شیرالی گرام پنچایت علاقہ بن گیا بھٹکل تعلقہ کا کورونا ہاٹ اسپاٹ

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 29th May 2021, 1:52 PM | ساحلی خبریں | اسپیشل رپورٹس |

بھٹکل 29/ مئی (ایس او نیوز) ضلع شمالی کینرا کے سب سے بڑے گرام پنچایت علاقہ کے طور پر پہچانا جانے والا شیرالی اس وقت بھٹکل تعلقہ کا کورونا ہاٹ اسپاٹ بن گیا ہے۔ اس لئے اس علاقے کو کنٹینمنٹ زون میں تبدیل کردیا گیا ہے۔

    سال 2011 کی مردم شماری کے مطابق شیرالی گرام پنچایت میں 4036 خاندان بستے ہیں اور کُل آبادی 13899 ہے۔ اہم بات یہ ہے کہ ان میں سے 10575 افراد تعلیم یافتہ ہیں۔ گرام پنچایت 35 اراکین پر مشتمل ہے۔ اس علاقے کے رہنے والے بنگلورو، ممبئی سمیت مہاراشٹرا کے دوسرے شہروں اور ملک کے دیگر علاقوں میں تجارت اور ملازمت کی وجہ سے مقیم ہیں۔ زیادہ تر لوگ بیرونی شہروں ہوٹلوں میں ملازم ہیں۔ 

    کورونا پر قابو پانے کے لئے جب ملک بھر میں لاک ڈاون کا سلسلہ شروع  ہوا تو دوسرے شہروں میں ملازمت کرنے اور بسنے والے اپنے اپنے گھروں کو لوٹ آئے۔ شیرالی گرام پنچایت صدر ریوتی روی شنکر نائک کہتی ہیں کہ گزشتہ مرتبہ دوسری ریاستوں اور شہروں سے واپس لوٹنے والوں کو کوارنٹین کیا گیا تھا۔ لیکن اس مرتبہ کورونا دوسری لہر کے دوران ایسی کوئی پابندی نہیں لگائی گئی۔ یہی وجہ ہے کہ اس علاقے میں اس مرتبہ کورونا پوزیٹیو معاملوں کو تعداد بے حد بڑھ گئی ہے۔

    مقامی لوگ یہ بھی کہتے ہیں کہ دوسرے مقامات سے لوٹنے والے افراد شیرالی بازار میں بے روک ٹوک گھوم پھر رہے تھے۔ دوسری طرف شیرالی کے مضافات سے لوگ بڑی تعداد میں بازار تک آنے اور خرید و فروخت میں مصروف رہے۔ اسی دوران شادیاں بھی بڑے پیمانے پر منعقد ہوئیں اور کورونا سے متاثر افراد بھی اچھی خاصی تعداد میں ان شادیوں میں شریک ہوتے رہے۔ اس بے احتیاطی کی وجہ سے بھی کورونا کی وباء میں اضافہ ہوا ہے۔

    ضلع انتظامیہ کی طرف سے شیرالی کو کنٹینمنٹ زون قرار دئے جانے کے بعد تعلقہ انتظامیہ بھی اب زیادہ مستعد ہوگئی ہے۔ شیرالی کے حدود میں کووڈ کی روک تھام کے لئے  ٹاسک فورس تشکیل دی گئی ہے اور کورونا متاثرین کو کسی بھی قیمت پر گھر سے باہر نہ نکلنے کی ہدایات جاری کی گئی ہیں۔ ٹاسک فورس کے اراکین کو لاک ڈاون کے دوران لوگوں کے گھروں تک کھانے پینے کی چیزیں اور دوائیاں پہنچانے کی ذمہ داری دی گئی ہے۔

    شیرالی گرام پنچایت کے نائب صدر اور بھٹکل بی جے پی جنرل سیکریٹری بھاسکر دئیمنے کا کہنا ہے کہ شیرالی کے عوام کی طرف سے کورونا کی روک تھام میں تعاون مل رہا ہے۔ ہم سب متحد ہوکر اس ضمن میں سرگرم ہیں۔ جس سے امید ہے کہ چند دنوں کے اندر شیرالی میں اس وباء پر قابو پالیا جائے گا۔
 

ایک نظر اس پر بھی

منڈگوڈ : دس دن پہلے ہوئی ہے بدھسٹ بھکشو کی موت - آخری رسومات کے بغیر کی جارہی ہے پوجا 

یہاں کے تبتی کالونی کے ایک کیمپ میں ایک بزرگ بدھسٹ بھکشو کی موت کو دس دن کا عرصہ گزر چکا ہے مگر بدھسٹ عقیدے کے مطابق ابھی تک اس کے جسم سے روح الگ نہ ہونے کی بات کہہ کر لاش کی پوجا کی جارہی ہے اور آخری رسومات کی ادائیگی کے لئے جسم سے روح پوری طرح نکل جانے کا انتظار کیا جارہا ہے ۔

انکولہ : الگیری شہری ہوائی اڈہ کے لئے تحویل اراضی سروے ۔ عوام نے کیا افسران کا گھیراو

انکولہ کے الگیری میں مجوزہ شہری ہوائی اڈے کی تعمیر کے لئے تحویل اراضی کا سلسلہ شروع کرنے کے منصوبہ کے تحت جب افسران سروے کرنے کے لئے متعلقہ مقام پر پہنچے تو مقامی لوگوں نے احتجاج کرتے ہوئے افسران کا گھیراو کیا ۔

بھٹکل: اترکنڑا ضلع سے گزرنے والی قومی شاہراہ فورلین کا تعمیراتی کام سست روی کاشکار:عوامی سطح پر تعمیراتی کام میں رشوت خوری پر بحث

کسی بھی ملک ، ریاست یا شہر کےلئے بہترین سڑکیں ترقی کی علامت میں شمار کی جاتی ہیں اور شاہراہیں اس کی شناخت ہوتی ہیں تو خاص کر فورلین، سکس لین ملک کی ترقی کی مصدقہ شناخت ہوتی ہیں۔ لیکن کیا کریں ، وہی قومی شاہراہ کی تعمیر ساحلی پٹی پر مخصوص عہدوں پر فائز افراد ، کمپنیوں کے لئے رقم ...

بھٹکل: اترکنڑا ضلع سے گزرنے والی قومی شاہراہ فورلین کا تعمیراتی کام سست روی کاشکار:عوامی سطح پر تعمیراتی کام میں رشوت خوری پر بحث

کسی بھی ملک ، ریاست یا شہر کےلئے بہترین سڑکیں ترقی کی علامت میں شمار کی جاتی ہیں اور شاہراہیں اس کی شناخت ہوتی ہیں تو خاص کر فورلین، سکس لین ملک کی ترقی کی مصدقہ شناخت ہوتی ہیں۔ لیکن کیا کریں ، وہی قومی شاہراہ کی تعمیر ساحلی پٹی پر مخصوص عہدوں پر فائز افراد ، کمپنیوں کے لئے رقم ...

بھٹکل میں کووڈ کی تیسری لہر کی دہشت اور ویکسین کی قلت ۔ ویکسین سینٹرس کا چکر لگا کر عوام لوٹ رہے ہیں خالی ہاتھ

کووڈ کی دوسری لہر کچھ تھم تو گئی ہے مگر عوام کے اندر تیسری لہر کا خوف اور ویکسین نہ ملنے کی وجہ سے دہشت کا ماحول بنتا جارہا ہے۔ جبکہ حکومت کی  طرف سے  18سال سے زائد عمر کے تمام افراد کا ویکسینیشن کرنے کا بھروسہ دلایا گیا تھا ۔      لیکن فرسٹ ڈوز کی بات تو دور، فی الحال پہلا ڈوز لے ...

بھٹکل : بڑے جانوروں کی قربانی پر سرکاری پابندی کے پس منظر میں بکروں کا کاروبار زوروں پر

بقر عید کی آمد کے ساتھ بھٹکل میں بڑے پیمانے پر بڑے جانوروں کی قربانی ہمیشہ ایک معمول رہا ہے ۔ مگر امسال ریاستی حکومت کی پابندیوں کی وجہ سے بڑے جانور لانے اور فروخت کرنے میں جو رکاوٹیں پیدا ہورہی ہیں اس پس منظر میں بکرے کی منڈی بہت زیادہ اچھال پر آگئی ہے۔

کوویڈ کا پیغام انسانیت کے نام۔۔۔۔ (از:۔مدثراحمد، ایڈیٹر آج کا انقلاب، شموگہ)

کوروناوائرس کی وجہ سے جہاںوباء دنیابھرمیں تیزی سے پھیلتی گئی اور چندہی مہینوں میں کروڑوں لوگ اس وباء سے متاثرہوئے،لاکھوں لوگ ہلاک ہوئے،وہیں اس وباء نےپوری انسانیت کو کئی پیغامات دئیے ہیں جو قابل فکر اور قابل عمل باتیں ہیں۔

بنگلورو: ’میڈیکل ٹیررزم ‘ کا ٹائٹل دینے والی بی جے پی اب خاموش کیوں ہے ؟:کانگریس کا سوال

بیڈ بلاکنگ دھندے کو ’’میڈیکل ٹیررزم ‘‘ کا نیا ٹائٹل دینے والی بی جےپی اب خاموش  کیوں ہے، اس سلسلے میں کوئی زبان  کیوں نہیں کھول رہا ہے، یہ سوال   ریاستی کانگریس نے بی جے پی سے کرتے ہوئے  جواب مانگا ہے۔