڈ نہیں دیاگیا مگر مجھے بیت الخلاء کے پاس سونے کو کہاگیا۔ مجھے لات مار کر جگایاگیا اور مجھ سے پولیس اسٹیشن کی صفائی کرائی گئی۔ جب میں نے ان کی بات ماننے سے انکار کیا‘ انہوں نے مجھے تمانچے رسید کئے او رمیرے سر پر بھی مارا“۔

توصیف کی والدہ جو اسپتال میں اس کے ساتھ موجود تھیں نے اپنے بیٹے کے ساتھ انصاف کی مانگ کی ہے۔ متاثرہ کی غمزدہ ماں نے سوال کیاکہ ”انہوں نے میرے بیٹے کو وہ لے گئے جیسا اس نے کوئی غلطی کی ہے۔ اس کی داڑھی کاٹی اور زبردستی اس کو پیشاب پینے کے لئے مجبور کیاگیا۔میں درخواست کررہی ہوں کہ میرے بیٹے کے ساتھ انصاف کریں۔

آج انہوں نے میرے بیٹے کو نشانہ بنایا ہے‘ کل آپ کے بچہ کی باری ہوگی۔ کیا اس ملک میں کوئی قانون نہیں ہے؟“۔

بنگلور ومیں توصیف کا معاملہ دوسرا ہے حال ہی میں ایک 22سالہ شخص کا ہاتھ بے رحمی کے ساتھ پولیس کی پیٹائی اور اس کو الٹا لٹکانے کی وجہہ سے ناکارہ ہوگیاہے۔

بنگلورو پولیس کی بے رحمی اورسلمان کا معاملہ : اکتوبر میں سلمان ایسٹ بنگلور کے وارتھور کے ایک مکین تین دن کے لئے پولیس نے غیر قانونی تحویل میں ایک کار کی بیٹری کی چوری میں رکھاتھا۔

سلمان جس نے جرائم کو قبول کرنے سے انکار کیا جو اس نے کیا ہی نہیں ہے اس بات کااعتراف کیاکہ وہ پولیس بربریت کاشکار ہوا ہے

ایک نظر اس پر بھی

ریاستی سرکاری نصاب کی غلطیوں کی تصحیح کےلئے متبادل نصابی کتب تیار کریں گے اور بچوں کو توہم پرستی اور اندھی تقلید سے بچائیں گے : دیونور مہادیو

آر ایس ایس کی سرکار اسکولی بچوں کو جو کچھ سکھانا چاہتی ہے وہ سکھائے ۔ لیکن ہم متبادل کے طورپر دستور کی تمہید، منشاء سمیت سب کچھ انہیں سکھانے کا کام کریں گے۔ ریاست کے مشہور و معروف کنڑا ادیب دیونورمہادیو نے ان خیالات کااظہار کیا۔

ملک میں ایک نہ ایک دن ’یکساں سول کوڈ‘ ضرور نافذ ہوگا، کرناٹک کے وزیرکوٹا سرینواس پجاری کا خیال

 کرناٹک کے سماجی بہبود کے وزیر کوٹا سرینواس پجاری نے بدھ کے روز کہا کہ متنازعہ یونیفارم (یکساں) سول کوڈ ایک نہ ایک دن ملک میں نافذ ہوگا۔ انہوں نے کہا، ’’بی جے پی یکساں سول کوڈ لانے کے لیے پرعزم ہے اور اسے نافذ کرنے جا رہی ہے۔ یہ بی جے پی ہی ہی ہے جس نے جموں و کشمیر میں دفعہ 370 کو ...

منگلورو : ملالی مسجد کے مقام پر دیوی موجود ہے - کیرالہ کے نجومی کا دعویٰ - ضلع انتظامیہ نے نافذ کیے امتناعی احکامات

ملالی میں واقع السید عبداللہ جامع مسجد میں تجدید نو کے دوران مندر کے باقیات پائے جانے کا دعویٰ کرتے ہوئے ہندو شدت پسند تنظیموں نے جو تنازعہ کھڑا کیا ہے اس میں اب مزید پیچیدگی پیدا ہوگئی ہے ، کیونکہ ہندو مذہبی عقیدہ کے مطابق کیرالہ سے بلائے گئے علم زائچہ کے ماہر اور نجومی ...

شیموگہ ضلع میں بارش کی وجہ سے 40 کروڑ کا نقصا ن

پچھلے ہفتے ہوئی مسلسل بارش سے ضلع میں تقریباً 40کروڑ روپئے کا نقصان ہونے کا اندازہ لگایاگیاہے۔وزیر اعلیٰ کے ساتھ اس سلسلے میں تبادلہئ خیال کرنے کے بعد ضروری معاوضہ دلانے کیلئے اقدامات کئے جائیں گے۔یہ بات ضلع نگران کار وزیر نارائن گوڈانے کہی۔