عمران خان کو ہندوستان کی نصیحت،دہشت گردوں پر ’نئی کاروائی‘ کرے ’نیا پاکستان‘

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 9th March 2019, 11:51 PM | ملکی خبریں | عالمی خبریں |

نئی دہلی،09؍مارچ(ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) ہندوستان نے ایک بار پھر پاکستان پر جھوٹ بولنے کا الزام لگایا ہے۔وزارت خارجہ کے ترجمان رویش کمار نے آج کہا کہ پاکستان نے ہندوستان کے خلاف F۔16 کا استعمال کیا تھا، لیکن اب جھوٹ بول رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان اب بھی دہشت گردوں کے خلاف کوئی کارروائی نہیں کر رہا ہے۔بالاکوٹ پر ہم انتہائی پر اعتماد ہیں کہ ہم کامیاب ہو گئے ہیں، پاکستان نے صحافیوں کو وہاں جانے سے روکا ہے،وہ معاملے کو چھپانے کی کوشش کر رہے ہیں۔وزارت خارجہ نے کہا کہ اقوام متحدہ نے پلوامہ حملے میں دہشت گرد تنظیم جیش محمد کے شامل ہونے کی بات کہی تھی، لیکن پاکستان اس کو مسترد رہا ہے۔جیش محمد کو پاکستان کیوں بچا رہا ہے اور اس کے ترجمان کی طرح کیوں بیان دے رہا ہے،اگر پاکستان اپنے آپ کو’نئی سوچ والا ’نیا پاکستان‘ ہونے کا دعوی کرتا ہے تو اسے دہشت گردوں کے خلاف ’نئی کارروائی‘ کرنی چاہئے۔رویش کمار نے کہا کہ ہندوستان کاصرف ایک ہوائی جہاز گرا ہے،اگر پاکستان دعوی کرتا ہے کہ اس کے پاس دوسرے ہندوستانی طیارے کو مار گرانے کا ویڈیو ریکارڈنگ ہے تو انہوں نے ویڈیو بین الاقوامی میڈیا کے ساتھ شیئر کیوں نہیں کیا ہے؟ چشم دید گواہ اور ہمارے پاس موجود الیکٹرانک ثبوت ہیں کہ پاکستان نے F۔16 طیارے کا استعمال کیا تھا اور ونگ کمانڈر ابھینندن کے مگ 21 پر F۔16 ہی حملہ کیا گیا تھا،ہم نے امریکہ سے جانچ کرنے کے لئے کہا ہے۔وزارت خارجہ کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیاکہ افسوسناک پہلو یہ ہے کہ پاکستان اب بھی جیش محمد کے پلوامہ حملے کی ذمہ داری لینے کے اپنے دعوے سے انکار کر رہا ہے۔پاکستان وزیر خارجہ نے کہا انہوں نے (جے ایم) نے حملے کی ذمہ داری نہیں لی ہے، کچھ الجھن ہے کیا پاکستان جے ا یم کا دفاع کر رہا ہے؟۔
 

ایک نظر اس پر بھی

سی اے اے کیخلاف قرار دادیں ’’دستوری اعتبار سے بھیانک غلطی‘‘ ، کوئی طاقت کشمیری پنڈتوں کو کشمیر واپس جانے سے نہیں روک سکتی ؛ منگلورو میں ریالی سے راجناتھ سنگھ کا خطاب

وزیر دفاع راجناتھ سنگھ نے آج اپوزیشن پارٹیوں کو ہدف تنقید بناتے ہوئےاُن سے خواہش کی ہے کہ یہ پارٹیاں ‘ جہاں اُن کی اکثریت ہے، ریاستی اسمبلیوں میں سی اے اے کیخلاف قرار دادیں منظور کرتے ہوئے ’’دستوری اعتبار سے بھیانک غلطی ‘‘ نہ کریں۔ راجنا تھ سنگھ نے اپوزیشن پارٹیوں کو مشورہ ...

معیشت میں بہتری کے لیے ’مرہم‘ نہیں، سخت اقدامات کی ضرورت: کانگریس

کانگریس نے کہا ہے کہ لوگوں کی آمدنی اور خریدنے کی اہلیت کم ہونے کے ساتھ ہی صنعتی پیداوار، براہ راست ٹیکس، درآمدات۔برآمدات وغیرہ میں کمی کی وجہ سے معیشت بری صورت حال سے دوچار ہے اور بہتر ی کے لئے لیپا پوتی کرنے کے بجائے اب طویل مدتی سخت اقدام کرنے کی ضرورت ہے۔

کورونا وائرس کو عالمی وبا قرار دیا گیا، چین میں ہلاکتوں کی تعداد بڑھ کر 56 ہوگئیں ؛ چین سے دوسرے ممالک میں بھی پھیلنے کا خدشہ

چین کی حکومت نے کہا ہے کہ 25 جنوری تک 1975 افراد کے 'کورونا' وائرس سے متاثر ہونے کی تصدیق کی ہوئی ہے اور اس وائرس سے اب تک ہلاکتوں کی تعداد 56 ہوگئی ہے۔دوسری طرف 'کورونا' وائرس کو عالمی وباء قرار دیتے ہوئیاس کے انسداد کے لیے عالمی سطح پر مزید اقدامات پر زور دیا جا رہا ہے۔یہ وائرس گذشتہ ...

ترکی میں زلزلے کے باعث ملبے تلے دبے افراد کی تلاش جاری طاقت ور زلزلے کے باعث ہلاکتوں کی تعداد 29 ہوگئی، 1400 زخمی

ترکی میں جمعہ کی شام آنے والیطاقت ور زلزلے کے نتیجے میں اب تک 29 افراد جاں بحق جب کہ 1400 زخمی ہوئے ہیں۔ متاثرہ علاقوں میں ہنگامی بنیاداوں پر امدادی کام جاری ہے اور ملبے تلے دبے افراد کی تلاش کی جا رہی ہے۔ مشرقی ترکی کے علاقوں میں آنے والے اس تباہ کن زلزلے کیباعث دسیوں افراد لاپتا ...

آپ کا شکریہ... ٹرمپ نے مذاکرات سے متعلق ایران کی مشروط پیش کش مسترد کر دی

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ایران کی اس پیش کش کو یکسر مسترد کر دیا ہے کہ وہ پابندیاں اٹھائے جانے کی شرط کے ساتھ مذاکرات کے لیے تیار ہے۔ ٹرمپ کا یہ موقف ایرانی وزیر خارجہ محمد جواد ظریف کی حالیہ تجویز کے جواب میں سامنے آیا ہے۔ٹرمپ نے اتوار کے روز اپنی ٹویٹ میں کہا کہ ’ایرانی وزیر ...

امریکی ڈیموکریٹس پرصدر ٹرمپ کے خلاف من گھڑت معلومات فراہم کرنے کا الزام

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے مواخذے کے لیے اپوزیشن جماعت ڈیموکریٹک پارٹی کی طرف سے فراہم کردہ معلومات پر ری پبلیکنز کی طرف سے شدید تنقید کرتے ہوئے ان معلومات کو جعلی اور من گھڑت قرار دیا ہے۔امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی دفاعی ٹیم کے رکن سینیٹر رِک اسکاٹ نے کہا ہے کہ 'ڈیموکریٹس نے صدر کے ...

اردغان کی معاہدے کی خلاف ورزی، ترک فوجیوں کی لیبیا آمد جاری

ترکی کے صدر رجب طیب ایردوآن کی طرف سے لیبیا میں عدم مداخلت سے متعلق طے پائے برلن معاہدے کی خلاف ورزیاں بدستور جاری ہیں۔ ترکی کی طرف سے لیبیا میں قومی وفاق حکومت کی مدد کے لیے مسلسل فوجی بھیجے جا رہے ہیں۔کل جمعہ کو ترک صدر نے ایک بیان میں کہا کہ لیبیا میں فائز السراج کی قیادت میں ...