عالمی کپ 2019: افغانستان کو ہرانے کے بعد سیمی فائنل کیلئے پاکستان کی امیدیں برقرار؛ افغانستان کو ہرانے کےلئے پاکستان کے پسینے چھوٹ گئے

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 30th June 2019, 12:13 AM | اسپورٹس | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

لیڈز،29؍جون (ایس او نیوز؍یو این آئی) ساتویں نمبر کے بلے باز عماد وسیم کی نازک موقع پر کھیلی گئی ناٹ آؤٹ 49 رن کی فیصلہ کن اننگ کی بدولت پاکستان    افغانستان کو تین وکٹوں ہرا کر آئی سی سی عالمی کپ کے سیمی فائنل میں پہنچنے کی اپنی امید  کو باقی رکھ دیا ہے۔

پاکستان نے شاندار گیند بازی کرتے ہوئے افغانستان کو 9 وکٹوں کے نقصان  پر 227 رنوں  پر ہی روکنے  میں کامیاب ہوئی  لیکن ہدف تک پہنچنے میں پاکستانی بلے بازوں  کے پسینے چھوٹ گئے۔پاکستان نے اپنے چھ وکٹ 156 رن پر گنوادیئے تھے لیکن وسیم نے اپنے کیریر کی سب سے بہترین اننگ کھیلتے ہوئے اپنی ٹیم کی امیدوں کو قائم رکھنے والی جیت دلادی۔ پاکستان نے 4ء49 اووروں میں سات وکٹ پر 230 رن بنائے۔ وسیم نے 54 گیندوں پر ناٹ آؤٹ 49 رن میں پانچ چوکے لگائے۔

پاکستان نے اپنا ساتواں وکٹ 206 کے اسکور پر گنوایا لیکن وہاب ریاض کے آنے کے ساتھ ہی چوکا اور چھکا لگا کر میچ پاکستان کے حق میں کردیا۔ پاکستان کو آخری اوور میں جیت کے لئے چھ رنوں کی ضرورت تھی لیکن آخری اوور افغانستان کے کپتان گل بدین نائب ڈالنے اترے۔

افغانستان نے اس اوور میں رن آؤٹ کا موقع گنوایا اور میچ اس کے ہاتھ سے نکل گیا۔ عماد نے چوتھے گیند پر چوکا ما رکر جیت پاکستان کی جھولی میں ڈال دی۔ ریاض نو گیندوں پر 15 رن بنا کر ناٹ آؤٹ رہے اور ان کی یہ اننگ بھی وسیم جتنی اہم رہی۔ پاکستان کی آٹھ میچوں میں یہ چوتھی جیت ہے اور وہ 9 پوائنٹ کے ساتھ فہرست میں چوتھے مقام پر پہنچ گیا ہے۔ اس سے قبل پاکستان کی چست گیند بازی کے سبب افغانستان ہفتہ کو آئی سی سی ورلڈ کپ میچ میں مڈل آرڈر کے بلے بازوں اصغر افغان (42 رنز) اور نجیب اللہ زدران (42 رن) کی اننگز کی بدولت نو وکٹ پر 227 رن کا اسکور بنا سکی ۔

سیمی فائنل کی دوڑ سے پہلے ہی باہر ہو چکی افغانستان کی ٹیم نے ٹاس جیت کر پہلے بلے بازی کا فیصلہ کیا اور مقررہ 50 اوورز میں نو وکٹوں کے نقصان پر 227 رن بنا ئے۔ دیگر میچوں کی طرح اس بار بھی افغانستان کے بلے باز بہت متاثر کن اسکور نہیں کر سکے لیکن اوپنروں کے سستے میں نمٹنے کے بعد پانچویں نمبر کے بلے باز اصغر نے 35 گیندوں میں تین چوکے اور دو چھکے لگا کر 42 رنز اور نجیب اللہ نے 54 گیندوں میں چھ چوکوں کی مدد سے 42 رنز کی اننگز  کھیل کر ٹیم کو کچھ تسلی بخش حالت میں پہنچایا۔

پاکستان کے لیے شاہین شاہ آفریدی نے 10 اوور میں 47 رن دے کر سب سے زیادہ چار وکٹ نکالے جبکہ عماد وسیم نے 48 رن دے کر دو وکٹ اور وہاب ریاض نے 29 رن پر دو وکٹ لئے۔ شاداب خان کو 44 رن پر ایک وکٹ ملا۔ پاکستان کے لیے سیمی فائنل کی امیدیں برقرار رکھنے کے لیے یہ کرو یا مرو کا مقابلہ ہے جبکہ افغانستان کے لیے اب نتیجے کے لحاظ سے نہ سہی لیکن عالمی کپ میں پہلی جیت درج کر تاریخ رقم کرنے کے لحاظ سے یہ اہم میچ ہے۔

مسلسل دو میچوں میں جیت کے بعد بلند حوصلے کے ساتھ اتری پاکستان نے اچھی شروعات کرتے ہوئے افغانستان کا پہلا وکٹ کپتان گلبدين نائب کے طور پر جلد حاصل کر لیا جو 15 رن ہی بنا سکے۔ آفریدی نے گلبدين کو کپتان سرفراز احمد کے ہاتھوں وکٹ کے پیچھے کیچ کرایا۔ انہوں نے پانچویں اوور کی چوتھی گیند پر گلبدين کو آؤٹ کرنے کے بعد اگلی ہی گیند پر حشمت اللہ شہادت کو صفر پر عماد وسیم کے ہاتھوں کیچ کرا دوسرا وکٹ بھی حاصل کر لیا۔

اگرچہ وہ ہیٹ ٹرک سے چوک گئے۔ ایک سرے پر کھڑے ہوئے اوپنر رحمت شاہ نے 43 گیندوں میں پانچ چوکے لگا کر 35 رنز کی اننگز کھیلی، لیکن دوسرے سرے سے ان کو مدد نہیں ملی اور افغانستان کوئی بڑی شراکت نہیں کر سکا۔ رحمت کو عماد نے 57 کے اسکور پر تیسرے بلے باز کے طور پر آؤٹ کرایا۔ اس کے بعد اكرم آفریدی (24) اور اصغر افغان (42) نے چوتھے وکٹ کے لئے 64 رن کی نصف سنچری شراکت سے ٹیم کو سنبھالا۔

اصغر کا اہم وکٹ شاداب نے حاصل کیا ۔ افغانستان نے 125 کے اسکور تک پانچ وکٹ گنوا دیئے اور مشکل صورت حال میں پہنچ گئی۔ محمد نبی اور نجیب اللہ نے چھٹے وکٹ کے لئے 42 رن کی ساجھےداری کرکے ٹیم کو راحت دی ۔ نبی نے 16 رن جوڑے جبکہ نجیب اللہ نے 42 رنز کی اننگز کھیلی۔ نچلے آرڈر میں سمیع اللہ شنواري نے 32 گیندوں میں ایک چوکا لگا کر ناٹ آؤٹ 19 رن بنائے۔

آئی پی ایل کے اسٹار کھلاڑی راشد خان نچلے آرڈر میں مفید بلے باز مانے جاتے ہیں لیکن وہ بلے سے کوئی تعاون نہیں دے سکے اور آٹھ رنز بنا کر آفریدی کی گیند پر فخر زمان کے ہاتھوں کیچ ہو گئے۔ حامد حسن (ایک) کو وہاب نے آؤٹ کر افغانستان کا نواں اور اننگز کا آخری وکٹ نکالا۔

ایک نظر اس پر بھی

منکی اور مرڈیشور کے ساحل اور محمد حیات کرناٹکا یونیورسٹی دھارواڑ کے کرکٹ یونیورسٹی بلیو منتخب

کھیل کے میدان میں بھٹکل اور اطراف کے کھلاڑیوں کا یونیورسٹی بلیو منتخب ہونا عام ہوتاجارہا ہے، تازہ خبر یہ ہے کہ  پڑوسی علاقہ منکی اور مرڈیشور سے تعلق رکھنےو الے دونوجوان کرکٹ میں کرناٹکا یونیورسٹی دھارواڑ کی کرکٹ ٹیم کے لئے  منتخب ہوگئے ہیں

پہلے ٹسٹ میں ہندوستان نے بنگلہ دیش کو اننگز اور 130 رن سے شکست دی

 تیز گیند باز محمد سمیع (31 رن پر 4 وکٹ) اور آف اسپنر روی چندرن اشون (42 رن پر تین وکٹ) کی بہترین گیند بازی کی بدولت ہندوستان نے بنگلہ دیش کو پہلے کرکٹ ٹسٹ کے تیسرے ہی دن اننگز اور 130 رنوں سے شکست دے کر دو میچوں کی سیریز میں 1۔0 کی برتری حاصل کرلی۔

نیلامی میں 73 کھلاڑیوں کے خریدنے پر 207 کروڑ روپئے خرچ

آئی پی ایل کے 13 ویں سیشن کے لئے 19 دسمبر کو کولکتہ میں ہونے والی نیلامی سے پہلے آٹھ ٹیموں نے جمعہ کو ری ٹین اور ریلیز کئے گئے کھلاڑیوں کا اعلان کر دیا۔ کھلاڑیوں کے معاہدہ کو بڑھانے کےاعلان کی آج آخری تاریخ تھی ۔

امیر بی جے پی لیڈر غریب ’جے این یو طلبہ‘ کی حمایت کیوں کریں گے: سماج وادی پارٹی

  سماج وادی پارٹی کے رہنما رام گوپال یادو نے فیس میں اضافہ کے خلاف پرامن مظاہرہ کر رہے جواہر لال نہرو یونیورسٹی کے طلبہ پر پیر کے روز پولس لاٹھی چارج کی سخت مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ان کی پارٹی طلبہ کے مطالبات کی مکمل حمایت کرتی ہے اور ضرورت پڑنے پر وہ بھی احتجاجی مظاہروں میں شامل ...

منکی اور مرڈیشور کے ساحل اور محمد حیات کرناٹکا یونیورسٹی دھارواڑ کے کرکٹ یونیورسٹی بلیو منتخب

کھیل کے میدان میں بھٹکل اور اطراف کے کھلاڑیوں کا یونیورسٹی بلیو منتخب ہونا عام ہوتاجارہا ہے، تازہ خبر یہ ہے کہ  پڑوسی علاقہ منکی اور مرڈیشور سے تعلق رکھنےو الے دونوجوان کرکٹ میں کرناٹکا یونیورسٹی دھارواڑ کی کرکٹ ٹیم کے لئے  منتخب ہوگئے ہیں

ووٹر آئی ڈی کارڈ میں اگرکچھ کمی ہے، تو گھر بیٹھے کروا سکتے ہیں صحیح

ہندوستان ایک جمہوری ملک ہے اور کسی بھی جمہوری ملک کی سب سے اہم عضو اس ملک کے عوام ہوتی ہے۔عوام کی طرف سے جمہوری ملک کی حکومت عوام کے ذریعہ منتخب کی جاتی ہے۔ہندوستان میں تمام شہری جو 18 سال یا اس سے اوپر کے ہیں اور ان کا ووٹر آئی ڈی کارڈ بنا ہوا ہے وہ الیکشن میں ووٹ دے سکتے ہیں۔اس کا ...

مینگلور کے قریب پتورمیں ایک بزرگ مرد اور نوجوان لڑکی کا دوہرا قتل۔ مقتول بزرگ کی اہلیہ شدید زخمی

قریبی علاقہ  پتور کے ہوسمار علاقے میں ایک وحشت ناک دوہرے  قتل کی واردات پیش آئی ہے جس میں کوگّو صاحب (65 سال) اور ان کی نواسی سمیحہ بانو(16سال) جاں بحق ہوگئے ہیں جبکہ کوگّو صاحب کی اہلیہ خدیجہ بی(۵۵سال) شدید زخمی ہوگئی ہیں اور انہیں زندگی اور موت کی کیفیت میں علاج کے لئے اسپتال میں ...