عصمت دری کے قصورواروں کو ملے سخت سزا تاکہ ایسا جرم کرنے سے پہلے کوئی 10 بار سوچے: کجریوال

Source: S.O. News Service | Published on 2nd December 2019, 11:07 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،2دسمبر(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) دہلی حکومت نے نربھیا ریپ کیس کے ایک مجرم کی رحم کی درخواست مسترد کرنے کی سفارش کی ہے۔سی ایم اروند کجریوال نے پیر کو میڈیا سے بات چیت میں کہا کہ ریپ کیس کے قصورواروں کو ایسی سزا دی جانی چاہئے تاکہ ایسا کرنے سے پہلے کوئی 10 بار سوچے۔سی ایم کجریوال نے خواتین کے خلاف ملک میں ہو رہے جرائم کے موضوع پر کہاکہ یہ قانون نظام کی ناکامی ہے، میرا خیال ہے کہ معاشرے کو اپنے اندر جھانک کر دیکھنے کی ضرورت ہے۔بتا دیں کہ کچھ دن پہلے حیدرآباد میں ایک خاتون ڈاکٹر کے ساتھ ریپ کرنے کے بعد ان کا قتل کر دیا گیا اور پھر لاش پر پٹرول چھڑک جلا دی گئی۔اس واقعہ سے پورے ملک میں ایک بار پھر خواتین کی حفاظت کو لے کر سوال اٹھنے لگے ہیں،ملک کے مختلف حصے میں احتجاجی مظاہروں کا دور جاری ہے۔اس نے دہلی میں 2012 میں ہوئی نربھیا گینگ ریپ کی یاد تازہ کر دی ہے۔ادھر سی ایم کجریوال نے کہاکہ نربھیا کیس میں پورا ملک کی سڑک پر اتر آیا، کئی سال گزر گئے ہیں،ہمارا خیال ہے کہ قصورواروں اتنی سخت سزا دی جانی چاہئے تاکہ کوئی ایسا جرم کرنے سے پہلے 10 بار سوچے۔دہلی حکومت نے صدر کے پاس اپنی سفارش میں کہا ہے کہ قصورواروں کے تئیں کوئی نرمی نہ برتی جائے۔

ایک نظر اس پر بھی

بابری مسجد معاملے پر سپریم کورٹ کے فیصلہ سے ناخوش پاپولر فرنٹ کی طرف سے بھی نظر ثانی کی عرضی داخل

بابری مسجد حق ملکیت معاملے میں سپریم کورٹ کی آئینی بنچ کے فیصلے کو چیلنج کرتے ہوئے، پاپولر فرنٹ آف انڈیا نارتھ زون کے سکریٹری انیس انصاری نے بھی 9/ڈسمبر بروز پیر کو سپریم کورٹ میں نظر ثانی کی عرضی داخل کی ہے۔ پی ایف آئی کی جانب سے جاری کردی پریس ریلیز میں بتایا گیا ہے کہ رویو ...