کٹھوعہ سانحہ کے گنہگاروں کو سخت اور عبرتناک سزاملے: خواتین کمیشن 

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 10th June 2019, 10:21 PM | ملکی خبریں |

 نئی دہلی10جون (ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) قومی خواتین کمیشن نے جموں کشمیر کے کٹھوعہ میں آٹھ سال کی بچی سے آبروریزی اور اس وحشیانہ قتل معاملے میں چھ افراد کو مجرم ٹھہرانے کے پٹھان کوٹ عدالت کے فیصلے کا خیر مقدم کیا اور انہیں سخت اور عبرتناک سزا دینے کی درخواست کی۔ کمیشن کی صدر نے کہا کہ میں عدالت کے فیصلے کا خیر مقدم کرتی ہوں اور ان سے سخت او رعبرتناک سزا دینے اور دیگر لوگوں کے لئے مثالی فیصلہ کرنے کی درخواست کرتی ہوں کیونکہ بچوں کے خلاف کیس بڑھ رہے ہیں۔اس طرح کے واقعات کے لیے یہ ایک سبق ہو گا۔ واضح رہے کہ گزشتہ سال جنوری میں ۸/ سالہ لڑکی کا اغوا کر کے اسے کٹھوعہ کے ایک گاؤں کے مندر میں یرغمال بنایا گیا، اس معصوم کے ساتھ اجتماعی عصمت دری کی گئی تھی۔اس دوران اس نشے کی ادویات بھی دی گئی تھیں۔ بعد میں قتل کر دیا گیا تھا، جس کی مسخ شدہ لاش قریب کے ایک کھیت میں ملی تھی۔ اس واقعہ کے بعد ملک میں غم و غصہ پیدا ہو ا تھا، تاہم مجرموں کو بچانے کے لیے سری نگر بی جے پی یونٹ کے کئی اہم لیڈر ریلی بھی  کیا تھا، اورسری نگر وکلاء نے دباؤ بنایا کہ اس واقعہ کا چارج شیٹ داخل نہ کیا جائے۔ واضح ہو کہ سماعت ضلع کی عدالت اور پٹھان کوٹ کی سیشن عدالت میں روزانہ کی بنیاد پر ہوئی تھی۔ 

ایک نظر اس پر بھی