زچگی سے اموات پر کنٹرول کیا جائے گا: ڈاکٹر ہرش وردھن

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th June 2019, 12:26 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی  13/جون (ایس او نیوز/ آئی این ایس انڈیا) ہمیں اس بات کو یقینی بنانا ہوگا کہ ملک میں زچگی اموات کا کوئی  واقع رونما نہ ہو۔ محفوظ زچگی کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے   صحت اور کنبہ بہبود کے مرکزی وزیر ڈاکٹر ہرش وردھن نے ملک میں تولیدگی، زچگی، نوزائیدہ بچوں، سن بلوغیت میں داخل ہونے والے بچے اور تغذیا تی مداخلت کی صورتحال سے متعلق اعلیٰ سطحی جائزہ میٹنگ میں یہ باتیں کہی ہیں۔ ڈاکٹر ہرش وردھن  نے کہا کہ ہمارے وزیراعظم نریندر مودی کا ایک خواب  ہے کہ بچے اور حاملہ خواتین کی قابل تدارک اسباب کی وجہ سے موت نہ ہو اور عوام   ’سووچھ بھارت‘ سودرڈھ بھارت (صحت  مند بھارت، مضبوط بھارت  یعنی سووستھ بھارت، سورڈھ بھارت) کے لئے اپنی تمام  تر صلاحیتوں کو بروئے کار لاسکیں۔ انہوں نے کہا کہ اس خواب کا شرمندہ تعبیر کرنے کی غرض سے اپنی تمام توانائیوں کو ملا کر کام کرنا ہوگا۔ ڈاکٹر ہرش وردھن نے کہا کہ خواتین ہمارے فعال سماج کی مستحکم ستون ہیں۔ خواتین اور بچوں کا  مل کر ہماری آبادی کا بڑا حصہ بنتاہے۔ ملک کی پائیدار ترقی کا حصول صرف اسی صورت میں ممکن ہے جب ان خواتین اور بچوں کی دیکھ بھال اور پرورش و   پرداخت کریں گے۔ ہمیں اپنی پالیسیوں اور پروگراموں  سے اس بات کو یقینی بنانا ہوگا کہ ملک میں زچگی سے متعلق اموات نہ  ہوں۔وقت آگیا ہے کہ ہم سب ایک عوامی تحریک‘جن آندولن’ شروع کریں تاکہ ایسی زچگی اموات کو روکا جاسکے۔ انہوں نے کہا کہ‘ملک میں تمام ماہرین امراض خواتین اور صحت کارکنان سے وزارت صحت کے ساتھ ہاتھ ملانے اور اس سلسلہ میں ہمارے ذریعہ کی جانی والی کوششوں کو مستحکم کرنے کی اپیل کرتا ہوں۔ انہوں نے اجتماعی طریقہ کار اپنانے کا مشورہ دیا جس میں جارحانہ  بیداری مہم کے ذریعہ تیز رفتار نتائج کے اخذ کے لئے تمام وسائل کو متحد کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ اس بات کو یقینی بنانے کے لئے  کہ مطلوبہ نتائج حاصل کرنے میں ہماری کارروائیاں مؤثر ہوں، نئی حکمت عملی اپنائی جائے جس میں باریکی سے مونیٹرینگ اور نگرانی   کی ضرورت ہو۔ ڈاکٹر ہرش وردھن نے افسران کو ماہرین امراض خواتین، تغذیاتی ماہرین، انتظامی ماہرین، ماہرین امراض  اطفال اور مختلف سرکاری محکموں  پرائیوٹ سیکٹر اور سماجی اداروں کے ساتھ مجوزہ حکمت عملیوں پر غور وخوض کا مشورہ دیا ہے۔  

ایک نظر اس پر بھی

 جے ڈی یو کے اجلاس میں جھارکھنڈ اسمبلی انتخابات کو لے کر بنی حکمت عملی

دہلی میں واقع وزیر اعلی نتیش کمار کے گھر اتوار کو جے ڈی یو کی میٹنگ ہوئی۔ میٹنگ میں آنے والے دنوں میں ہونے والے جھارکھنڈ اسمبلی انتخابات کو لے کر حکمت عملی تیار کی گئی ہے۔ جھارکھنڈ میں جے ڈی یو نے اکیلے چناؤ لڑنے کا فیصلہ کیا ہے۔ میٹنگ میں پارٹی کے قومی صدر نتیش کمار، نائب صدر ...

بہار میں شدید گرمی سے 24 گھنٹے میں 66 ہلاک، اورنگ آبادمیں 30 جانیں گئیں 

بہار میں شدید گرمی اور لو کی وجہ سے ہفتہ کو 66 لوگوں کی موت ہو گئی۔ اورنگ آباد میں سب سے زیادہ 30، گیا میں 25 اور دارالحکومت پٹنہ میں تین لوگوں کی جان گئی۔ لو کے تھپیڑو ں سے بے حال مریض کے جسم میں جلن کی شکایت لے کر ہسپتال پہنچتے رہے ہیں۔

سوئس بینک اکاؤنٹ ہولڈروں پر شکنجہ کسا، کم از کم 50 ہندوستانیوں کو نوٹس

سوئٹزرلینڈ کے بینکوں میں غیر اعلانیہ اکاؤنٹ رکھنے والے ہندوستانیوں کے خلاف دونوں ممالک کی حکومتوں نے شکنجہ کسنا شروع کر دیا ہے۔سوئٹزرلینڈ کے افسر اس سلسلے میں کم از کم 50 ہندوستانی اکاؤنٹ ہولڈروں سے متعلق اطلاعات ہندوستانی حکام کو سونپنے کے عمل میں لگے ہیں۔

پارلیمانی اجلاس کا آغاز تین طلاق بل منظورکرانا حکومت کیلئے بڑا چیلنج

پارلیمنٹ کے پیر سے شروع ہونے والے اجلاس میں نئی حکومت کے سامنے جہاں تین طلاق بل سمیت دس اہم آرڈیننس کو منظور کرانے کا بڑا چیلنج ہوگا، وہیں اپوزیشن پارٹیاں حکومت کو کسانوں، بے روزگاری، سکیولرزم، الیکٹرانک ووٹنگ مشین جیسے بہت سے دیگر مسائل پر گھیرنے کی کوشش کریں گی-