مصباح الحق پاکستانی کرکٹ ٹیم کے ہیڈ کوچ اور چیف سلیکٹر مقرر

Source: S.O. News Service | Published on 5th September 2019, 11:43 AM | اسپورٹس |

اسلام آباد،5؍ستمبر (ایس او نیوز؍یو این  آئی)  پاکستان کے سابق کپتان مصباح الحق کو ٹیم کا ہیڈکوچ اور چیف سلیکٹر بنایا گیا ہے۔ پاکستانی کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے یہ اطلاع دی۔ رپورٹ کے مطابق پاکستان کے سابق تیزگیندباز وقار یونس کو بالنگ کوچ بنایا گیا ہے لیکن ابھی بلے بازی کوچ پر فیصلہ نہیں کیا گیا ہے۔

پی سی بی نے سابق ہیڈ کوچ وقار یونس کو اس مرتبہ آئندہ 3 برس کے لیے ٹیم کا باؤلنگ کوچ مقرر کیا گیا ہے۔ مصباح سابق کوچ مکی آرتھر جبکہ وقار یونس اظہر محمود کی جگہ لیں گے۔

مصباح پاکستان کے 30 ویں چیف کوچ بنے ہیں لیکن یہ پاکستانی کرکٹ تاریخ میں پہلا موقع ہےجب ہیڈ کوچ کو ہی چیف سلیكٹر کی ذمہ داری بھی سونپی گئی ہے۔ پی سی بی نے اگلے تین سال کے لئے مصباح الحق کے ساتھ معاہدہ کیا ہے۔

مصباح نے پاکستان کی جانب سے 75 ٹیسٹ اور 162 ون ڈے انٹرنیشنل میچ کھیلے اور ساتھ ہی 2010 سے 2017 کے درمیان پاکستان کے سب سے زیادہ کامیاب ٹیسٹ کپتان بھی رہے ہیں۔ مصباح پہلی بار کسی ٹیم کو کوچنگ دینے کی ذمہ داری سنبھالیں گے۔

بی بی سی اردو کی رپورٹ کے مطابق پاکستان کرکٹ ٹیم کا ہیڈ کوچ اور چیف سلیکٹر مقرر ہونے کے بعد مصباح الحق نے کہا کہ وہ ٹیم کے انتخاب میں بطور کوچ اور چیف سلیکٹر رائے ضرور دیں گے البتہ حتمی ٹیم کے انتخاب کا حق کپتان کے پاس ہو گا۔ مصباح الحق اپنی تقرری کے بعد لاہور میں پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیف ایگزیکٹو وسیم خان کے ہمراہ ایک پریس کانفرنس سے خطاب کر رہے تھے۔

انہوں نے کہا، ’’میں بطور چیف سلیکٹر اور کوچ اپنا مؤقف دیتا رہوں گا اور ٹیم کی انتخاب سے متعلق کپتان کے ساتھ ایک اچھی اور مثبت بحث ہونی چاہیے۔‘‘ اس موقع پر مصباح الحق نے یہ بھی کہا ’’جب آپ کے پاس طاقت آتی ہے اور فیصلہ لینے کی ذمہ داری آتی ہے تو آپ کا امتحان ہوتا ہے میری کوشش ہو گی کہ میں پاکستان میں کرکٹ کے ڈھانچے میں نیچے تک پیشہ وارانہ مہارت لا سکوں۔‘‘

اس موقع پر وسیم خان کا کہنا تھا کہ ’’پاکستان کرکٹ کے لیے یہ اتنہائی اہم موقع ہے اور ہمارے نزدیک پاکستان کی فتوحات بہت ضروری ہیں۔‘‘

ایک نظر اس پر بھی

ایشز سیریز: پانچویں ٹیسٹ میچ انگلینڈ نےآسٹریلیا کو 135 رنز سے شکست دی، سیریز 2-2 سے برابر

اوول میں کھیلے گئے آسٹریلیا اور انگلینڈ کے درمیان پانچویں ٹیسٹ میچ کے چوتھے روز آسٹریلیا کی ٹیم دوسری اننگ میں 263 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی۔ یوں انگلینڈ نے یہ ٹیسٹ 135 رنز سے جیت کر ایشز سیریز 2-2 سے برابر کر دی ہے۔